مغل شاہراہ سے برف ہٹانے کا عمل پونچھ سے بھی شروع

مینڈھر//خطہ پیر پنچال کووادی ٔ کشمیر سے جوڑنے والی واحد مغل شاہراہ پر برف ہٹانے کا عمل بالآخر پونچھ کی طرف سے بھی شروع کیاگیا ہے جبکہ شوپیاںکی طرف سے برف ہٹانے کا سلسلہ جاری ہے تاہم گزشتہ دو روز کی خراب موسمی صورتحال کی وجہ سے اس کام میں رکاوٹیں پیش آرہی ہیں۔مغل روڈ ڈویژن کے حکام نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ پونچھ کی جانب سے بالآخر برف ہٹانے کیلئے مشینری مغل روڈ تک پہنچائی گئی ہے اور منگل کو برف ہٹانے کا سلسلہ شروع کیاگیا۔حکام نے بتایا کہ منگل کو صبح سے سہ پہر چار بجے تک برف ہٹانے کا سلسلہ جاری رہا جس کیلئے ایک سنو کٹر مشین اور ایک جے سی بی کام پر لگایا گیاتھا۔حکام کا کہناتھا کہ شام چار بجے تک کلو میٹر نمبر25سے کلو میٹر نمبر29تک برف ہٹائی گئی اور یوں دن میں سڑک کا چار کلو میٹر حصہ صاف کیاگیا تاہم چار بجے کے بعد علاقہ میں برف باری شروع ہوئی جس کے بعد کام بند کرنا پڑا ۔حکام نے بتایا کہ برف ہٹانے کے عمل میں موسم سازگار ہونے کے ساتھ تیزی لائی جائے گی ۔حکام نے بتایا کہ شوپیاںکی جانب سے بھی برف ہٹانے کا سلسلہ جاری ہے اور منگل کی شام تک دوبجن فوجی کیمپ تک برف ہٹائی جاچکی ہے ۔انہوںنے کہا کہ شوپیان کی طرف سے گزشتہ تین روز سے مسلسل خراب موسمی حالات کی وجہ سے برف ہٹانے کا عمل متاثر رہا ہے اور جونہی موسم سازگار ہوگا تو اس عمل کو تیز کیاجائے گا تاہم انہوں نے کہا کہ پیر گلی کے مقام پر دونوں جانب سے 15فٹ کے آس پاس برف جمع ہے اور اس کو ہٹانے میں کافی وقت درکار ہوگا ۔حکام کا ماننا ہے کہ موسم سازگار رہنے کی صورت میں مارچ کے اختتام تک شاہراہ سے برف ہٹائی جائے گی اور اپریل کے پہلے ہفتہ میں شاہراہ کو قابل آمد ورفت بنایا جاسکتا ہے۔