بے روزگاری و مہنگائی کا حل کانگریس کے پاس: پرینکا بھاجپا کیلئے 400 سیٹوں کا حصول مشکل: راہل گاندھی

عظمیٰ نیوزڈیسک

بھاگلپور// کانگریس رہنما راہل گاندھی نے بھاجپاکونشانہ بناتے ہوئے کہا کہ بی جے پی کو 150 سے زیادہ سیٹیں نہیں ملیں گی۔ انہوں نے اگنی ویر اسکیم کو لے کر مودی حکومت پر حملہ کیا۔راہل گاندھی نے بھاگلپور کے سینڈیز کمپاؤنڈ میں انتخابی ریلی سے خطاب کیا۔ راہل گاندھی نے ریلی میں حکمراں پارٹی پر سخت نشانہ لگایا۔ انہوں نے اسٹیج پر بتایا کہ یہ الیکشن آئین کو بچانے کا الیکشن ہے۔ آر ایس ایس اور بی جے پی آئین کو تباہ کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ پورے ملک میں چند ہی لوگ ہیں جن کے پاس پورے ہندوستان کا پیسہ ہے۔ نریندر مودی کے بھارت میں 70 کروڑ لوگ ایسے ہیں جن کی آمدنی 100 روپے سے کم ہے۔راہل گاندھی نے اس انتخابی ریلی میں دعویٰ کیا کہ اس بار بی جے پی کو 150 سے زیادہ سیٹیں نہیں ملیں گی۔ اس لیے بی جے پی چاہے جتنے بھی دعوے کرے، وہ 150 سے زیادہ سیٹیں حاصل نہیں کر پائے گی۔ نریندر مودی نے 22-25 صنعت کاروں کے 16 لاکھ کروڑ روپے معاف کر دیے ہیں۔ اگر ہماری حکومت بنی تو ہم غریبوں کے قرضے اتنے ہی معاف کر دیں گے جتنے امیروں کے قرضے معاف کیے گئے ہیں۔ اگر ہماری حکومت آتی ہے تو کانگریس پارٹی آپ کے بینک اکاؤنٹ میں سالانہ ایک لاکھ روپے اور ماہانہ 8500 روپے جمع کرے گی۔ہم غریب خاندانوں کو اتنی ہی رقم دیں گے جتنی مودی حکومت نے سرمایہ داروں کو دی تھی۔ ہم خاندان کی ایک خاتون رکن کے نام پر بینک اکاؤنٹ میں سالانہ ایک لاکھ روپے جمع کرائیں گے اور رقم فوری اکاؤنٹ میں جمع کرائی جائے گی۔ ہندوستان بے روزگاری کا مرکز بن چکا ہے۔ یہاں کے نوجوانوں میں اتنی بے روزگاری ہے کہ وہ 7-8 گھنٹے انسٹاگرام اور فیس بک استعمال کرتے ہیں۔ ادھرکانگریس کی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے کہا ہے کہ اس وقت ملک میں مہنگائی اور بے روزگاری اپنے عروج پر ہے اور کانگریس کے پاس ایسے تمام مسائل کا حل ہے۔انہوں نے کہا کہ ان مسائل کا حل کانگریس کے منشور میں ہے ۔