خودانحصار بھارت کی تعمیر

جموں//لیفٹیننٹ گورنر کے مشیربصیر احمد خان نے بورڈ آف ٹریڈ کی اعلیٰ سطحی میٹنگ میں ورچیول شرکت کی ۔میٹنگ کا انعقادبھارت کے درآمداتی مقابلہ آرائی میں اضافہ کرنے کے لائحہ عمل مرتب کرنے ، درآمداتی انحصار کو کم کرنے ، دیگر ممالک کے ساتھ متوازن تجارت کو ترقی دے کر آتمانر بھر بھارت کی تعمیر کر نا ہے۔ ویڈیو کانفرنس میٹنگ میں حکومت ہند کے وزیر برائے صنعت و حرفت پیوش گوئیل ، حکومت ہند کے وزیر مملکت برائے صنعت و حرفت ہردیپ سنگھ پوری ،  جی او آئی سی ای او  نیتی آیوگ ، آربی آئی نائب گورنر اور دیگر اعلیٰ  افسران نے شرکت کی۔دوران اجلاس مشیر بصیر خا ن نے یوٹی حکومت کی جانب سے اختیار کی جارہی پالیسیوں کے بارے میں میٹنگ کو جانکاری دی جو معاشرے کے ہر طبقے کے لئے سود مند ثابت ہوں گی۔اُنہوں نے کہا کہ یوٹی حکومت سرمایہ کاروں اور تجارتی انجمنوں کو پلیٹ فارم فراہم کر رہی ہیں جس سے صنعتی شعبوں کو فروغ حاصل ہوگااور جموںوکشمیرمیں تیار کی جانے والی اشیاء میں گھریلو استعمال اور درآمد کے لئے اضافہ ہوگا ۔مشیر بصیر خان نے میٹنگ کو جانکاری دی کہ یوٹی حکومت سرمایہ کاروں کو راغب کرنے کے مقصد سے مرتب کی گئی پالیسیو ں کولاگو کر رہی ہے تاکہ ذرائع کو منصفانہ طور بروئے کار لاکر پیدا وار میں اضافہ کر کے آتمانربھر بھارت کے  خواب کو شرمندہ تعبیر کیا جاسکے۔انہوں نے سرمایہ کاروں کو پی اے سٹور ، صنعتی یونٹ ، فوڈ پروسسنگ تجارتوں کے قیام میں مددفراہم کرنے کے لئے مختلف اُٹھائے گئے اقدامات کے بارے میں جانکاری دی۔ انہوں نے روایتی ہینڈ لوم اور دستکاری صنعتوں کی بحالی کے لئے اٹھائے گئے اقدامات کے بارے میں بھی تفصیل دی۔ووکل فار لوکل کے تحت مشیر نے کہا کہ نوجوان صنعت کاروں کو مقامی طور دستیاب خام مواد پر مبنی صنعت یونٹ قائم کرنے کے لئے حوصلہ افزائی کی جارہی ہے۔