بی بی ویاس نے استعفیٰ پیش کردیا

جموں // گورنر کے مشیر بی بی ویاس نے اپنا ستعفیٰ پیش کردیا ہے۔انہیں مرکز میں یونین پبلک سروس کمیشن کا ممبر بنایا جارہا ہے۔ابھی تک گورنر نے انکا استعفیٰ منظور نہیں کیا ہے تاہم  انکی تعیناتی کے حوالے لوازمات پورے ہونے کے بعد انہیں رخصت کیا جائیگا۔یونین پبلک سروس کمیشن میں اس وقت اسکے چیئر مین سمیت 8ممبران ہیں۔بی بی ویاس بنیادی طور پر راجستھان سے تعلق رکھتے ہیں اور 61سالہ ویاس نومبر 2017کو ریٹائر ہونے والے تھے تاہم پرنسل وزارت نے سروس رولز میں ترمیم کر کے انہیں  محبوبہ مفتی کی درخواست پر3ماہ کی توسیع دی تھی۔اسکے بعد انکی معیاد ملازمت میں مزید 3ماہ کی توسیع دی گئی اور بعد میں مئی 2018میں ایک سال کی توسیع کی گئی۔9نومبر کو ستہ پال ملک نے مشیروں کے قلمدانوں میں پھیر بدل کیا اور ویاس سے کئی اہم ذمہ داریوں سے فارغ کیا گیا۔20جون کو سابق گورنر این این ووہرا نے انہیں مشیر بنایا تھا جو عہدہ ابھی تک وہ برقرار رکھے ہوئے ہیں۔ادھراین ایس جموال نئے انسپکٹر جنرل آف بارڈر سیکورٹی فورسز(بی ایس ایف)جموں ہوں گے ۔ وہ یہ عہدہ رام اوتار کی جگہ دسمبر کے اواخر تک سنبھالیں گے ۔بی ایس ایف جموں فرنٹیئر پاکستان کے ساتھ لگنے والی کٹھوعہ سے اکھنو رتک 198کلو میٹر بین الاقوامی سرحد کی حفاظت کرتی ہے ۔