کپوارہ کے ادویہ فروش سراپا احتجاج

کپوارہ//سب ضلع اسپتال کپوارہ کے آس پاس تعمیرات کھڑا کرنے کے خلاف مقامی ادویہ فرشو ں نے صوبائی کمشنر کشمیر سے رجوع کیا اور اس پر فوری طور روک لگانے کا مطالبہ کیا ہے ۔ادویہ فرشو ں نے کشمیر عظمیٰ کو بتا یا کہ عرصہ دراز سے اسپتال کے ارد گرد رہائش پذیر لوگ اسپتال کی دیوار بندی کو اپنے ذاتی مفادات کی خاطر نقصان پہنچا رہے ہیں تاکہ وہ اسپتال احاطہ کو آسانی سے راستہ کے طور استعمال کریں  ۔انہوںنے خدشہ ظاہر کیا کہ اسپتال کی دیوار بندی کو نقصان پہنچا کر انہیں غیر قانونی کارو بار کرنے کا موقع مل سکے گا ۔انہو ں نے الزام لگایا کہ جو لوگ یہ غیر قانونی کام کرتے ہیں انہیں سیاسی پشت پناہی بھی حاصل ہے کیونکہ اس سے قبل کپوارہ قصبہ کے ساتھ ساتھ دور دراز علاقوں کے لوگو ں نے مسلسل یہ اصرار کیا کہ اسپتال کے ارد گرد مضبوط دیوار بندی کی جائے لیکن سیاسی اثر و رسو خ رکھنے والے لوگو ں نے ہر بار اس میں اڑچنیں پیدا کیں ۔قصبے کے ادویہ فروشوںنے صوبائی کمشنر کشمیر کے دفتر سے رجوع کیا جس کا انہو ں نے سخت نو ٹس لیتے ہوئے ایک حکمنامہ زیر نمبر DIV.Com/Mic/ps/2019/232ضلع ترقیاتی کپوارہ کے نام جاری کیا اور انہیں فوری مداخلت کرنے کی ہدایت دی اور اُن کے دفتر کو 7روز کے اندر اندر رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت بھی دی ۔