صلاح الدین تحریک آزادی کی پہچان:جہاد کونسل

 مظفر آباد// متحدہ جہاد کو نسل کے سیکریٹری جنرل شیخ جمیل الرحمان نے کہا ہے کہ سید صلاح الدین تحریک آزادی کشمیر کی پہچان ہیں ۔ترجمان متحدہ جہاد کو نسل سید صداقت حسین کی طرف سے موصولہ بیان میں کہا گیا ہے کہ بھارت کے وزیراعظم نریندر مودی کو خوش کرنے اور بھارتی مفادات کو تحفظ دینے کیلئے عالمی قوانین کو ٹرمپ انتظا میہ نے روندڈالا جو انتہائی افسوسناک ہے۔بیان میں آج نمازجمعہ کے بعد پوری ریاست میں احتجاجی مظاہروں کی اپیل کی گئی ہے۔ بیان کے مطابق جمیل الرحمان جہاد کونسل کے ایک خصوصی اجلاس سے خطاب کررہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ سید صلاح الدین کو عالمی دہشت گرد قرار دینا بین الاقوامی ضابطوںاور اقوام متحدہ کے چارٹرکے با لکل منا فی ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ اقدام کشمیری عوام کے زخموں پر نمک پا شی کے مترادف ہے ۔انہوں نے عالمی برادری سے اپیل کی کہ وہ اس فیصلے کو مسترد کرکے استصواب رائے کے وعدے کو پورا کرے۔اجلاس میں کشمیری عوام سے اپیل کی گئی کہ وہ آج بعد از نماز جمعہ ٹرمپ انتظا میہ کے اس فیصلے اور حریت قائدین کی گرفتاریوں کے خلاف احتجاجی مظاہرے کرکے دنیا کو یہ پیغام دیں کہ تحر یک آزادی کشمیر حصول مقصد تک جاری رہے گی ۔ 
 

قومی شناخت بچانے کیلئے جدوجہد کا حق حاصل ہے:مزاحمتی خیمہ

سرینگر// انجمن شرعی شیعیان،تحریک مزاحمت اور ماس مومنٹ نے حزب سربراہ صلاح الدین کو امریکہ کی طرف سے عالمی دہشت گردو ں کی فہرست میں درج کرنے پر سخت ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ اپنے مفادات اور اسرائیلی جارحیت کی طرفداری کرنے والے ممالک کو خوش رکھنے کیلئے کسی بھی حد تک جاسکتا ہے ۔انجمن شرعی شیعیان کے سربراہ آغا سید حسن نے کہا کہ صلاح الدین کو عالمی دہشت گرد قرار دینے کے بعد کشمیر میں بھی ان ہی نتائج کی توقع رکھی جانی چاہئے۔انہوں نے کہا کہ استکباری قوتیں حریت پسندوں پر دہشت گردی کی لیبل لگاکر ظلم و تسلط کی حوصلہ افزائی کر رہی ہیں۔تحریک مزاحمت کے چیئرمین بلال صدیقی نے کہا کہ اقوام متحدہ کے رہنماء خطوط کے مطابق کسی بھی قوم کواپنی شناخت بچانے کیلئے سیاسی اور عسکری محاذ پر جدوجہد کرنے کا حق حاصل ہے ۔ایک بیان میں بلال صدیقی نے کہا ’’ اگرچہ ہمیں کسی فرد ،قوم یا ملک کے اجازت نامے یا سرٹفکیٹ کی ضرورت نہیں البتہ یہ بات ضرور کہیںگے کہ غلام قوموں کو اپنا حق حاصل کرنے کا پورا پورا حق حاصل ہے اور اس کے لئے ان ممالک سے اجازت لینے کی ضرورت نہیں جنہوں نے دنیا کو جنگ کی بٹھی میں تبدیل کررکھا ہو ‘‘۔ ماس مومنٹ سربراہ فریدہ بہن جی نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ دنیا میں جمہوری اقدار،انصاف پسندی اور انسانیت دوستی کیلئے امریکہ میں اتنی اخلاقی جرت بھی باقی نہیں ہے کہ وہ کھرے اور کھوٹے میں تمیز کرسکے۔سینئر خاتون لیڈر نے کہا کہ افغانستان،لیبیا اور عراق سمیت دنیا کے دیگر ملکوں میں اس ملک نے اپنی انسانیت سوز کاروائیوں پر پردہ پوشی کی اور جمہوری اقدار اپنانے کے اس ملک نے ہر مظلوم مسلم ملک کی آواز کو دبانے میں جو رول ادا کیا ہے،اس کو وقت کا مورخ اور تاریخ کھبی فراموش نہیں کرسکتی۔
 

 کشمیریوں کی جدو جہد پر کوئی فرق نہیں پڑے گا:بارایسوسی ایشن 

سرینگر //جموں و کشمیر ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن نے امریکی سرکار کی جانب سے سید صلاح الدین کو عالمی دہشت گرد قرار دینے کی سخت الفاظ میں مذمت کی ہے۔ بار ایسوسی ایشن نے کہا ہے کہ امریکہ نے اپنے مالی فوائد اور بھارت کو خوش کرنے کیلئے بغیر کسی تحقیق کے فیصلہ لیا ہے تاہم امریکہ کے اس فیصلے سے کشمیری عوام کی جائز جدو جہد پر کوئی فرق نہیں پڑے گا کیونکہ کشمیری عوام اقوام متحدہ کی 28قرار دادوں کی بنا پر بھارتی لیڈران سے اپنے وعدے پورے کرنے کی مانگ کررہے ہیں۔ بیان کے مطابق بار ایسوسی ایشن  امریکی حکومت کواخلاقی ذمہ داریاں یاد دلانا چاہتی ہے تاکہ اقوام متحدہ کے سیکورٹی کونسل کی قرار دادوں کو عملانے پر زور دیا جائے ۔ بار ایسوسی ایشن نے کہا ہے کہ ہم امریکہ کو یاد دلانا چاہتے ہیں کہ بھارت جموں وکشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیوں میں ملوث ہے جبکہ بھارت کے پڑوسی ممالک کے ساتھ رشتے بھی خراب ہورہے ہیں اور کشمیر میں مرحلہ وار طریقے سے نسل کشی میں مبتلا ہے۔ بار ایسوسی ایشن نے مزاحمتی لیڈران اور کارکنان کی گرفتاریوں پر بھی افسوس کا اظہار کیا ۔