جھجر کوٹلی سے اسلامک سٹیٹ کمانڈر گرفتار: آئی جی پی جموں | کہاعسکریت پسندوں کے حملوں کو ٹالاگیا

جموں//سپیشل آپریشن گروپ (ایس او جی) اور جموں پولیس نے جموں سرینگر ہائی وے پر جھجر کوٹلی سے اسلامک سٹیٹ جے اینڈ کے (آئی ایس جے کے) کے ایک کمانڈر کو ایک پستول ، اس کے راؤنڈ اور ایک لاکھ روپے کے ساتھ گرفتار کیا۔انسپکٹر جنرل پولیس جموں ، مکیش سنگھ (آئی جی پی) نے بتایا "ایس او جی اور جموں پولیس نے درج عسکریت پسند تنظیم اسلامک سٹیٹ جموں وکشمیر (آئی ایس جے کے) کے ایک عسکریت پسند کو ایک پستول ، اس کے 8 راؤنڈ اور ایک لاکھ 13 ہزار روپے مالیت کی نقدی کے ساتھ گرفتار کیا"۔ انہوں نے کہا کہ پولیس نے اس گرفتاری کے ساتھ ہی عسکریت پسندوں کے حملوں کو روک لیا ہے۔انہوں نے کہا کہ ان کے پاس انٹیلی جنس ان پٹ تھے جس کے بعد ایس او جی نے جمجر پولیس کے ساتھ جھججر کوٹلی میں ایک ناکہ  لگایا۔تقریباً1s9 گھنٹے گاڑیوں کی چیکنگ کے دوران ایک شخص نیبھاگنے کی کوشش کی اور پولیس نے اس کا پیچھا کیا۔ انہوں نے کہا کہ تیز کارروائی کرتے ہوئے پولیس نے اسے پکڑ لیا۔گرفتار شخص کی شناخت ملک امید عرف عبداللہ ولد عبدالرشید ملک ساکن یری پورہ ، ضلع کولگام کے نام سے ہوئی ہے۔انہوں نے مزید کہا "اسے یونین ٹیریٹریری میں عسکریت پسندوں کی ہڑتال کو مزید آگے بڑھانے کے لئے ہتھیار اور نقد رقم کی فراہمی موصول ہوئی ہے۔"ابتدائی تفتیش کے دوران ، آئی جی پی نے کہا "پتہ چلا ہے کہ گرفتار عسکریت پسند آئی ایس جے کے ماڈیول کے مزید کارکنوں سے رابطے میں تھا۔ اس کیس کی مزید تفتیش جاری ہے۔اس سلسلے میں دفعہ 13 ، 17 ، 20 اور 23 ULA (P) ایکٹ کے تحت 2021 کے ایف آئی آر نمبر 53 کے تحت تھانہ جھججر کوٹلی میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