سنٹرل یونیورسٹی کشمیر میں ذہنی تندرستی حاصل کرنے پر ویبنار اختتام پذیر

گاندربل//سنٹرل یونیورسٹی کشمیر میں شعبہ طلبا بہبود اور کمپوسائیٹ ریجنل سنٹر کی مشترکہ اہتمام سے جاری تین روزہ ویبنار’’کووڈ-19وبائی امراض میں دبا کا مقابلہ اور ذہنی تندرستی حاصل کرنا‘‘عنوان پر جمعرات کو اختتام پذیر ہوا۔ یونیورسٹی کے وائس چانسلرپروفیسر معراج الدین میر نے ویبنار سے خطاب کرتے ہوئے اس تقریب کو کامیاب قرار دیتے ہوئے کہا کہ شرکا نے اس وبائی امراض کے دوران خود کو دباو ڈالنے کے لئے مختلف تکنیک ، طریقے اور جسمانی مشقیں سیکھی ہیں۔انہوں نے نے طلبہ سے کہا کہ وہ مشکل وقت میں ایک دوسرے کی مدد کریں اور معاشرے کے پسماندہ طبقات کو ہر ممکن مدد فراہم کریں۔شعبہ جامع ریجنل سنٹر کے سربراہ ڈاکٹر میر ظفر اقبال نے شرکا سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سی آر سی سنٹرل یونیورسٹی کشمیر کے ساتھ مل کر اس یونیورسٹی کے طلبا ، اساتذہ اور یونیورسٹی کے عملے کے لئے اس طرح کے مزید پروگراموں کا انعقاد مستقبل میں کرنا چاہے گی۔انہوں نے تحقیق اور دیگر وابستہ شعبوں میں دونوں اداروں کے مابین باہمی تعاون کی کوششوں پر زور دیا۔رجسٹرار پروفیسر ایم افضل زرگر نے ڈی ایس ڈبلیو اور سی آر سی کو اس پروگرام کے انعقاد پر سراہا اور کہا کہ موجودہ صورتحال کے دوران کسی قسم کی پیچیدگیوں سے بچنے کے لئے دبا ئواور سانس لینے کی ماہر تکنیکوں کو نافذ کیا جانا چاہئے۔ انہوں نے طلبہ سے کہا کہ وہ گھروں سے باہر نکلتے ہوئے کوڈ-19 ایس او پیز کی سختی سے پیروی کریں۔شعبہ اسٹوڈنٹس ویلفیئر کے سربراہ ڈاکٹر معراج الدین شاہ نے ویبنار منعقد کرنے کی مفصل تفصیل پیش کی اور سی آر سی کے تمام ماہرین کا شکریہ ادا کیا ۔