پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں میں ایک بار اکثریت حاصل ہوجائے

دھرم پور//بھارتیہ جنتاپارٹی کے صدرامیت شاہ نے کہا ہے کہ پارلیمان کے دونوں ایوانوں میں اکثریت حاصل ہوتے ہی اُن کی جماعت آئین کی دفعہ370جوجموں کشمیرکوخصوصی درجہ عطا کرتی ہے،کوختم کرے گی۔گجرات کے ولسادضلع میں ایک انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے یہ بھی کہا کہ قومی سلامتی جاری لوک سبھا انتخابات کابنیادی معاملہ ہے ۔شاہ نے کہا کہ ہم نے پہلے ہی اپنے چنائو منشور میں کہا ہے کہ ایکبار پارلیمان کے دونوں ایوانوں میں اکثریت حاصل ہوتے ہی ہم دفعہ370کوختم کریں گے تاکہ کشمیربھارت کا اٹوٹ انگ مستقل طور بن جائے ۔اس وقت بی جے پی کو راجیہ سبھامیں اکثریت حاصل نہیں ہے ۔ا نہوں نے کہا کہ اس وقت لڑائی ترقی کیلئے نہیں ہے۔اس میں شک نہیں ہے کہ وزیراعظم نریندرمودی کی قیادت میںترقی ہوئی۔ اس  وقت جو معاملہ درپیش ہے وہ قومی سلامتی کاہے اور صرف مودی اور بھارتیہ جنتاپارٹی ہی یہ فراہم کرسکتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ صرف مودی ہی بھارت کوعظیم طاقت بناسکتے ہیں ۔پلوامہ حملے کے بعد پاکستان کے اندرون بالاکوٹ میں بھارتی فضائیہ کے حملوں کاحوالہ دیتے ہوئے شاہ نے کہا کہ جب پورا ملک شادیانے منارہاتھا کانگریس سوگوار تھا۔