مزید خبریں

 گرو گوبند سنگھ کے پرکاش پورب پر 'نگر کیرتن' نکالا گیا 

جموں//سکھوں کے دسویں گروشری گرو گوبند سنگھ جی مہاراج کے آنے والے پرکاش پور ب کے سلسلے میں سکھ برادری کے اراکین اور دیگر لوگوں کی طرف سے  جموں میں ایک متاثر کن 'نگر کیرتن' نکالا گیا ۔'شوبھا یاترا' جموں شہر کے مختلف علاقوں سے گزری۔ اس موقع پر ہر رنگ و نسل کے لوگوں نے شرکت کی جس میں نامور مبلغین نے گرو گوبند سنگھ جی مہاراج کی تاریخ، زندگی اور تعلیمات پر روشنی ڈالی۔ ہندو برادری سے تعلق رکھنے والے لوگوں کی بڑی تعداد نے بھی گرو کو خراج عقیدت پیش کیا۔ سکھ نوجوانوں نے راستے میں مارشل آرٹ (گھٹکا) کا مظاہرہ کیا اور 'نگر کیرتن' کے دوران بہت سے کرتب دکھائے۔ بڑی تعداد میں عقیدت مند نگر کیرتن کے راستے میں سڑک پر جھاڑو لگا رہے تھے۔ حکام نے 'نگر کیرتن' کے لیے وسیع انتظامات کیے تھے اور ٹریفک کو بھی جلوس کے راستوں سے دوسرے راستوں کی طرف موڑ دیا گیا تھا۔نگر کیرتن کے استقبال کے لیے راستے میں دکانداروں اور دیگر انجمنوں نے استقبال کے دروازے کھڑے کر دیے تھے۔ اس کے علاوہ ناگر کیرتن میں حصہ لینے والے عقیدت مندوں کی خدمت کے لیے مختلف مقامات پر شرکاء کو کھانے پینے کی اشیاء، پھل، پانی اور جوس فراہم کرنے والے اسٹال بھی لگائے گئے تھے۔
 
 
 
 
 
 
 

مشیر فارو ق خان کامیڈیکل کالج جموں کادورہ 

رام گڑھ واقعہ کے زخمی افراد کی خیرو عافیت دریافت کی

 جموں//لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر فاروق خان نے گورنمنٹ میڈیکل کالج جموںکا دورہ کیا اور ان مزدوروں کی خیر و عافیت دریافت کی جو کل سانبہ ضلع کے رام گڈھ علاقے میں پُل گرنے کے واقعہ میں زخمی ہوئے تھے۔مشیرموصوف نے زخمیوں اور اُن کے لواحقین سے بات چیت کی اور انہیں صحت اِنتظامیہ کی طرف سے بہترین طبی سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنایا۔اُنہوں نے پرنسپل جی ایم سی جمو ںکو ہدایت دی کہ وہ ان اَفراد کو تمام مطلوبہ طبی علاج و معالجہ فراہم کرنے کی ہر ممکن کوشش کریں تاکہ وہ جلد صحت یاب ہوسکیں۔مشیر فارو ق خان نے کہا کہ حکومت اِس واقعہ میں جان کی بازی ہارنے والے شخص کے لواحقین اور زخمیوں کو بھی جموں و کشمیر بلڈنگ اور دیگر تعمیراتی ورکرس ویلفیئر بورڈ سکیم کے مطابق 2لاکھ روپے کی مالی اِمداد فراہم کرے گی ۔لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر فاروق خان نے بارڈر روڈ آرگنائزیشن کو ضروری ہدایات جاری کیں کہ وہ مستقبل میں اِس طرح کے واقعات سے بچنے کے لئے ہرممکن کوشش کریں اور تعمیراتی کاموں کے دوران پیرا میٹروں کے تمام رہنما اَصولوں پر عمل کریں۔اِس موقعہ پر مشیر فارو ق خان نے بی آر او حکام پر زور دیا کہ وہ متاثرہ مزدوروں کو ورک مین کمپنسیشن ایکٹ کے مطابق جلد از جلد معاوضہ ادا کریں اور ان کے طبی اخراجات کا بھی خیال رکھا جائے اور مستقبل میں تمام مزدوروں کو ورکرس ویلفیئر بورڈ میں رجسٹرڈ کیا جائے۔مشیر موصوف نے اَن لوگوں کی صحت کے بارے میں بھی خیرو عافیت دریافت کی جو ماتا ویشنو دیوی سے واپسی کے بعد کد کے قریب حادثہ کا شکا ر ہوئے۔
 
 

