مزید خبرں

 کرناٹک کے رائے دہندگان سے اپیل 

 ذاتی حملے کرنے والوں کوسبق سکھایاجائے:پروفیسربھیم سنگھ

جموں//جموں وکشمیر نیشنل پنتھرس پارٹی کے سرپرست اعلی اور انسانی حقوق کے لئے جدوجہد کرنے والے وکیل پروفیسر بھیم سنگھ نے کرناٹک کے رائے دہندگان سے اپیل کی ہے کہ وہ آئندہ اسمبلی انتخابات میں ناپسندیدہ اور پیشہ ور لیڈروں کو سبق سکھائیں اور کہا کہ میٹھی و مہذب زبان اورمتوازن تقاریر سے ہی ووٹرو ں کو اپنی طرف راغب کیا جاسکتا ہے۔پروفیسر بھیم سنگھ کا اپنی ٹیم کے ساتھ کرناٹک کا دورہ کرنے کا پروگرام تھا لیکن ان کی طبیعت ناساز ہونے کی وجہ سے انہیںنئی دہلی کے ایمس اسپتال میں داخل ہونا پڑا اور ان کا یہ دورہ نہیں ہوسکا جس کا انہیں افسوس ہے ۔ اس پہلے بھی کئی مرتبہ مسٹر ڈی دیوراج ارس، مسٹر گنڈو را، مسٹر رام کرشنا ہیگڑے اور کئی دیگر لیڈروں کے دور میں پروفیسر بھیم سنگھ کرناٹک کے رائے دہندگان سے پنتھرس پارٹی کی جموں وکشمیر کے لوگوں تک بنیادی حقوق کی رسائی کی مہم کے تحت بات چیت کرچکے ہیں۔پنتھرس سربراہ نے کرناٹک کے رائے دہندگان سے اپیل کی کہ وہ انتخابی تشہیر کے دوران تقاریر میں ناپسندیدہ اور ناقابل قبول الفاظ استعمال کرنے والوں کو سبق سکھائیں خواہ وہ کسی بھی سیاسی پارٹی سے تعلق رکھتے ہوں۔انہوں نے وزیراعظم نریندر مودی اور صدر کانگریس راہل گاندھی کے ذریعہ انتخابی تشہیر کے دوران استعمال کی گئی زبان پر افسوس کا اظہار کیا۔انہوں نے کرناٹک کے رائے دہندگان سے کہا کہ وہ اسمبلی انتخابات میں وزیراعظم نریندر مودی کو  شکست دیں اور بے نقاب کریں جنہوں نے انتخابی تشہیر کے دوران غیرمہذب زبان کا استعمال کیا ہے جس سے انہیں سبق ملے اور مستقبل کے وزرائے اعظم کو سمجھ آئے کہ انہیں انتخابی تشہیر کے دوران کس طرح کی زبان کا استعمال کرنا ہے۔

شام چودھری نے پی ایچ ای اور آئی اینڈ ایف سی پروجیکٹوں کاجائزہ لیا

صوبہ جموں کی نہروں کی  ڈیسلٹنگ کے کام میں سرعت لانے کی ہدایت دی

جموں//صحت عامہ، آبپاشی و فلڈکنٹرول کے وزیر شیام لال چودھری نے جاری ڈیسلٹنگ اور آبپاشی نہروں اور کوہلوں کے مرمت کے کاموںکا جائزہ ایک میٹنگ کے دوران لیا۔افسروں کی ایک میٹنگ کی صدارت کرتے ہوئے وزیر نے آبپاشی اور فلڈ کنٹرول محکموں کے مختلف ترقیاتی پروجیکٹوں اور سکیموں کے تحت جاری کاموں کے بارے میں تفاصیل حاصل کیں۔انہوں نے رنبیر کنال ، راوی توی اریگیشن کنال و دیگر جموں صوبے کی نہروں سے ڈیسلٹنگ کے کاموں میں سرعت لانے کی ہدایت دی تاکہ آبی خائروں میں پانی کی دستیابی میں اضافہ ہو ۔انہوں نے متعلقہ محکموں کے افسروں کو ہدایت دی کہ وہ آپسی اتحاد کے ساتھ کام کریں تاکہ ڈیسلٹنگ اور مرمت کے کام وقت پر مکمل کئے جاسکیںاور کسانوں و مقامی آبادی کو کسی بھی قسم کی مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔انہوں نے تمام پینے کے پانی کے کنکشنوں کو باقاعدہ بنانے کی ہدایت دی اور جموں صوبے میں بے کار پڑے ٹیوب ویلوں کی مرمت کی بھی ہدایت دی ۔ وزیر کے ہمراہ متعلقہ محکموں کے سپر انٹنڈنگ انجینئر اور ایگزیکٹیو انجینئر بھی تھے۔
 

