حج کے خواہشمندوں کے ساتھ دھوکہ دہی

سرینگر// کرائم برانچ کشمیر (سی بی کے) نے سری نگر کی ایک عدالت میں حج کرنے کا فریضہ انجام دینے والے خواہشمند افراد سے دھوکہ دہی کرکے آٹھ لاکھ روپیے ہتھیانے کے الزام میں دو ملزموں کے خلاف چارج شیٹ دائر کی ہے۔برانچ کے ایک ترجمان نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ کرائم برانچ کشمیر نے چیف جوڈیشل مجسٹریٹ سری نگر کی عدالت میں شعیب اشرف خان ولد محمد اشرف خان ساکن گول مارکیٹ سری نگر اور عاشق حسین میر ولد معراج الدین میر ساکن گلاب باغ زکورہ سری نگر (مالکان اے اینڈ وائی ٹور اینڈ ٹرولز )کے خلاف چارج شیٹ دائر کی۔بیان کے مطابق دونوں ملزمان نے حج کرنے کے خواہشمندوں سے یہ فریضہ انجام دلانے کے بہانے پر آٹھ لاکھ روپے ہتھیالئے ہیں۔بیان میں کہا گیا، ’’کرائم برانچ کشمیر کو نذیر احمد ڈار نامی ایک شہری کی طرف سے ایک تحریری شکایت موصول ہوئی جس میں الزام لگایا گیا کہ اے اینڈ وائی ٹور اینڈ ٹرولز کے مالک شعیب اشرف خان نے حج کرانے کے بہانے پر ان سے آٹھ لاکھ روپیے لئے‘‘۔موصوف ترجمان نے اپنے بیان میں کہا کہ شکایت موصول ہونے پر سی بی کے نے تحقیقات شروع کیں۔انہوں نے بیان میں کہا،’ ’تحقیقات کے دوران منکشف ہوا کہ ملزم شعیب اشرف خان  ایک اور ملزم عاشق حسین ڈار کے ساتھ شراکت میں حج اور عمرہ کی ادائیگی کے مقاصد کے لئے  ای ڈی آر اے اے ایل ٹور اینڈ ٹرولز اور اے اینڈ وائی ٹور اینڈ ٹرولز نامی دو کمپنیاں بالترتیب نگین اور کنگن میں چلا رہا ہے‘‘۔بیان میں کہا گیا کہ ملزم نے شکایت گذار اور اس کے ساتھیوں سے حج کرانے کے بہانے پر آٹھ لاکھ روپیے لئے لیکن رقم وصول کرنے کے بعد ملزمان نے ٹور اینڈ ٹرول کمپنی کا دفتر ہی بند کردیا۔بیان کے مطابق شکایت گذار کے تلاش کے باوجود ملزمان کا کوئی اتہ پتہ نہیں ملا۔بیان میں کہا گیا کہ تحقیقات کے دوران جمع شدہ حقائق و شواہد کو مد نظر رکھتے ہوئے ملزمان کے خلاف قابل سزا جرم ثابت ہوا اور عدالت میں چالان پیش کیا گیا۔