 ببلیاں ، بڈیال براہمنہ میں ہائی ٹیک زرعی سرگرمیوںکا معائینہ کیا

جموں //لفٹینٹ گورنر کے مشیر فاروق خان نے زراعت کے شعبے میں لاگو کی جانے والی ہائی ٹیک مداخلتوں کا معائینہ کرنے کیلئے فیلڈکا تفصیلی دورہ کیا ۔ مشیر نے 68 کنال رقبے پر پھیلے ہوئے ببلیاں میں سانک فارم کا معائینہ کیا جہاں انہوں نے ایک نجی زرعی کاروباری ایس ایس وزیر کی طرف سے CAPEX2019-20  کے تحت محکمہ زراعت جموں کے فعال تعاون سے تیار کردہ قدرتی طور پر ہوا دار پولی گرین ہاوس ( NVPGH ) کے کام کاج کا جائیزہ لیا ۔ مشیر نے اس موقع پر کاشتکاروں کے ایک گروپ کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے محفوظ کاشت کے فروغ پر زور دیا جس سے اعلیٰ قیمت والی سبزیوں کی بیماریوں سے پاک معیاری پودوں کی پیداوار میں مدد ملتی ہے اور کھیتی کی آمدنی میں کئی گنا اضافہ کرنے کی صلاحیت موجود ہے ۔ انہوں نے کسانوں پر زور دیا کہ وہ آگے آئیں اور حکومت کی طرف سے شروع کی گئی مختلف فلاحی اسکیموں جیسے پی ایم ایف بی وائی ، کے سی سی ہائی ڈینسیٹی پلانٹیشن اور متعلقہ پروگراموں سے فائدہ اٹھائیں ۔ فاروق خان نے اس بات کو سراہا کہ کئی پڑھے لکھے نوجوان کھیتی باڑی کو کل وقتی پیشے کے طور پر اپنانے کیلئے آگے آ رہے ہیں جس سے دوسرے بے روز گار نوجوانوں کو بھی روزگار مل رہا ہے ۔ مشیر نے زراعت اور باغبانی کے محکموں کے افسران کو کسانوں میں لاگت سے موثر کاشتکاری ٹیکنالوجی تیار کرنے اور پھیلانے کی ہدایت دی ۔ انہوں نے کلسٹر کی بنیاد پر آرگینک فارمنگ کو فروغ دینے اور اس کی حوصلہ افزائی کرنے کیلئے بھی کہا ۔ بعد میں بڈیال براہمنہ میں مشیر نے ایک نجی کاروباری رمن گپتا کے ہائی ٹیک مشروم یونٹ کا دورہ کیا ، جو محکمہ زراعت کی تکنیکی رہنمائی کے ساتھ قائم کیا گیا تھا ۔ انہیں بتایا گیا کہ یہ یونٹ 3500 بیگ کی گنجائش کے 10 کراپنگ رومز پر مشتمل ہے ۔ انہوں نے اس منصوبے کے مختلف یونٹس کا بھی دورہ کیا جس میں آٹو میٹک پاسچرائزڈ مشروم کمپوسٹ بنانے کا پلانٹ شامل ہے ۔ انہیں بتایا گیا کہ مشروم یونٹ نے 35 افراد کو روز گار فراہم کیا ہے ۔ مشیر نے افسران کو ہدایت دی کہ وہ ایسے بڑے زرعی کاروباریوں کو تکنیکی معلومات ، پیکجنگ ، برانڈنگ اور مارکیٹنگ کے حوالے سے سہولت فراہم کریں ۔ دریں اثنا مشیر نے مربوط فارمنگ ماڈل کا بھی معائینہ کیا جس میں پھلوں ، جنگلات اور پھولدار پودوں کی کاشت کے علاوہ 6 آبپاشی بورویل شامل تھے ۔ 
 
 
 
 
 
 

رام بن میں 2174 بچوں کو ٹیکے لگائے گئے 

کووڈ ایس او پیز کی خلاف ورزی پر36ہزار کا جرمانہ وصول

 رام بن//ضلع رام بن میں 15-18 سال کی عمر کے گروپ کے لیے کووِڈ ٹیکہ کاری مہم کے آغاز کے پہلے دن 2174 بچوں کو ٹیکے لگائے گئے۔ضلع امیونائزیشن آ فیسررام بن ڈاکٹر سریش کے مطابق، محکمہ صحت نے 2294 لوگوں کو ٹیکہ لگایا جس میں 15-18 سال کی عمر کے 2174 بچے شامل ہیں جن میں میڈیکل بلاک بانہال میں 600، بٹوت میں 876، اکھرال میں 435 اور گول میں 263 شامل ہیں۔سی ای او کے مطابق رام بن ضلع کا 15-18 سال کی عمر کے گروپ میں کل 19268 ہدف ہے۔ادھرپورے ضلع رام بن میں کووڈ پروٹوکول کو نافذ کرنے کی مہم کو جاری رکھتے ہوئے انفورسمنٹ ٹیموں نے چہرے کے ماسک پہنے بغیر گھومنے اور جسمانی فاصلہ برقرار نہ رکھنے پر جرمانہ عائد کیا۔انفورسمنٹ ٹیموں نے اپنے اپنے دائرہ کار میں معائنہ کے دوران 36,400 جرمانے کا جرمانہ وصول کیا۔ انفورسمنٹ افسران نے لوگوں پر زور دیا کہ وہ چہرے کے ماسک پہنیں اور جسمانی فاصلہ برقرار رکھنے کے علاوہ اپنے قریبی CVC پر کوویڈ ٹیکہ کاری کی خوراک لیں۔چیف میڈیکل آفیسر رام بن کے ذریعہ جاری کردہ روزانہ بلیٹن کے مطابق محکمہ صحت نے 2516 نمونے اکٹھے کیے ہیں جن میں 618آر ٹی پی سی آراور 1898آر اے ٹی نمونے شامل ہیں جبکہ اس کے علاوہ ضلع میں مخصوص ٹیکہ کاری مراکز میں 2294 افراد کو کووڈ ویکسین پلائی گئی ہے۔
 
 
 
 
 
 

