کپتان کے طور پر بھونیشور اور بمراہ سے مطمئن ہوں: وراٹ

ڈربن/ ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے کپتان وراٹ کوہلی نے جنوبی افریقہ کے خلاف پہلے ون ڈے میں ملی جیت پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے اس کا کریڈٹ تیز گیندبازوں بھونیشور کمار اور جسپریت بمراہ کو دیا ہے ۔جنوبی افریقہ کے خلاف جمعرات کو پہلے ون ڈے میں ہندستان نے چھ وکٹ سے جیت اپنے نام کی تھی جس میں کپتان وراٹ نے 119 گیندوں میں 10 چوکو ں سے آراستہ 112 رنز کی سنچری اہم تھی اور وہ اس کی بدولت مین آف دی میچ بھی چنے گئے ۔چھ میچوں کی سیریز میں ہندستان اب 1۔0 سے آگے ہے ۔وراٹ نے میچ کے بعد کہا کہ میرے لیے یہ بہت خاص ہے ۔سیریز کا پہلا میچ ہمیشہ اہم ہوتا ہے ۔ ہم چاہتے تھے کہ ہم برتری کے ساتھ آغاز کریں اور جب ہم نے اس پچ پر افریقہ کو 270 پر روک دیا تو ہم بہت خوش تھے ۔انہوں نے کہا کہ اس پچ پر تیز گیند بازی کی سب سے زیادہ اہمیت ہے اور ٹیم کے پاس بھونیشور اور بمراہ جیسے کھلاڑی ہیں جن پر ٹیم کا سب سے زیادہ انحصار ہے ۔وراٹ نے کہا کہ ہم چاہتے تھے کہ شروع میں ایک یا دو وکٹ حاصل کر لیں ۔ پھر ہمارے پاس دو اسپنر بھی موجود ہیں۔ دونوں ہی شاندار کھیل رہے ہیں اور جنوبی افریقہ میں ان کا پہلا دورہ ہے ۔مین آف دی میچ وراٹ نے اگرچہ اپنے دونوں تیز گیندبازوں کی سب سے زیادہ تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ میں بطور کپتان بھونیشور اور بمراہ سے بہت خوش ہوں کیونکہ ان دونوں کو پتہ ہے کہ کیا کرنا ہے ۔یہ دونوں بہت ہی بہادر کھلاڑی ہیں اور اس لئے ہم ان پر انحصار کرتے ہیں۔دریں اثنا کوہلی نے ون ڈے کیریئر میں کل 33 ویں اور بطور کپتان 11 ویں سنچری بنا کر سابق ہندستانی کپتان سورو گنگولی کے ریکارڈ کی برابری کر لی۔وراٹ نے جمعرات کو یہاں میزبان جنوبی افریقہ کے خلاف چھ میچوں کی ون ڈے سیریز کے پہلے میچ میں 112 رنز کی سنچری اننگز کھیل کر کپتان کے طور پر 11 ویں سنچری مکمل کی۔ وراٹ نے جہاں کپتان کے طور پر 11 ویں سنچری بنانے کے لئے صرف 41 اننگز کا سہارا لیا تو وہیں گنگولی نے 142 اننگز میں یہ کامیابی حاصل کی تھی۔رنز کا تعاقب کرتے ہوئے وراٹ کی یہ 20 ویں سنچری تھی جس سے 18 بار ہندستان نے جیت درج کی ہے ۔وراٹ کی جنوبی افریقہ میں ون ڈے کرکٹ میں یہ پہلی سنچری تھی اور اس کے ساتھ ہی انہوں نے پاکستان کو چھوڑ کر ان تمام نو ممالک میں سنچری لگائی ہے جہاں انہوں نے ون ڈے میچ کھیلے ہیں ۔کپتان وراٹ نے 119 گیندوں میں 10 چوکوں کی مدد سے شاندار 112 رنز بنائے اور اپنے ون ڈے کیریئر کی 33 ویں سنچری بنا ڈالی ۔ وراٹ کی اس کپتانی اننگز کی بدولت ہندستان نے پہلے دن رات ایک روزہ میچ میں جنوبی افریقہ کو 27 گیند باقی رہتے چھ وکٹ سے شکست دے کر چھ میچوں کی ون ڈے سیریز میں 1۔0 کی برتری حاصل کر لی اور ساتھ ہی آئی سی سی ون ڈے رینکنگ میں نمبر ون مقام بھی حاصل کر لیا۔