میڈیکل افسروں کی تعیناتی کشمیریوں کے ساتھ ناانصافی:اپنی پارٹی

سرینگر//اپنی پارٹی ضلع صدر سرینگر نور محمد شیخ اور میڈیا ایڈوائزرفاروق اندرابی نے کشمیر سے تعلق رکھنے والے بھرتی ہوئے نئے میڈیکل افسروں کے ساتھ کی جارہی زیادتی پر گہری تشویش کا اظہار کیا جنہوں نے آمرانہ طور پر جموں صوبہ کے دوردراز علاقہ جات میں تعینات کیاگیاہے۔ وادی کشمیر کے مختلف علاقوں سے تعلق رکھنے والے میڈیکل افسران پر مشتمل ایک وفد اپنی پارٹی لیڈران سے پارٹی دفتر سرینگر میں ملاقی ہوا اور اپنے مسائل اُجاگر کئے۔ ڈاکٹروں نے کہاکہ محکمہ صحت وطبی تعلیم کی طرف سے تعینات نئے ڈاکٹروں کی تعیناتی میں سراسر نا انصافی اور زیادتی کی جارہی ہے۔ اپنی پارٹی نے افسوس کا اظہار کیا کہ 210میڈیکل افسران میں سے 110کا تعلق کشمیر کے ڈاکٹروں سے ہے جنہیں پانچ سالوں کے لئے جموں صوبہ کے دوردراز علاقہ جات میں تعینات کیاگیاہے۔ انہوں نے کہاکہ کشمیر صوبہ کے نوجوان میڈیکل افسروں کے ساتھ نا انصافی کی جارہی ہے ۔ یہ حکم نامہ ایسے وقت میں جاری کیاگیا جب کشمیر صوبہ کے اندر 200سے زائد میڈیکل افسران کی اسامیاں خالی پڑی ہیں۔ انہوں نے کہاکہ انتظامیہ نے جموں کے دوردراز علاقہ جات میں کشمیر سے تعلق رکھنے والی 60خاتون میڈیکل افسران کی بھی تعیناتی عمل میں لائی ہے جوکہ سراسر غلط اور نا انصافی ہے۔ اپنی پارٹی لیڈران نے یقین دلایاکہ متعلقہ حکام کے ساتھ یہ معاملہ اُجاگر کر کے اِس کو حل کرنے کی کوشش کریں۔ انہوں نے لیفٹیننٹ گورنر سے اس معاملہ میں مداخلت کی اپیل کی ۔
 
 

 کئی سیاسی ورکرپارٹی میں شامل 

سرینگر//پمپوش کالونی اور پالپورہ عیدگاہ سے معروف سیاسی کارکنان نے اپنی پارٹی میں شمولیت اختیار کی۔اپنی پارٹی میں شامل ہوئے ان افراد میں فیاض احمد شیخ، محمد عبداللہ، بلال احمد کھانڈے، محمد اکبر شیخ، نذیر احمد شیخ، عبدالرشید شیخ اور فاروق احمد شامل ہیں۔ اس سلسلے میں ایک تقریب منعقد ہوئی جس میں ضلع صدر سرینگر نور محمد شیخ، میڈیا ایڈوائزر فاروق اندرابی، انچارج گاندربل جاوید میر، کارڈی نیٹر خانیار محمد یٰسین چوڑی ساز، انچارج کارڈی نیٹر عیدگاہ منظور احمد گنائی، پارٹی لیڈر جاوید جنید اور پارٹی لیڈر امتیاز موجود تھے۔نور محمد شیخ نے نئے ساتھیوں کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہاکہ اپنی پارٹی جموں وکشمیر میں یکساں تعمیر وترقی کی وعدہ بند ہے اور لوگوں کی فلاح وبہبودی کے لئے تمام اقدامات یقینی بنائے گی۔ انہوں نے کہا’’اپنی پارٹی کھوکھلے نعرؤں پر یقین نہیں رکھتی جیسا کہ دیگر سیاسی جماعتوں نے ماضی میں کیاتھا۔