سانبہ میںزیر تعمیر پل گرنے کی تحقیقات کا حکم

 جموں//جموں و کشمیر انتظامیہ نے سانبہ ضلع میں زیر تعمیر پل پر لوہے کے شٹرنگ گرنے کی مجسٹریل تحقیقات کا حکم دیا ہے جس کے نتیجے میں 27 افراد زخمی ہوئے ۔ حکام نے بتایا کہ رام گڑھ کولپور میں دیویکا ندی پر بارڈر روڈز آرگنائزیشن (BRO) کی طرف سے بڑا پل تعمیر کیا جا رہا ہے۔سانبہ کی ڈپٹی کمشنر انورادھا گپتا نے کہا "پل گرنے کی تحقیقات کا حکم دے دیا گیا ہے۔ انکوائری کی سربراہی ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر کریں گے اور رپورٹ تین دنوں میں پیش کی جائے گی"۔انہوں نے کہا کہ ضلعی انتظامیہ زخمیوں کے علاج معالجے کے تمام اخراجات ڈسٹرکٹ ریڈ کراس کے فنڈز سے برداشت کرے گی۔اتوار کی شام تقریباً 4.15 بجے کئی ستونوں میں سے دو کو جوڑنے والا لوہے کا شٹرنگ گر گیا، جس سے کل 27 مزدور زخمی ہوئے۔ڈی سی نے کہا"کنکریٹ سلیب بچھانے کے دوران لوہے کا شٹرنگ گر گیا۔ ایک ریسکیو آپریشن فوری طور پر شروع کیا گیا اور تمام 27 کارکنوں کو قریبی اسپتالوں میں منتقل کیا گیا‘‘۔گپتا نے کہا کہ دو کے علاوہ باقی زخمیوں کی حالت مستحکم ہے اور وہ ہسپتالوں میں زیر نگرانی ہیں۔
 
 
 

صفائی کرمچاریوں کی ہڑتال جاری | سی پی آئی نے احتجاج کی حمایت کی 

عاصف بٹ 
کشتواڑ// چناب ویلی کے صفائی کرمچاریوں کے ساتھ ساتھ ضلع کشتواڑ کے صفائی کرمچاریوں کی اپنے مطالبات کولیکر کام چھوڑ ہڑتال ساتویں روز بھی جاری رہے جس کے سبب قصبہ کے اندر گندگی کے ڈھیر میں مزید اضافہ ہورہا ہے جسے عوام کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔قصبہ میں گندگی کے ڈھیروں کو اٹھانے والا کوئی نہیں ہے۔ اگرچہ انتظامیہ نے چند مقامات پر صفائی عمل میں لائی لیکن بیشتر مقامات پر  گندگی کے ڈھیر جمع ہیں جنھیں ہٹایا نہیں گیا اور اگر آنے والے دنوں میں گندگی کو نہ ہٹایا گیا تو مہلک بیماریوں کے پھیلنے کا خطرہ لاحق ہے۔ادھرکمیونسٹ پارٹی آف انڈیا (سی پی آئی) جموں ریجنل کونسل نے وادی چناب کے صفائی ملازمین کے احتجاج کی اپنی مکمل حمایت کا اعلان کیا، جو گزشتہ 10-15 دنوں سے مسلسل احتجاج کر رہے ہیں۔ایک بیان میںکہاگیا کہ جو لوگ روزانہ ہمارا فضلہ اٹھاتے ہیں اور ہمارے اردگرد کو صاف ستھرا رکھتے ہیں انہیں اپنے حقوق کی جنگ لڑنے کا حق ہے حتیٰ کہ حکومت نے انہیں "کورونا واریئرز" کا خطاب دیا لیکن وہی حکومت ان کے حقیقی مطالبات کو نظر انداز کر رہی ہے۔بیان کے مطابقبہت سے صفائی ملازمین ایسے ہیں جنہوں نے 20 سال سے زیادہ خدمات انجام دی ہیں لیکن ابھی تک ریگولر نہیں ہوئے ، حکومت صفائکارمچاریوں کے ساتھ سوتیلا رویہ کیوں دکھا رہی ہے؟سی پی آئی نے مطالبہ کیا کہ وادی چناب کے تمام صفائی ملازمین کو فوری طور پر ریگولرائز کیا جائے اور لوگوں کو بدبو، گردوغبار اور گندگی سے نجات دلائی جائے۔
 
 
 

صدر دھرمارتھ ٹرسٹ کا اتربہنی، پورمنڈل مندروں کا دورہ ، حفاظتی آڈٹ کیا

جموں//صدر جموں و کشمیر دھرمارتھ ٹرسٹ اجے گنڈوترا نے اتربہنی اور پورمنڈل مندروں کا دورہ کیا اور عقیدت مندوں کو فراہم کی جانے والی سہولیات اورانتظامات کا جائزہ لیا۔ دونوں مندروں کے نگرانوںکے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے صدر دھرمارتھ ٹرسٹ نے کہا کہ شری ماتا ویشنو دیوی کے مزار پر جو سانحہ پیش آیا وہ ہے،وہ سب کے لیے ایک بڑا سبق ہے۔ انہوں نے کہا کہ افسوسناک واقعہ سے جو اندازہ لگایا جا سکتا ہے وہ یہ ہے کہ جن مقامات پر لوگ سجدہ ریز ہونے کے لیے جمع ہوتے ہیں وہاں کسی بھی صورت میں احتیاط کم نہ کی جائے کیونکہ اگر متعلقہ حکام مناسب احتیاط برتتے تو سانحہ ٹل جاتا۔ انہوں نے مذکورہ مندروں کے نگرانوں سے کہا کہ جہاں تک زائرین اور ٹرسٹ کے عملے کی حفاظت کا تعلق ہے چیزوں کو ہلکا نہ لیں۔ انہوں نے کہا کہ سہولیات اور حفاظتی اقدامات کو یقینی بنائیں تاکہ کہیں بھی کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہ آئے۔ انہوں نے کہا کہ ماتا ویشنو دیوی کی مقدس عبادت گاہ کے بھون کے علاقے میں ایک چھوٹی سی غلطی سے بہت بڑا نقصان ہوا ہے اور اس لیے تمام احتیاطی تدابیر کو پہلے ہی اختیار کرنے کا مشورہ دیا جاتا ہے ۔اجے گنڈوترا نے کہا کہ وہ جلد ہی دوبارہ دھرمارتھ ٹرسٹ کے زیراہتمام چلنے والے دیگر مندروں اور مندروں کا دورہ کریں گے تاکہ سیکورٹی اور حفاظتی انتظامات کی بحالی کو یقینی بنایا جا سکے کیونکہ یہ ویشنودیوی مندر میں ہونے والے نقصان کو دیکھتے ہوئے بہت اہم ہے۔
 
