لنگیٹ اور بارہمولہ میں دھماکے|سی آر پی ایف اہلکار زخمی

 کپوارہ +بارہمولہ // لنگیٹ اور بارہمولہ میں مشتبہ جنگجوئوں نے پیر کی شب سیکورٹی فورسز پر گرینیڈ دھماکے کئے جس کے نتیجے میں ایک فورسز اہلکار اور 2شہری زخمی ہوئے جبکہ ایک پرائیویٹ گاڑی کو نقصان ہوا۔ادھر کولگام میں گذشتہ شب ایک سیاسی ورکر کی رہائش گاہ پر گرینیڈ سے حملہ کرنے کی ناکام کوشش کی گئی۔پولیس نے بتایا کہ مشتبہ جنگجوئوں نے لنگیٹ میں7 بٹالین سی آر پی ایف کیمپ ای کمپنی کے کیمپ پر گرینیڈ پھینکا جو فورسز اہلکاروں کے درمیان زوردار دھماکے سے پھٹ گیا جس کے نتیجے میں ایک فورسز اہلکار زخمی ہوا۔دھماکے کے فوراً بعد سیکورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لیا اور حملہ آوروں کی تلاش شروع کردی ہے۔ادھر بارہمولہ کے آزاد گنج علاقے میں مشتبہ جنگجوئوں نے رات 9بجکر 25منٹ پر 46آر آر کی بکتر بند گاڑی پر گرینیڈ پھینکا جو نشانہ چوک کر ایک تویرا گاڑی کے نزدیک زوردار دھماکے سے پھٹ گیا جس کے نتیجے میں تویرا گاڑی کو نقصان پہنچا اور دو شہری زخمی ہوئے ہیں۔بتایا جاتا ہے کہ دو شہری گاڑی کے شیشے چکنا چور ہونے کی وجہ سے زخمی ہوئے ہیں جنہیں جی ایم سی منتقل کیا گیا ہے۔دھماکے کے فوراً بعد پولیس و دیگر سیکورٹی ایجنسیوں کی نفری یہاں پہنچ گئی اور کچھ دیر کیلئے یہاں گاڑیوں کی آمد و رفت میں خلل پڑا۔تاہم پولیس کے مطابق بارہمولہ میں ہوئے دھماکہ کی نویت کی حقیقت معلوم نہ ہوسکی اور غالباً یہ گرینیڈ دھماکہ نہیں تھا۔ ادھرکولگام میں ایک سیاسی ورکر کے گھر پر گذشتہ شام حملہ کرنے کی کوشش کی گئی۔ گزشتہ رات نامعلوم اسلحہ برداروںنے اشموجی کولگام میں ایک سیاسی ورکر کے گھر پر ہتھ گولہ داغا تاہم وہ نہیں پھٹا۔اسکے فوراً بعدپولیس کو اطلاع دی گئی ،جنہوں نے بم ڈسپوزل سکارڈ طلب کیا،جنہوںنے گرینیڈ کو ناکارہ بنایا۔ پولیس نے کیس درج کرلیا ہے۔