مودی سرکارنے دہشت گردی کیخلاف جنگ چھیڑدی

 کٹھوعہ // مرکزی ویزر و اودہمپور۔کٹھوعہ۔ڈوڈہ پارلیمانی حلقہ کے بی جے پی کے امیدوار ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے سابقہ کانگریسی سرکار پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ اگر چہ کانگریس نے ایس پی اوز اور وی ڈی سئیز کو دو دہائی قبل تعینات کیا تھا لیکن انکی حالت میں کوئی سدھار نہیں لایا ۔انہوں نے کہا کہ مودی سرکار نے ہی ایس پی اوز کا مشاہرہ چار گنا بڑھا کر تین ہزارسے بارہ ہزار روپیہ کر دیا ۔اسی طرح سے وی ڈی سئیز کو تنخواہیں واگُذار کیں جو سالوں سے بغیر تنخواہوں کے تھے۔ ان باتوں کا اظہا رڈاکٹر جتیندر سنگھ نے بسوہلی، رام نگر اور بلاور میں متعدد عوامی اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوںنے کہا کہ مودی سرکار نے نہ صرف دہشت پسندی کیخلاف فیصلہ کن جنگ شروع کر دی بلکہ سیکورٹی اہلکاروں اور ایس پی اوز اور وی ڈی سئیز کے وقار کو بھی یقینی بنایا ۔انہوں نے کہا کہ مودی سرکار نے سیکورٹی فورسز کو ملی ٹینسی کے خلاف کاروائی کرنے میں کھلی چھوٹ دی ۔پاکستان میں دہشت پسندی کیمپوں پر حملہ کرنے کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ مودی سرکار نے ملی ٹینسی کا مقابلہ کرنے کے لئے نیا اصول اپنایا ہے۔ اور کانگریس سے یہ واضع کرنے کو کہا کہ کیا وہ این سی کے موقف کی حمایت کرتے ہیں ،جو لگاتار ہوائی حملوں پر شک کر رہے ہیں۔انہوںنے کہا کہ گُذشتہ پانچ برسوں میں حلقہ میں کافی ترقیاتی اکم انجام دئے گئے ہیں۔سابقہ ایم ایل اے آر ایس پٹھانیہ و پارٹی کے دیگر کارکنوں نے بھی اجتماعات سے خطاب کیا۔