ہوٹلیئرس کلب ممبروں کی سرمد حفیظ کیساتھ مشاورتی ملاقات

سر ی نگر//سیکرٹری سیاحت و ثقافت سرمد حفیظ نے آج یہاں ہوٹیلئرس کلب نمائندوںکے ساتھ تفصیلی استفسار کیا اور سیاحتی شعبے میں حصول کی مجموعی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔سیکرٹری سیاحت نے وفد کو گلمرگ ، پہلگام ، سونمرگ اور دیگر سیاحتی مقامات پر ڈھانچے اور سہولیات کو مستحکم بنانے کی کوششوں کے بارے میں وفد کو آگاہ کیا ۔ اُنہوں نے کہا کہ پہلے گلمرگ میں سہولیات اور آلات کا معیار، معیاری آڈٹ اور جلداز جلد کسی بھی سامان کی مرمت کے بارے میں ہدایات دی جاچکی ہیں۔سرمد حفیظ نے ڈیپوٹیشن سے کہاکہ اُنہوں نے رائیل سپرنگس گالف کورس سے گلمرگ کے لئے ایک ماہر ٹیم کو ملک کے چند پرانے کورسوں میں شمار ہونے والے مقامی گالف کورس کی اعلیٰ کار کردگی اور بہتری لانے کے لئے تعینات کیا ہے ۔وفد نے سیاحت میں بنیادی ڈھانچے اور سہولیات کے استحکام اور بہتری کے لئے موجودہ لین ٹائم کو بروئے  کار لانے کی کوششوں پر سیکرٹری سیاحت کا شکریہ اَدا کیا۔ اُنہوں نے سیاحتی برادری ممبروں کے لئے ٹیکہ کاری مہم چلانے پر بھی خصوصی طور پر شکریہ ادا کیا۔اِس موقعہ پر ناظم سیاحت کشمیر ڈاکٹر جی این ایتو ، صدر ہوٹلیئرس کلب مشتاق چایا اور دیگر سینئر اَفسران موجود تھے۔بعد میں سیکرٹری سیاحت نے ٹرف اور گرینس کی باقاعدگی سے دیکھ ریکھ کرنے کے لئے رائیل سپرنگس گالف کورس کا دورہ کیا۔اُنہوںنے کورس کی مناسب اور مستقل دیکھ ریکھ کی ہدایت دی۔معائینے کے دوران سیکرٹری سیاحت کے ہمراہ ایم ڈی گالف ڈیولپمنٹ اَتھارٹی جاوید ہمایوں بخشٰ اور آر ایس جی سی کے دیگر اَفسران تھے۔دریں اثنأ سیاحت کی جانب سے شروع کی جانے والی خصوصی ٹیکہ کاری مہم آج اختتام پذیر ہوئی۔اِس مہم کے دوران لگ بھگ چھ ہزار سیاحتی شراکت داروں نے کووِڈ حفاظتی ٹیکے لگائے جس میں ائیر پورٹ ٹیکسی سٹینڈ کا عملہ ہوٹلوں ، گیسٹ ہائوسوں ، ٹریول ایجنسیاں ، ریستوران ، ہائوس بوٹ، پونی والا ، شکارہ والا سے وابستہ اَفراد شامل تھے۔ اِس مہم کے دوران ایس کے آئی سی سی ، کشمیر گالف کورس اور آر ایس جی سی کے عملے کو بھی ٹیکے لگائے گئے۔واضح رہے کہ سری نگر میں سیاحتی شراکت داروںکے لئے ٹیکہ کاری مراکزٹی آر سی سری نگر، نگین کلب ، نہرو پارک اور راجباغ میں قائم کئے گئے تھے جہاں سیاحتی تجارت کے ممبروں کو ٹیکے لگائے گئے تھے۔ اِسی طرح سیاحتی کھلاڑیوں کو گلمرگ ، پہلگام ، دودھ پتھری اور یوسمرگ کی مشہور سیاحتی مقامات پر ٹیکے لگائے گئے ہیں۔