جموںمیںسرمایہ کاروں کا اجلاس منعقد حکومت سرمایہ کاری کیلئے ساز گار ماحول تیار کرنے کیلئے پُر عزم :ڈائریکٹر

عظمیٰ نیوز سروس

جموں //ڈائریکٹر محکمہ صنعت و حرفت ڈاکٹر ارون منہاس نے جموں کے ممکنہ سرمایہ کاروں کی شکایات کو دور کرنے کے لئے کنونشن سینٹر میں ایک نتیجہ خیزمیٹنگ منعقد کی جس میں ممتاز ایسوسی ایشنوں کے چیئرمین اور صدور اور سرمایہ کاروںنے شرکت کی۔ اس میٹنگ کا مقصد حکومت اور سرمایہ کار کمیونٹی کے درمیان تعلقات کو مضبوط بنانا ، ممکنہ شراکت داری کی تلاش کرنا اور جموں و کشمیر اور صنعتی شعبے کی باہمی ترقی کے مواقع کے ساتھ ساتھ جموں و کشمیر میں سرمایہ کاری میں درپیش چیلنجوں کو دور کرنے کے طریقوں پر تبادلہ خیال کرنا تھا۔ڈائریکٹر صنعت و حرفت نے شرکأکو بتایا کہ لیفٹیننٹ گورنر کی ہدایت پر ڈائریکٹوریٹ کی سطح پر ماہانہ سرمایہ کاروں کی میٹنگ منعقد کی جائے گی تاکہ ان شکایات کا اَزالہ کیا جاسکے اگر ممکنہ سرمایہ کاروں کو پالیسی کے بارے میں آگاہ کیا جائے ۔دورانِ میٹنگ ڈائریکٹر اِنڈسٹریز جموں نے ایک سازگار کاروباری ماحول پیدا کرنے کے لئے حکومت کے عزم پر زور دیا جو مقامی اور قومی سرمایہ کاروں کو راغب کرے۔ بات چیت میں اہم شعبوں اور صنعتوں پر توجہ مرکوز کی گئی جو اِقتصادی ترقی اور روزگار کے مواقع پیدا کرنے کے قابل ہیں اور سرمایہ کاری کو بنیاد بناتے ہوئے پروموٹرز کو درپیش مسائل پر توجہ مرکوز کی گئی۔ڈائریکٹر اِنڈسٹریزجموں نے کہا کہ سرمایہ کاروں کے ساتھ ملاقات نے خیالات کے تبادلے، خدشات کو دور کرنے اور جموں و کشمیر کے سرمایہ کاری منظرنامے کو ظاہر کرنے کا ایک قیمتی موقعہ فراہم کیا۔ اُنہوں نے مزید کہا کہ حکومت ایک ایسا سازگار ماحول فراہم کرنے کے لئے پُرعزم ہے جو سرمایہ کاری کی حوصلہ افزائی کرے، معاشی ترقی کو فروغ دے اور روزگار کے دیرپامواقع پیدا کرے۔بات چیت میں سرمایہ کاری کی ترغیبات، ریگولیٹری اِصلاحات، بنیادی ڈھانچے اور زمین کی ترقی اور تحقیق و ترقی کے اَقدامات کو فروغ دینے جیسے موضوعات شامل تھے۔ سرمایہ کاروں نے کاروبار دوست ماحول پیدا کرنے کے لئے حکومت کے عزم پر اعتماد کا اظہار کیا جس سے سٹریٹجک سرمایہ کاری پر غور کرنے میں ان کے اعتمادکو تقویت ملتی ہے۔ سرمایہ کار کمیونٹی نے یک آواز میں رجسٹریشن کی تاریخ میں توسیع اور نیو سینٹرل سیکٹر سکیم کے تحت مرکزی پیکیج میں اضافہ کرنے پر زور دیا۔سرمایہ کاروں نے اُن کو درپیش مستقبل مسائل جیسے بجلی کی دستیابی، بجلی کی بے قاعدگی سے کٹوتی، بنیادی ڈھانچے کی ترقی اور دیگر سہولیات کی ترقی کو سامنے لایا۔ پروموٹروں نے اَپنے آلودگی این او سی کی جلد منظوری کے لئے محکمہ صنعت و حرفت سے مدد طلب کی۔محکمہ صنعت و حرفت کے اَفسروں کی ٹیم نے نئی سینٹرل سیکٹر سکیم 2021 ء کی تشریح کے بارے میں کچھ سوالات موقع پر ہی پہنچائے اور ہینڈ ہولڈنگ کی گئی۔ڈائریکٹر اِنڈسٹریز جموں نے سرمایہ کاروں کو یقین دِلایا کہ ان کی آرأ اور تجاویز پر سنجیدگی سے غور کیا جائے گا جس کا مقصد کسی بھی رُکاوٹ کو دور کرنا اور کاروبار کرنے میں آسانی کو بڑھانا ہے۔دورانِ میٹنگ عمل کو بہتر بنانے، سنگل وِنڈو سسٹم کے ذریعے خدمات کی فراہمی اور ہنرمند اَفرادی قوت کو فروغ دینے کے لئے حکومت کی جاری کوششوں پر بھی روشنی ڈالی گئی۔یہ میٹنگ سرمایہ کاروں کے ساتھ بامعنی شراکت داری قائم کرنے اور دیرپا اِقتصادی ترقی کے لئے سازگار ماحول کو فروغ دینے کے لئے حکومت کے مضبوط عزم کی عکاسی کرتی ہے۔ محکمہ شراکت داروں کے ساتھ رابطے جاری رکھے گا، سرمایہ کاری کے مواقع کو فروغ دے گا اور عالمی سطح پر صنعت کی مسابقت کو مضبوط بنانے کے لئے کام کرے گا۔صنعت کاروں اور سرمایہ کاروں نے محکمہ صنعت وصنعت کی کاوشوں کو سراہا۔