نروال میں مچھلی بازار کا معائنہ 

 ماہی پروری کواقتصادی وسماجی ترقی میں کلیدی اہمیت حاصل :کوہلی

جموں//پشو و بھیڑ پالن اور ماہی پروری کے وزیر عبدالغنی کوہلی نے نروال فشریز مارکیٹنگ ڈویثرن کا دورہ کر کے کام کاج کا جائیزہ لیا۔ڈائریکٹر فشریز آر این پنڈتا اور دیگر افسران بھی وزیر موصوف کے ہمراہ تھے۔اس موقعہ پر وزیر نے کہا کہ ماہی پروری سیکٹر کو ریاست کی اقتصادی و سماجی ترقی میں کلیدی اہمیت حاصل ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سیکٹر سے کافی تعداد میں لوگوں کو روز گار حاصل ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ نے ایک ہی چھت کے تلے تمام سہولیات سے لیس فش مارکیٹ قائم کی ہے۔اس سے قبل ڈائریکٹر فشریز نے وزیر کو مارکیٹ کے مختلف پہلوؤں کے بارے میں جانکاری دی۔ انہوں نے کہا کہ مارکیٹ میں8 ہول سیل اور40 پرچون دکانیں عنقریب ہی الاٹ کی جائیں گی۔
 

برہمن سبھا کی جانب سے علامتی نشان کااجراء 

ادہم پور// جموںکشمیر برہمن سبھاکی جانب سے تنظیم کاعلامتی نشان (لوگو)جاری کرنے کیلئے تقریب کااہتمام کیا۔اس دوران پروگرام میں رکن قانون اسمبلی رنبیر سنگھ پٹھانیہ مہمان خصوصی جبکہ مہنت روہت شاستری مہمان ذی وقارتھے۔ اس موقعہ پر رنبیر سنگھ پٹھانیہ نے کہا کہ ریاست اور قوم کواپنی روایات کوتحفظ دینے کی ضرورت ہے ۔پروگرام کے مہمان ذی وقارروہت شاستری نے کہا کہ ہر جوان کی اپنی تہذیب کی حفاٹ کرنی چاہیئے۔ انہوں نے حاضرین پرزوریدکاہ برہمن سماج میں ایکتا اور برادری کو مضبوط بنانے کے لئے ہر طرف سے آنے والے دنوں میں مذہبی اور سماجی کاموں کیلئے منظم ہوجائیں گے. انہوں نے کہا کہ اسی مہینے کے اجلاس میں نئے کام کرنے والے عہدیداران  کو ذمہ داریاں تفویض کی جائیں گی۔اس موقعہ پرمہنت روہت شاستری ،اتل شرماصدربرہمن سبھا، بی جے وائی ایم جنرل سیکریٹری وکاس چودھری، رام پال شاستری، دیپک شاستری ودیگران بھی موجودتھے۔
 

ہیروئن سمیت دوافرادگرفتار

جموں//پولیس نے دومختلف مقامات سے دوافرادکوہیروئن سمیت گرفتارکرلیاہے ۔پولیس ذرائع کے مطابق کالیکاکالونی میں ایک موٹرسائیکل سوارکوتلاشی کے لئے روکاگیااوردوران تلاشی اس کے قبضے سے 30 گرام ہیروئن برآمد کی گئی جسے پولیس نے ضبط کرلیا۔اس کے علاوہ اس کے پاس دووزن مشینیں اوردوسرنج بھی تھیں۔پولیس نے شخص کوگرفتارکرکے اس کے خلاف تھانے میں معاملہ درج کرلیا۔اسی طرح کے ایک الگ واع میں پولیس نے ترنکوٹہ نگرسے ایک شخص کے قبضے سے 6گرام ہیروئن برآمدکرکے اس کے خلاف معاملہ درج کرلیا۔
 

