مدرسہ صوت القران کھڑی کا سالانہ جلسہ

 بانہال // ضلع رام بن کے تحصیل کھڑی میں صوت القران اور اس کی ذیلی شاخ مفتاحی پبلک سکول کی طرف سے یوم والدین کے اہتمام سے ایک تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں سینکڑوں طلبہ اور طالبات  کے علاوہ والدین ، علما اور مقامی لوگوں نے شرکت کی۔ اس پروگرام کا مقصد تحصیل کھڑی آڑپنچلہ کے علاقوں میں علم و ادب اور تعلمی سرگرمیوں کو فعال اور موثر بنانا تھا۔ اس موقع پر مولانا زکریا تھانوی مہمان خصوصی کے طور مدعو تھے جبکہ مفتی محمد اختر ، مفتی جلالدین ،ماسٹر ،معروف اور امام جامع مسجد مرکزی کھڑی مولوی غلام قادر مہمان زی وقار کے طور موجود تھے۔ اس موقع پر شعبہ عربی ، شعبہ انگریزی ، شعبہ حفظ کلام اللہ۔ شعبہ مکاتب ، شعبہ بنات کے بچوں نے قران وسنت کی روشنی میں اہم اور سبق اموز پروگرام پیش کئے اور اپنی تقاریر اور ترانوں سے وہاں موجود لوگوں کا دل جیت لیا۔ اس موقع پر مدرسے مہتمم مدرسہ مولانا عطا اللہ مفتاحی نے صوت القران اور اس کے معاون ادارے مفتاحی بپلک سکول کھڑی کے اعداد وشمار پیش کرتے ہوئے کہا کہ اس مدرسے نے پچھلے سولہ سال کے عرصے میں 180 بچوں کو حفظ کلام اللہ اور ناظرہ قران سے روشناس کیا ہے اور مدرسے اور سکول سے فارغ ہوئے بچے مختلف مقامات پر مختلف شعبوں میں اپنا کام بخوبی سرانجام دے رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مدرسہ صوت القران سے روزانہ  مختلف علاقوں میں اہل علم کو قران کی تعلیم کو عام کرنے کیلئے دیہی علاقوں میں قائم کئے گئے مکاتب میں پڑھانے کیلئے بھیجا جاتا ہے تاکہ کوئی بھی فرد بشر قران اور حدیث نبوی کی تعلیمات سے محروم نہ رہے۔ انہوں نے کہا کہ مدرسے میں 85 یتیم اور غریب امدادی بچے قران و حدیث کی تعلیمات اور حفظ قران کے مختلف کورسوں میں زیر تعلیم ہیں جن میں پانچ لڑکیاں بھی ناظرہ قران سیکھ رہی ہیں جبکہ شعبہ انگریزی میں 175 بچوں کو دینی اور دنیاوی تعلیمات سے روشناس کیا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دینی مدارس اسلام کے سرچشمے ہیں اور علم و ادب کا حصول اور پھیلاو صوت القران کا مقصد ہے تاکہ جہالت اور ظلمت کے اندھیرے سے امت کو نکالا جا سکے۔ اس موقع پر وہاں موجود علما نے یوم والدین کے موقع پرامتیازی پوزیشن حاصل کرنے والے بچوں میں انعامات تقسیم کئے اور اپنے تاثرات اورخطبات سے وہاں موجود سامعین کو نوازہ اور مدرسہ کے اساتذہ وطلباء کو اس کامیاب اور سود مند پروگرام کیلئے مبارکبادی پیش کی۔ اس موقع پر شعبہ عربی مین تلاوت کلام پاک میں عاقب مجید ولد ماسٹر عبدالمجید حجام ساکنہ نادکہ کھڑی ، نعتیہ کلام میں ایجاز گروپ ،انگریزی تقریر میں شعبہ انگریزی کے محمد سلیم ولد غلام قادر ڑوند ساکنہ ترگام کھڑی ، اردو تقریر میں شازیہ آیاز دختر ایاز احمد ساکنہ کھڑی شعبہ عربی میں تقریر کیلئے شاہد نظیر ڈینگ ولد نظیر احمد ڈینگ ساکنہ تاجنی ہال رامسو کو ججوں نے پہلی پوزیشنوںکا مستحق قرار پایا  اور وہاں موجود علما کے ہاتھوں اْن کی عزت افزائی کی گئی۔ آخر میں مدرسہ صوت القران کھڑی کے مہتمم مولاناعطاللہ مفتاحی نے انے والے تمام مہمانوں اور والدین کا شکریہ اداکرتے ہوئے والدین سے اپیل کی کہ وہ اپنے بچوں کو خصوصی طور نگاہ رکھ کر دینی ودنیاوی تعلیم سے آراستہ کرنے کی ہر ممکن کوشش کریں تاکہ علم وادب سے روشن بچے کل ہماری نجات اور مغفرت کا باعث بنیں ۔ تقریب کا اختتام دعائیہ مجلس سے ہوا۔