 
 

کانگریس نے بی جے پی کی مبینہ ناکامیوں کو اجاگرکیا

لوگ بھاجپاسے تنگ آکر بڑی تعداد میں کانگریس میں شامل ہو رہے ہیں:بھلا
جموں//ضلع کانگریس کمیٹی جموں (اربن) نے پیر کو اپنی ماہانہ میٹنگ شہیدی چوک میں واقع کانگریس دفتر میں منعقد کی تاکہ جموں ضلع میں اپنی ماہانہ کارروائیوں پر تبادلہ خیال کیا جا سکے۔ میٹنگ کی صدارت ورکنگ صدر رمن بھلانے کی جبکہ یوگیش ساہنی، جنرل سکریٹری پی سی سی انچارج ضلعی صدر جموں (یو) بھی موجودتھے۔ میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے ورکنگ صدر رمن بھلا نے کہا کہ جموں بھر کے لوگ ممبر شپ مہم کے ذریعے کانگریس پارٹی میں شامل ہونے کے لیے بے تاب ہیں۔ پارٹی نئے اور پرجوش ارکان حاصل کر رہی ہے اور اس سے ہمیں اپنی رسائی کو نچلی سطح تک بڑھانے میں مدد ملے گی۔انہوںنے کہاکہ اپنے بیداری پروگراموں، مظاہروں اور مظاہروں اور دیگر ان گنت کوششوں کے ذریعے ہم بی جے پی حکومت کی ناکامیوں کے بارے میں بیداری لانے کی مسلسل کوشش کر رہے ہیں جنہوں نے ہندوستانی سماج کو معذور بنا دیا ۔حکومت پر بھارت کو اکیلے ہی تباہ کرنے کا الزام لگاتے ہوئے بھلا نے حکومت پر اس کی خام پالیسیوں اور قوم کو چلانے میں نااہلی کے لیے تنقید کی جو کہ ان کے بقول بالکل واضح ہے۔ انہوں نے زور دے کر کہا کہ کانگریس جموں و کشمیر کے ہر کونے، ہر وارڈ اور گاؤں تک پہنچ رہی ہے اور دور دراز علاقوں میں لوگوں کو ان کی آواز سننے کے لیے ایک پلیٹ فارم فراہم کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی نہ صرف کانگریس کے نظریہ پر بلکہ آئین میں درج انصاف، مساوات اور مثبت کارروائی کے بنیادی اصولوں پر بی جے پی کے منظم حملے کا مقابلہ کرنے کی بھی بھرپور کوشش کر رہی ہے۔
 
 
 

کٹھوعہ میں اسپریشنل بلاک ڈیولپمنٹ پروگرام کے نفاذ کے طریقوں پر تبادلہ خیال 

کٹھوعہ//ضلع میں اسپیریشنل بلاک ڈیولپمنٹ پروگرام (اے بی ڈی پی) کو آسانی سے نافذ کرنے کے طریقوں پر تبادلہ خیال کرنے کے لیے، ڈپٹی کمشنر کٹھوعہ راہل یادو نے ڈی سی آفس کمپلیکس میں متعلقہ افسران کی میٹنگ کی صدارت کی۔کٹھوعہ ضلع میں ABDP کے تحت ڈوگن اور ڈوگین بلاکس کو 21 کارکردگی کے اشاریوں کی بنیاد پر لیا جا رہا ہے جس میں انسانی ترقی کے چار بڑے پہلوؤں یعنی غربت (3 اشارے)، صحت اور غذائیت (6 اشارے)، تعلیم (7 اشارے) اور بنیادی NITI آیوگ، GOI کے ساتھ مشاورت سے انفراسٹرکچر (5 اشارے)شامل ہیں۔ڈی سی نے اے ڈی ڈی سی کٹھوعہ کو ڈسٹرکٹ نوڈل آفیسر اور اے ڈی سی بلاور اور ایس ڈی ایم بنی کو اپنے اپنے بلاکوں میں کاموں کے تال میل کے لیے نوڈل آفیسر مقرر کیا۔ڈی سی نے لائن اینڈ ورکس ڈپارٹمنٹ کے افسران پر زور دیا کہ وہ ضلع کے ان پسماندہ بلاکس میں ترقی کے کلیدی اشاریوں میں بہتری لانے کے لیے کنورجنس موڈ میں سپیشل کمپوننٹ پلان بنائیں۔ڈی سی نے تمام 10 قابل مقدار اشاریوں کو پورا کرنے کا بھی مطالبہ کیا جو کہ بلاور اور بنی انتظامی اکائیوں کے تحت آنے والے بالترتیب ڈوگن اور ڈوگین بلاکس میں ترقیاتی سرگرمیاں کرنے کے لیے 1 کروڑ روپے کے کارپس کے علاوہ محکمہ خزانہ سے اضافی 1 کروڑ روپے حاصل کرنے کے لیے لازمی ہیں۔
 