نشیلی ادویات کی بوتلیں ضبط، سمگلررگرفتار

جموں//پولیس نے جموں شہرکے نواحی علاقہ میں ایک ٹرک سے مبینہ طورپر18000نشیلی ادویات کی بوتلیں ضبط کی گئی ہیں۔ پولیس نے منشیات مخالف مہم کے تحت سرینگرکے ایک ٹرک کی منوال علاقہ میں تلاشی لی جس میں 1800نشیلی ادویات کی بوتلیں برآمد ہوئیں۔پولیس ذرائع کے مطابق پولیس کودیکھتے ہی ٹرک ڈرائیورنے گاڑی کوبھگاناشروع کردیا،پولیس نے اس کاتعاقب کرکے دبوچ لیااوردوران تلاشی اس کی تحویل سے 18000نشیلی ادویات کی بوتلیں جن میں ماکس سافٹ اورکوریکس تھا کوپایاگیاجنھیں بغیراجازت لیجایاجارہاتھا۔اس سلسلے میں پولیس نے معاملہ درج کرکے تحقیقات شروع کردی ہے۔
 
 
 

ایس ٹی صارفین کے راشن کارڈوں پرجنرل کیٹاگری درج ہونے کامعاملہ 

صارفین کے ساتھ کھلواڑناقابل برداشت :شائننگ سٹارسوسائٹی 

جموں//شائننگ سٹارسوسائٹی جموں نے ضلع جموں کی دوردرازگوجربکروال بستیوں میں ایس ٹی صارفین کومحکمہ خوراک، شہری رسدات وامورصارفین (ڈیپارٹمنٹ آف فوڈ ،سول سپلائز اینڈکنزیومرافیئرس) کی جانب سے حال ہی میں جاری کئے گئے راشن کارڈوں میں ایس ٹی طبقہ کے صارفین کے راشن کارڈوں پربھی ایس ٹی کے بجائے جنرل کیٹگری درج کئے جانے پربرہمی کااظہارکیاہے۔اس سلسلے میں یہاں جاری پریس بیان میں شائننگ سٹارسوسائٹی جموں کے صدرمحمدابرار چوہدری نے نے کہاکہ جموں کی دوردرازگوجربکروال بستیوں بالخصوص نگروٹہ اسمبلی حلقہ کے مڑھ، درابی،بمیال، دھنوں،دھنگ ،گورڈہ ،چکھڑ،بگانی ودیگرملحقہ علاقوں کے لوگوں کے مطابق حکومت جموں وکشمیرکے محکمہ محکمہ خوراک، شہری رسدات وامورصارفین کی جانب سے جوحال ہی میں راشن کارڈ جاری کئے گئے ہیں ان پر شیڈیولڈٹرائب طبقہ کے صارفین کے راشن کارڈوں پرایس ٹی کے بجائے جنرل کیٹگری درج کیاگیاہے جس سے گوجربکروال آبادی میں مختلف قسم کے خدشات پیداہورہے ہیں اوراسے بعض لوگوں کی طرف سے گوجربکروال طبقہ مخالف سازش تعبیرکیاجارہاہے۔ انہوں نے کہاکہ ایس ٹی طبقہ کے صارفین کے راشن کارڈوں پرایس ٹی کے بجائے جنرل کیٹگری کی مہرلگانا غیرمناسب ہے اورصارفین کے ساتھ کھلواڑہے جسے قطعی برداشت نہیں کیاجائے گا۔ انہوں نے کہاکہ سابقہ وزیر برائے محکمہ خوراک، شہری رسدات وامورصارفین چوہدری ذوالفقارنے اگرچہ اچھے کام کیے ہیں لیکن حا ل ہی میں جاری ہوئے ایس ٹی صارفین کے راشن کارڈوں پرایس ٹی کے بجائے جنرل زمرہ درج کرنایاتوبھول ہے یادانستہ طورپرایک غلطی ہے جسے درست کرنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے ذوالفقارچوہدری جووزیربرائے قبائلی امورہیں اورموجودہ وزیربرائے امورصارفین سے پرزورمطالبہ کیاہے کہ وہ اس مسئلے کوسنجیدگی سے لے کرایس ٹی طبقہ کے صارفین کے راشن کارڈوں پرجنرل کیٹگری کے بجائے ایس ٹی کیٹگری درج کرکے غلطی کاازالہ کرکے لوگوں کی مشکلات دورکریں ۔اس دوران مقررین نے انتباہ دیاکہ اگرایسانہیں ہواتوعوام احتجاج کاراستہ اپنانے سے گریزنہیں ہوگی جس کی ذمہ داری متعلقہ وزراپرعائدہوگی۔
 
