مزید خبرں

راجوری کے امن کو خراب کرنے کی کوشش 

محمد بشارت 
کوٹرنکہ //راجوری ضلع صدر مقام پر گزشتہ دنوں پیش آئے واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے معززین نے کہاکہ کچھ عناصر ضلع کے پُر امن حالات کو خراب کرنے کی کوششیں کررہے ہیں تاہم اس سازش کو کبھی بھی کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا ۔یہاں جاری ایک بیان میں سماجی کارکن محمد فاروق انقلابی نے کہاکہ راجوری میں گزشتہ دنوں کئے گئے گرینڈ حملے میں انسانی جان ضائع ہوئی ہے تاہم اس طرح کے ناپاک ارادوں کو کبھی بھی کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا ۔انہوں نے کہاکہ کچھ عناصر ضلع میں پُر امن حالات کو بگڑانے کی سازشیں کررہے ہیں ۔انہوں نے حملے میں کمسن کی ہوئی ہلاکت پر افسوس کا اظہا رکرتے ہوئے واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کی ۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ اس واقعہ میں ملوث افراد کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے ۔
 

بے گناہوں کا قتل سنگین جرم اور انسانیت کا قتل :علماء

عظمیٰ یاسمین
 تھنہ منڈی // سب ڈویژن تھنہ منڈی کی مساجد میں تمام مکاتب فکر کے علمائے کرام نے اپنے جمعہ کے خطابات میں کہا کہ بے گناہوں کا قتل ایک سنگین جرم بلکہ انسانیت کا قتل ہے۔ اس موقع پر علماء نے گزشتہ دنوں راجوری کے دھنماچکلی گاؤں میں ایک اٹھائیس سالہ نوجوان انکوش شرما ولد بچن کمار کے سفاکانہ قتل اور گزشتہ روز راجوری میں کھانڈلی پل کے نزدیک رہائش پذیر بی جے پی لیڈر جسبیر سنگھ کے گھر کے اندر جمعرات کی شام دیر گئے پراسرار دھماکہ کی پرزور الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ اسلام میں دہشت گردی کا کوئی مقام نہیں ہے اور نہ ہی اسلام اس کی اجازت دیتا ہے۔تمام مکاتب فکر کے علمائے کرام نے دھڑماں چکلی گاؤں میں انکوش شرما کے بیہمانہ قتل اور کھانڈلی علاقہ میں دہشت گردانہ کارروائی کی سخت الفاظ میں مذمت کی جس میں ایک کمسن اور بے گناہ بچہ اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھا۔ اس واقعے میں دیگر چھ افراد زخمی بھی ہوئے ہیں جو ہسپتال میں زیرِ علاج ہیں۔ علماء نے مزید کہا کہ ہم اس بدترین قتل اور اس طرح کی دہشت گردانہ کارروائیوں کی شدید مذمت کرتے ہیں اور اس واقعے میں ہلاک اور زخمیوں ہونے والوں کے خاندانوں اور ان کے چاہنے والوں کے ساتھ دل کی گہرائیوں سے تعزیت کرتے ہیںاور ان کے غم میں برابر کی شریک ہیں۔علمائے کرام نے ضلع انتظامیہ اور گورنر انتظامیہ سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ایسے شرپسند عناصر کو فوری طور پر گرفتار کرکے سخت کارروائی عمل میں لائی جائے ۔
 
 