 منیجنگ ڈائریکٹرجے کے پی سی سی نے ٹھیکیداروںکے مسائل سنے

جموں//جموں و کشمیر پروجیکٹ کنسٹرکشن کارپوریشن کے منیجنگ ڈائریکٹر راجیش کمار شاون نے کنٹریکٹر یونین کے ساتھ ان کی شکایات کو دور کرنے کے لیے میٹنگ کی۔یونین کی نمائندگی صدور عبدالسلام اور راکیش جلالی نے کی۔انہوں نے منیجنگ ڈائریکٹر کو اپنے کچھ مسائل سے آگاہ کیا۔ مینیجنگ ڈائریکٹر نے کنٹریکٹرز یونین کے ممبران پر زور دیا کہ وہ تنظیم کے کاموں کو شفاف طریقے سے انجام دینے کے لیے جوش، ایمانداری اور لگن کے ساتھ کام کریں اور ان کے مسائل پر جلد از جلد غور کرنے کی یقین دہانی کرائی۔مینیجنگ ڈائریکٹر نے کنٹریکٹرز یونین کی طرف سے پیش کردہ چارٹر آف ڈیمانڈز اور شکایات کو مریض سے سنااور یہ یقین دہانی کرائی گئی کہ حکومت کی طرف سے فراہم کیے جانے والے وسائل کی دستیابی کے مطابق وقت پر یونین کی حقیقی شکایات کو دور کرنے میں ہر ممکن مدد کی جائے گی۔منیجنگ ڈائریکٹر نے ایگزیکٹو ڈائریکٹر اور فنانشل کنٹرولر کو ہدایت دی کہ وہ ان ٹھیکیداروں کے سلسلے میں امکان تلاش کریں جنہوں نے کارپوریشن میں پچھلے 7 سال سے زیادہ عرصے سے کام کیا ہے کہ وہ انہیں پہچانیں اور انہیں ٹینڈرنگ کے عمل میں حصہ لینے کی اجازت دیں اور انہیں ہدایت کی کہ ٹھیکیداروں کے کام کی ذمہ داری کے دعووں کی مفاہمت پر کارروائی کریں۔
 
 

 انٹر زونل بلاک سطحی والی بال ٹورنامنٹ کشتواڑ،پاڈرمیں شروع 

کشتواڑ//محکمہ کھیل کے عہدیداروں نے بلاک کشتواڑ اور پاڈر میں انٹر زونل بلاک لیول والی بال ٹورنامنٹ کا انعقاد کیا۔پنچایت ہڈیال، لچھدیرام۔اے، لچھدیرام۔بی، مٹہ۔اے، مٹہ۔بی، پوچھال۔اے1، پوچھال۔اے2، پوچھال۔بی1، پوچھال۔بی2، بی ٹی۔1، بی ٹی۔2، لچھخازان ،پنچایت مچالی پِٹ، پالی پِٹ، اٹھولی، پی ٹی۔ کنڈل کی 16 سے زائد ٹیموںنے مذکورہ ٹورنامنٹ کے لیے اپنا نام درج کرایا ۔ مہمان خصوصی نے تمام نوجوانوں کو مشورہ دیا کہ وہ ہر روز کھیلوں میں حصہ لیں کیونکہ اس سے انہیں طویل مدت میں مدد ملے گی۔ بات چیت کے بعد کھیل کا آغاز محکمہ کے عہدیداروں جاوید اقبال شیخ اور سمن کانت نے کیا۔دریں اثنا، بلاک پاڈر میں کھیلوں کی تقریب کا انعقاد رشی مارشل اسٹیڈیم میں کیا گیا جس میں کھلاڑیوں اور کھیل سے محبت کرنے والوں کی پرجوش شرکت دیکھنے میں آئی۔
 
 
 

 زرعی یونیورسٹی جموںمیں بورڈ آف سٹیڈیز 17 واں اجلاس منعقد

جموں// زرعی یونیورسٹی جموں کی فیکلٹی آف ایگریکلچر کے لیے بورڈ آف سٹیڈیزکی سترویں میٹنگ منعقد ہوئی ۔میٹنگ کا ایجنڈا ڈاکٹر پرشانت بخشی، ممبر سکریٹری نے پیش کیا جس میں فشریز یونٹ کو فشریز کے ڈویژن میں اپ گریڈ کرنا، فشریز سائنس کے ماسٹرز کا ادارہ بنانا، پی جی/پی ایچ ڈی پروگرام کے لیے آئی سی اے آر کے مشترکہ ضوابط کو اپنانا، اہلیت کے معیار میں تبدیلی،جنگلات میں ماسٹرز پروگرام میں داخلے کے لیے، مختلف ڈگریوں کے نئے کورس کے نصاب میں ترمیم، ای پروگرامز، ایم ایس سی میں داخلے کے لیے نصاب کو حتمی شکل دینا۔ پلانٹ بائیوٹیک اور مالیکیولر بائیولوجی وغیرہ شامل ہیں۔اختتامی کلمات میں پروفیسر راکیش نندا نے تعلیمی ضوابط پر عمل کرنے اور ایسے نصاب کی تشکیل پر زور دیا جس سے طلباء کی مجموعی ترقی میں مدد ملے گی تاکہ وہ قومی اور بین الاقوامی سطح پر مقابلہ کرنے کے قابل ہوں۔ انہوں نے کہا کہ زرعی یونیورسٹی جموں براڈ سبجیکٹ میٹر ایریا کمیٹی کے نصاب کو اپنانے والا پہلا ادارہ ہے۔پروفیسر راکیش نندا نے تمام فیکلٹی ممبران کو مشورہ دیا کہ وہ سخت محنت کریں اور زرعی یونیورسٹی جموں کے تعلیمی معیار کو برقرار رکھنے کے لیے کوئی کسر نہ چھوڑیں۔
 