 

ادہم پورمیںامتحانی مراکزکے گرددفعہ 144نافذ 

ادہم پور//ضلع مجسٹریٹ (ڈی ایم) ادہم پور رویندرکمارنے اختیارات کوبروئے کارلاتے ہوئے سکینڈری سکول ایگزیمی نیشن (دسویں جماعت ) کے سالانہ ریگولر 2016-17/بائی اینول پرائیویٹ 2016 جے اینڈکے اوپن سکول (ایس اوایس ) کے امتحانات جو10 مئی سے شروع ہورہے ہیں کے سلسلے میں امتحانی مراکزکے گردونواح دفعہ 144سی آرپی سی نافذکرنے کاحکمنامہ جاری کیاہے۔۔ضلع مجسٹریٹ کے حکمنامے کے مطابق امتحانی مراکزکے 100 میٹرکے دائرے میں نقل وحرکت، آواجاہی اورلوگوں کے جمع ہونے پرپابندی رہے گی ۔یہ حکمنامہ 10 مئی 2018سے امتحانات کے اختتام تک نافذالعمل رہے گا،ساتھ میں یہ بھی کہاگیاہے کہ جموں کشمیربورڈ آف سکول ایجوکیشن جموں کی جانب سے جاری کردہ ایڈمیشن کارڈ ،امتحان میں داخلے کیلئے طلباء کیلئے ضروری ہوں گے۔
 
 
 
 
 
 
 
 
 
فرائض منصبی کی انجام دہی میں غفلت 
میونسپل کونسل کٹھوعہ کاخلاف ورزی انسپکٹر معطل 
کٹھوعہ//ڈپٹی کمشنرکٹھوعہ روہت کھجوریہ نے میونسپل کونسل کٹھوعہ کے ایک خلاف ورزی انسپکٹرکوفرائض منصبی میں غفلت برتنے کی پاداش میں معطل کرنے کے احکامات جاری کیے ہیں۔حکمنامے کے مطابق مذکورہ خلاف ورزی انسپکٹر کٹھوعہ میں جاری مبینہ غیرقانونی تجاوزات کی روکتھام میں مکمل طورپرناکام رہاہے ۔آرڈرکے مطابق پولیس لائن روڈ پرمتعدددکانیں بغیراجازت نامے کے تعمیرہورہی ہیں اوراس کے علاوہ ایک سروس سٹیشن کوبغیراجازت کے رہائشی علاقے میں چلایاجارہاتھا۔ اہلکارکومعطلی کے عرصہ کے دوران ڈی سی دفترکٹھوعہ کے ساتھ منسلک کیاگیاہے۔
 
 
سکاسٹ ٹیچنگ ایسوسی ایشن کاوفدڈاکٹرجتندرسنگھ سے ملاقی
جموں//سکاسٹ ٹیچنگ ایسوسی ایشن جموں کے ایک وفد نے اپنے صدر ڈاکٹر وکاس شرما کی قیادت میں مرکزی وزیرمملکت ڈاکٹر جتندر سنگھ سے ملاقات کی اور انہیں اپنے مطالبات پر مشتمل ایک یاداشت پیش کی ۔ ان مطالبات میں سکاسٹ میں موجودہ بنیادی ڈھانچہ کو مستحکم بنانااور نئی سہولیات کی منظوری دینا بھی شامل ہے۔میٹنگ کے دوران ڈاکٹر وکاس نے مرکزی وزیر کے ساتھ تدریسی عملہ کی بہبود ، یونیورسٹی کی مجموعی ترقی اور اس ادارے کو جدید ترین ٹیکنالوجی سے لیس کرنا بھی شامل ہے ،تاکہ کسانوں کی وقت کے ساتھ بڑھ رہی ضروریات کو پورا کیا جاسکے۔ڈاکٹر وکاس نے کہا کہ سکاسٹ میں اس وقت صرف دو فیلکٹیز زراعت اور ویٹر نری سائینس ہیں انہوں نے کہا کہ ریاست میں مزید یونیورسٹیوں کا قیام عمل میں لانے کا ریاستی سرکار کا فیصلہ قابل سراہنا ہے مگر سکاسٹ جموں کو جدید خطوط پر استوار کرناوقت کی اہم ضرورت ہے۔ مرکزی وزیر نے وفد کو توجہ سے سنا اور پیش کئے گئے مطالبات پر ہمدردانہ غور کا یقین دلایا۔