سیکورٹی فورسز کو یوم آزادی سے قبل کامیابی ملی 

مینڈھر میں آئی ای ڈی برآمد کرکے کیس درج کرلیا 

جاوید اقبال 
مینڈھر //یوم آزادی سے قبل جموں وکشمیر پولیس اور سیکورٹی فورسز نے ایک بڑی کامیابی حاصل کرتے ہوئے آئی ای ڈی برآمد کرکے معاملہ درج کر لیا ہے ۔پولیس نے بتایا کہ ایک خفیہ اطلاع موصول ہونے کے بعد جموں وکشمیر پولیس اور بی ایس ایف نے مینڈھر سب ڈویژن کے کوٹاں موڑ علاقہ میں ایک ناکے کے دوران گاڑیوں کی چیکنگ کا عمل شروع کیا گیا ۔انہوں نے بتایا کہ اس چیکنگ مہم کے دوران ایک مشکوک شخص کی کی گئی تلاشی کے دوران سیکورٹی ایجنسیوں نے محمود حسین ولد محمود منشی سکنہ کسبلاڑی کے قبضہ سے آئی ای ڈی برآمد کرلیا ۔سیکورٹی ایجنسیوں نے بتایا کہ مذکورہ شخص کے قصبہ سے دس ہزار پانچ سو روپے نقدی بھی ضبط کرلی گئی جبکہ اس سلسلہ میں ایک معاملہ زیر ایف آئی آر نمبر 313/2021درج کر تے ہوئے مزید تحقیقاتی عمل بھی شروع کر دیا گیاہے ۔
 
 
 

ڈرائیوروں پر اضافی کرایہ وصول کرنے کا الزام 

بختیار کاظمی
سرنکوٹ//سرنکوٹ کے متعدد علاقو ں کی رابطہ سڑکوں پر ڈرائیورں کی جانب سے اضافی کرایہ وصول کیا جارہا ہے جس کی وجہ سے مسافروں کو دوران آمد ورفت شدید مشکلات کا سامنا کرناپڑرہا ہے ۔مسافروں نے متعلقہ محکمہ و ضلع انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ کووڈ کے دور میں بھی ڈرائیوروں کے غیر قانونی عمل پر کوئی روک نہیں لگائی گئی ۔مکینوں نے بتایا کہ ایک کلو میٹر سفر کیلئے بھی ڈرائیوروں کی جانب سے دگنا کرایہ وصول کیا جارہا ہے تاہم ان کی جانب سے تنقید کرنے پرمسافروں کو غیر ضروری طور پر ہراساں کیا جارہا ہے تاہم متعلقہ حکام کو مطلع کرنے پر بھی ابھی تک کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی گئی ۔انھوں نے کہا کہ لاک ڈاون کے بھی ڈرائیورطبقہ نے الگ بھگ چھ ماہ سے اضافی کرایہ وصول کر رہے ہیں جس میں سنئی اور شیندرہ سرنکوٹ تا لسانہ سرنکوٹ تا اپر سنئی، سرنکوٹ تا سانگلہ فضلاآباد کے علاوہ کئی ایسے علاقے موجود ہیں جہاں لوگوں سے اضافی کرایہ وصول کیا جارہا ہے ۔مسافروں و مکینوں نے انتظامیہ سے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ ڈرائیوروں کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے ۔اسسٹنٹ ریجنل ٹرانسپورٹ آفیسر پونچھ نے بتایا کہ اضافی کرایہ وصول کرنے والوں کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی ۔
 
 
 

پونچھ میں صفائی مہم چلائی گئی 

حسین محتشم
پونچھ//5 جے اینڈ کے بٹالین این سی سی پونچھ کے این سی سی کیڈٹس نے 12 اور 13 اگست 2021 کو شہداء کی یادگاروں اور جنگی یادگاروں کی صفائی کی مہم چلاتے ہوئے "آزادی کا امرت مہااتسوو" منایا۔اس دوران بریگیڈیئر پریتم سنگھ ، ڈی ایس پی منجیت سنگھ ، لیفٹیننٹ جنرل دولت سنگھ اور لیفٹیننٹ جنرل بکرم سنگھ کی یادگاروں کے احاطہ میں صفائی کی گئی۔یہ پورا پروگرام کمانڈنگ آفیسر کرنل شری کانت رائے کی نگرانی میں انجامدیا گیا ، جنہوں نے اپنے افتتاحی خطاب میں این سی سی کیڈٹس سے یقین دہانی کرائی کہ مستقبل میں بھی جنگی یادگاروں کے وقار اور سالمیت کو برقرار رکھنے کے لیے اس طرح کی مہم چلائی جائے گی۔ یہ صفائی مہم "آزادی کا امرت مہااتسوو" کے ایک حصے کے طور پر نوجوانوں میں صفائی ستھرائی جذبے کو بڑھاوا دیناے اور شہداء کا احترام کرنے کے مقصد سے چلائی گئی۔