 

محمد نعیم آہنگر کی سبکدوشی پرلوداعی تقریب کا اہتمام

 کشتواڑ//عاصف بٹ//محمد نعیم آہنگر کی ملازمت سے سبکدوشی کے سلسلہ میں محکمہ اریگیشن کشتواڑ کے ملازمین کی طرف سے ایک شاندار الوداعی تقریب منعقد ہوئی جس میں محکمہ کے ملازمین کے علاوہ ضلع لوپیڈایمپلایز فیڈریشن کشتواڑ کے چند عہدیداران کو بھی خصوصی طور مدعو کیا گیاتھا۔ تقریب میں محمد نعیم آہنگر ورکس سپروائزر محکمہ اریگیشن میں 40سالہ طویل سروس کا ذکر کرتے ہوئے انکی محکمہ میں کارکردگی کو زبردست سراہاگیا اور کہاگیا کہ نعیم ایک مخلص ،دیانت دار ، محنتی ملازم رہے ہیں۔وہ لوپیڈفیڈریشن کے مختلف عہدوں پر فائز رہے جہاں  انکا نمایا ںکردار رہا اور اسوقت وہ فیڈریشن کے خزانچی کے اہم عہدے پر فایزتھے ۔ 
 
 
 

 آگ پر قابو پانے کیلئے مغل میدان میں بیداری پروگرام منعقد

کشتواڑ// فوج نے ضلع کشتواڑ کے مغل میدان علاقہ میں عوام میں آگ کی وراداتوں سے بچنے کیلئے بیداری پروگرام منعقد کیا گیا۔پروگرام میں فوج کے نوجوان نے لوگوں سے آگ پر بروقت قابو پانے اور آگ سے بچنے کیلئے احتیاتی تدابیر پر عمل کرنے کو کہاجبکہ مقامی لوگوں نے بتایا کہ فوج نے انھیں آگ لگنے سے بچنے کیلئے کن طریقہ کار کو اپنانا چاہئے، انکے بارے میں معلومات فراہم کیں۔
 
 
 

رام بن میں15-18 سال کے بچوں کیلئے ٹیکہ کاری مہم شروع

 را م بن// ڈپٹی کمشنر رام بن مسرت الاسلام نے گورنمنٹ ہائیر سیکنڈری اسکول رام بن میں 15-18 سال کی عمر کے بچوں کے لیے کووڈ ٹیکہ کاری مہم کا افتتاح کیا۔اس موقع پر بات کرتے ہوئے ڈی سی رام بن نے بتایا کہ ضلع رام بن میں آج سے ان کے متعلقہ اسکولوں میں بچوں کو ٹیکے لگائے جارہے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ضلع کے چار میڈیکل بلاکس میں کل 102 ٹیکہ کاری مراکز قائم کیے گئے ہیں جن میں بٹوٹ میں 37، اکھڑال میں 13 ،بانہال میں 28 اور گول میں 24 مراکز شامل ہیں جن میں 15-18 سال کی عمر کے 19268 ٹارگٹڈ بچوں کو قطرے پلائے جا رہے ہیں۔ڈی سی نے بتایا کہ پہلی خوراک کے 28 دن بعد بچوں کوٹیکہ کاری کی دوسری خوراک دی جائے گی۔ ڈی سی نے کہا کہ تمام بی ایم اوز کو پہلے ہی ان کے متعلقہ زونز کے لیے نوڈل آفیسرز نامزد کر دیا گیا ہے اور تمام ٹیکہ کاری مراکز کو قریبی ریفرل سنٹرز سے جوڑ دیا گیا ہے تاکہ ضرورت پڑنے پر انہیں صحت کی سہولیات فراہم کی جاسکیں۔انہوں نے کہا کہ محکمہ صحت اور تعلیم نے ایک ہفتے کے اندر ہدف بنائے گئے بچوں کو ویکسین کی پہلی خوراک دینے کے لیے تمام ضروری انتظامات کر لیے ہے۔
 
 

