سپریم کورٹ نے 10فیصد ریزرویشن پر پابندی سے انکار کیا

نئی دہلی//سپریم کورٹ نے عام زمرے کے اقتصادی طورپر کمزور لوگوں کو 10 فیصد ریزرویشن دینے کیفیصلے پر پابندی لگانے سے انکار کرتے ہوئے جمعہ کو کہا کہ وہ اس مسئلے کی تحقیق کرے گا۔چیف جسٹس رنجن گوگوئی کی صدارت والی بینچ نے مفاد عامہ کی ایک عرضی پر سماعت کرتے ہوئے عام زمرے کے اقتصادی طورپر کمزور لوگوں کو 10 فیصد ریزرویشن دینے کیفیصلے پر پابندی لگانیسے انکار کردیا۔بینچ نے ریزرویشن کو چیلنج دینے والی غیر سرکاری تنظیم (این جی او)’یوتھ فار اکوالیٹی‘ کی عرضی پر مرکزی حکومت کو نوٹس بھی جاری کیا ہے اور اس سے چار ہفتے کے اندر جواب طلب کیا ہے۔عرضی میں 103ویں ا?ئینی ترمیمی ایکٹ 2019 کو چیلنج کیا ہے،جس کے تحت سرکاری نوکریوں اور تعلیمی اداروں میں عام زمرے کے کمزور لوگوں کو 10فیصد ریزروشین دینے کا انتظام کیاگیا ہے۔یواین آئی