عمر3روزہ دورے پر کشتواڑ وارد،کارکنان کا والہانہ استقبال بس سٹینڈ میںعوام سے خطاب، آزاد پارٹی پر ووٹوں کو تقسیم کرنے کا الزام

عاصف بٹ

کشتواڑ//نیشنل کانفرس کے نائب صدر تین روزہ دورے پر سوموار کی بعد دوپہر کشتواڑ پہنچے جہاں انکا پارٹی کےکارکنان و دیگر سینئر لیڈران نے والہانہ استقبال کیا ۔انکے ہمراہ پارٹی کے سینئرلیڈ رتن لال گپتا ،سجاد احمد کچلو ،ڈی ڈی سی چیئرپرسن کشتواڑ و دیگرلیڈر موجود تھے۔ مالی پیٹھ سے سینکڑوں کارکنان نے عمر عبداللہ کی سربراہی میں ریلی نکالی جسکےبعد بس سٹینڈ پر بھاری اجتماع سے خطاب کیا۔ اس موقعہ پر عمر عبداللہ نے بی جے پی و آزاد پارٹی پر حملہ کیا ۔ انھوں نے بتایا کہ دفعہ 370کی منسوخی کے بعد نیا جموں کشمیر بنانےکے بڑے دعوے کئے جارہے تھے لیکن گزشتہ پانچ سال سے تعمیر و ترقی صفر ہے، دفعہ 370تعمیرو ترقی میں روکاوٹ ہیں اور اسکے ہٹنے کے بعد نئے کارخانے کھلیں گے لیکن پانچ سال بعد ا بھی کارخانہ کشتواڑ میں نہ کھل سکا۔ خوشحال جموں کشمیر کے خواب عوام کو دکھائےگئے لیکن عوام اسکا بے صبری سے انتظار کررہی ہے۔چار پاور پروجیکٹ ہونے کے بعد بھی یہاں کے لوگوں کو روزگار نہیں ملا اور باہر سے لوگوں کو لاکر انھیں کام دیاگیا لیکن یہاں کے نوجوانوں کو بےروزگار رکھا گیا ۔یہاں کی بجلی پر بھی ہمارا حق نہیں ہے ریٹلی پاورپروجیکٹ کو راجستھان کوچال سال کیلے بیچاگیا کیا ہمیں ا س بجلی پر کوئی حق نہیں ہوگا،اس سرکار نے ہمیں سوائے دکھ، پریشانی و مایوسی کے کچھ نہ دیا۔آزاد پارٹی پر حملہ کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ انھیں صرف ووٹوں کو تقسیم کرنے کیلئے رکھاگیاہے۔ انھوں نے کہا کہ دومرتبہ غلام نبی آزاد جو فاروق عبداللہ کی بدولت راجیہ سبھا جانے کا موقعہ ملا، آج وہ ہمارے خلاف بول رہے ہیں جب آزادنے کانگریس چھوڑی، ہم نے سمجھا کوئی مجبوری رہی ہوگی اور انتظار کیا۔بالآخر جب انھوں نے فاروق عبدللہ کے خلاف بیان بازی کی تب ہمیں پتہ چلا کہ انکی کیا مجبوری رہی ہوگی، آزاد کو بی جے پی نے سیدھا ووٹوں کو تقسیم کرنے کیلئے رکھا ہواہے۔سرکاری کی جانب سے انھیں ہر سہولیات مل رہی ہیں، یہ سرکار کسی کو بخشنے والی نہیں ہے جب راہل گاندھی کو پارلیمنٹ سے نکالاگیا تو ایک ماہ میں ان سے سرکاری رہایش گاہ خالی کرائی گئی لیکن تین سال گزرجانے کے بعد بھی آزاد سرکاری رہایش گاہ میںہیں۔انہوںنے کہاکہ بالٹی والے جموں کشمیرمیں ووٹوں کو تقسیم کرنے کیلئے نکلے ہوئے ہیں،انھوں نے وادی چناب کے علاوہ کسی دوسری جگہ اپنے امیدوار کیلئے ووٹ کیوں نہیں مانگے، یہ خود الیکشن جیتنے کیلئے نہیںلڑرہے ہیںبلکہ ووٹوں کو تقسیم کرنے کیلئے لڑرہے ہیں۔ انھوں نے انتخابات میں انڈیا الاینس کے امیدوار کے حق میں ووٹ ڈالنے کی عوام سےاپیل کی۔ عمر عبداللہ آج پاڈر و ناگسینی کا دورہ کرینگے۔