موسم سرما کے دوران جموں میں بدترین بجلی بحران

پی ڈی ڈی 24×7گھنٹے بجلی مہیاکرنے میں ناکام:منجیت سنگھ

جموں//اپنی پارٹی صوبائی صدر جموں منجیت سنگھ نے الزام لگایا ہے کہ جاری سرمائی ایام کے دوران جموں میں لگاتار غیر اعلانیہ بجلی کٹوتی سے شدید بجلی بحران کا سامنا ہے ۔ انہوں نے جموں خطہ کے اندر لوگوں کو چوبیس گھنٹے بجلی مہیا کرنے میں پاور ڈولپمنٹ ڈپارٹمنٹ کی نااہلی پر بھی سوال اُٹھایا ہے۔ صوبائی صدر نے کہاکہ لوگوں سے بھاری کرایہ وصول کیاجارہا ہے لیکن موسم سرما کے دوران غریب لوگ پریشان ہیں۔ محکمہ بجلی کے افسران اور فیلڈ سٹاف کی نااہلی کا اندازہ اِس بات سے لگایاجاسکتا ہے کہ وہ گلیوں میں گھوم رہے ہیں اور کنکشن کاٹ رہے ہیں لیکن محکمہ بجلی فراہم کرنے میں مکمل طور ناکام رہا ہے۔ وہ پارٹی دفتر گاندھی نگر جموں میں منعقدہ ایک ماہانہ صوبائی سطح کے جائزہ اجلاس سے خطاب کر رہے تھے۔ اجلاس کی صدا رت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ لوگ مشکلات کا شکار ہیں اور محکمہ کے ملازمین بھی اپنے مستقبل کو لیکر غیر یقینیت کا شکار ہیں۔ یہ سب اس لئے ہورہا ہے کیونکہ کوئی منتخب حکومت نہیں اور لوگوں کے مسائل کی کوئی سنوائی نہیں ہورہی۔ انہوں نے مطالبہ کیاکہ لوگوں کا اعتماد بحال کرنے کے لئے جلد سے جلد جموں وکشمیر میں اسمبلی انتخابات کرائے جائیں۔ انہوں نے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا سے معاملہ میں مداخلت کی اپیل کرتے ہوئے کہاکہ بجلی فراہم کرنے میں ناکام رہنے والے پی ڈی ڈی حکام کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے۔ پارٹی صوبائی سیکریٹری ڈاکٹر روہت گپتا نے اس موقع پر جموں وکشمیر کے دور دراز ودیہی علاقوں میں ترقیاتی سرگرمیوں کی سست روی پرگہری تشویش کا اظہار کیا۔ اس موقع پر دیگر لیڈران نے بھی خطاب کیا اور جلد سے جلد جموں وکشمیر میں اسمبلی انتخابات کرانے کی مانگ کی۔ 
 
 
 
 

ناظم اِطلاعات کی گگن سنگھ جموال کو نیشنل گولڈ میڈل حاصل کرنے پرتہنیت

جموں//ناظم اطلاعات و رابطہ عامہ راہل پانڈے نے محکمہ کے ملازم گگن سنگھ جموال کو موہالی میں منعقدہ 59ویں قومی رولر سکیٹنگ چمپئن شپ میں گولڈ میڈل جیتنے پر مبارک باد دی۔راہل پانڈے نے گگن سنگھ جموال اور ان کی ٹیم کی جیت کو جموںوکشمیر یوٹی اور ڈی آئی پی آر کے لئے بھی فخر کا لمحہ قرار دیا۔اُنہوں نے اُن کی تعریف کی اور مستقبل میں بہت سے تمغوں کے ساتھ شاندار کامیابی حاصل کرنے کی تمنا ظاہر کی۔اِس موقعہ پر ڈائریکٹر اِنفارمیشن ( سینٹرل ) چندر پرکاش کوتوال ، ڈپٹی دائریکٹر اِنفارمیشن ( پی آر ) مردھو سلاتھیہ اور ایڈ منسٹریٹیوآفیسر انیل کما رمہتا نے بھی گگن سنگھ جموں اور ان کی ٹیم کے ارکان کو جموںوکشمیر یوٹی کے لئے گولڈ میڈل حاصل کرنے پر مبارک باد دی۔
 
 
 
 
 
 
 
 

اسلام مساوات کی بنیاد پر ایک پاکیزہ معاشرے کی تعمیر کا خواہاں

 جسواں جموں میںیک روزہ کانفرنس سے جمعیت نائب صدراور دیگر علما کے خطابات

 جموں//اسلام دین فطرت ہے اور یہ انسانوں کو رنگ و نسل، ذات پات و قبائل کے خانوں میں تقسیم نہیں کرتا اور ان پر باور کرتا ہے کہ تم سب اآدم سے ہو اور آدم علیہ السلام مٹی سے بنائے گئے ہیں کسی عربی کو عجمی پر، عجمی کو عربی پر گورے کو کالے پر اور کالے کو گورے پر کوئی فضیلت نہیں اللہ کے یہاں افضل وہی جو اس سے زیادہ ڈرنے والا یعنی اس کے احکامات کی تعمیل من و عن کرنے والا ہو ۔ان باتوں کا اظہار جمعیت اہلحدیث جموں وکشمیر کے نائب صدر ڈاکٹر عبداللطیف الکندی نے جسوال جموں میں تنظیم کے اہتمام سے منعقدہ یک روزہ گوجر برادری دینی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ آج کی بزعم خود متمدن دنیا میں کیا رنگ و نسل ذات پات اور حسب و نسب کا امتیاز نہیں ہے کمزوروں اور تہی دستوں پر جور و ظلم نہیں  ہورہا ہے بالادست زیر دستوں کا استحصال نہیں کرتے؟ یہ عمل پورے زوروں سے آج بھی جاری و ساری ہے ۔ موصوف نے کہا کہ یہ اسلام کا نظام عدل و مساوات ہی ہے جو انسانیت کو ایک ہی لڑی میں پروتا ہے۔انہوں نے گوجر برادری سے بطور خاص علم و تعلم سے جڑے رہنے کی تلقین کرتے ہوئے کہا کہ یہی راہ عمل ان کے لیے در ہائے سکون و راحت کھول سکتا ہے کہا کہ گوجر برادری علوم قران و حدیث سے مستفید ہو۔ انہوں نے کتنے ہی اس برادری کے عظیم علماء و فضلاء کے نام گنائے جنہوں نے اس دین حق کی ترویج و اشاعت میں گراں مایہ کردار نبھایا۔انہوں نے بطور خاص اس ترجمہ و تفسیر قران پاک کا ذکر بھی کیا جو جمعیت کے رکن رکین الاستاذ محمد امین خان نے گوجری زبان میں کیا اور جسے ہاتھوں ہاتھ لیا گیا۔ کانفرنس میں دیگر خطاب کرنے والے اور خصوصی شرکا میں جمعیت جموں ضلع کے صدر مولانا محمد ابراہیم سلفی، مولانا حافظ محمد اسحاق عفیف، مولانا حافظ امتیاز احمد سنابلی، حافظ عبدالحمید سنابلی، مولانا محمد عبداللہ سلفی اور حافظ مقصود احمد جموی شامل تھے۔
 
 

سبھی خطوں کی یکساں ترقی یقینی بنائی جائے:غلام حسن میر

 جموں//اپنی پارٹی سنیئر نائب صدر غلام حسن میر نے جموں وکشمیر کے سبھی خطوں کی یکساں ترقی کا مطالبہ کیا ہے۔ میر پارٹی صوبائی سیکریٹری اسلم ملک کے زیر اہتمام منعقدہ پارٹی دفتر گاندھی نگر جموں میں منعقدہ ایک پروگرام میں بول رہے تھے جس میں بانہال سے درجنوں نوجوانوں نے پارٹی میں شمولیت اختیار کی۔ غلام حسن میر نے اِ ن کا خیر مقدم کرتے ہوئے اپنی پارٹی جموں وکشمیر کے سبھی خطوں کی یکساں ترقی پر یقین رکھتی ہے۔ انہوں نے کہاکہ جموں وکشمیر کے دور دراز اور نظر علاقوں میں بنیادی سہولیات کا فقدان ہے اور اپنی پارٹی سبھی خطوں کی ہمہ جہت ترقی کی وعدہ بند ہے۔ انہوں نے کہاکہ جموں وکشمیر کے پہاڑی اور دور افتادہ خطوں میں آج بھی مناسب طبی سہولیات، ڈھانچہ اور سڑک رابطہ نہیں، ہماری جماعت اِن سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنانے کی وعدہ بند ہے۔ انہوں نے کہاکہ اگر اپنی پارٹی اقتدار میں آئی تو بلا لحاظ سبھی خطوں کی یکساں ترقی یقینی بنائی جائے گی۔ صوبائی صدر منجیت سنگھ نے اس موقع پر خطاب کیا۔
 
 
 
 

 پینتھرس صدرکی پارٹی قیادت سے مالی مدد کی اپیل 

جموں//جموں و کشمیر نیشنل پینتھرس پارٹی کے صدر پروفیسر بھیم سنگھ نے پارٹی کی مالی مدد کرنے کے لیے قیادت کی میٹنگ کا اہتمام کیا تاکہ پارٹی جموں وکشمیر کے تمام کارکنوں کو انصاف اور مساوات یقینی بنانے کے اپنے مشن سے نہ چونکے۔ پارٹی کا مقصد حقوق، مساوات اور انصاف کی فراہمی ہے تاکہ جب بھی اسمبلی انتخابات ہوں پینتھرس پارٹی جموں و کشمیر اور لداخ میں آئندہ انتخابی جنگ میں عوام کے دشمنوں کو شکست دے سکے۔انہوں نے ایگزیکٹو کمیٹی کے سینئر ممبران کے سامنے اعلان کیا کہ پینتھرس پارٹی کی تشکیل نو 23 مارچ 2022 سے پہلے کر دی جائے گی، جس دن پارٹی جموں پریڈ گراؤنڈ میں اپنا 40 واں یوم تاسیس منعقد کرے گی۔انہوں نے یہ بھی اعلان کیا کہ پارٹی ورکنگ کمیٹی کی تشکیل نو کی جائے گی کیونکہ جموں و کشمیر میں بدلتے ہوئے سیاسی ماحول کی وجہ سے ایسا نہیں کیاجا سکا۔ انہوں نے ورکنگ کمیٹی کی مشاورت سے 23 مارچ 2022 سے پہلے پینتھرس ورکنگ کمیٹی کی تشکیل نو اور فروری 2022 کے پہلے ہفتے میں سیکرٹریٹ کا ہنگامی اجلاس بھی بلایاہے۔پروفیسر بھیم سنگھ نے اس بات پر صدمہ کا اظہار کیا کہ پینتھرس پارٹی مالی مشکلات کا شکار ہے ۔ انہوں نے تمام فعال کارکنوں، دوستوں اور ان لوگوں سے اپیل کی جو مالی بحران پورا کرنے اور پارٹی کے دیگر مالی معاملات کو حل کرنے کے لیے کم از کم چھ ماہ کے لیے کچھ قرض دینے کی استطاعت رکھتے ہیں۔ انہوں نے سیاسی، سماجی اور مالیاتی بحران سے پیدا ہونے والے حالات کی وجہ سے پارٹی کو آج جس مالی بحران کا سامنا ہے اس سے نمٹنے کے لیے ورکنگ صدور کی 5 رکنی کمیٹی کے قیام کا بھی انہوں نے اعلان کیا۔ اس نے مالیاتی اخراجات کو پورا کرنے کے لیے نئی دہلی، جموں اور سری نگر میں اپنی تمام قانونی لائبریریوں کو ختم کرنے کی پیشکش بھی کی ۔انہوں نے تمام خیر خواہوں، دوستوں اور پارٹی قیادت سے پرزور اپیل کی کہ وہ آگے آئیں اور ریاست جموں و کشمیر کی صورتحال سے نمٹنے کے لیے پارٹی کی مدد کریں۔