آتشزدگی وارداتیں

سرینگر//ڈپٹی کمشنر سرینگر محمد اعجاز اسد کی ہدایت پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر سرینگر ڈاکٹر سید حنیف بلخی نے جمعرات کو ضلع کی شیخ کالونی نور باغ کا دورہ کیا اور موقع پر ہی اس کا جائزہ لیا۔اے ڈی سی جو کہ تحصیلدار عیدگاہ اشفاق احمد اور دیگر متعلقہ افسران کے ہمراہ تھے ،نے آتشزدگی کے متاثرین سے ملاقات کی جن کے رہائشی مکانات آتشزدگی کے بڑے واقعے میں مکمل طور پر تباہ ہو گئے تھے۔ متاثرین سے بات چیت کے دوران اے ڈی سی نے ضلع انتظامیہ سرینگر کی جانب سے ان کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کیا۔ انہوں نے یقین دلایا کہ ان کی فوری بحالی کے لیے ضلعی انتظامیہ کی جانب سے ہر ممکن تعاون فراہم کیا جائے گا۔اے ڈی سی کو بتایا گیا کہ شیخ کالونی نورباغ میں آتشزدگی کے ہولناک واقعے میں 37خاندانوں پر مشتمل 25 رہائشی مکانات جل کر خاکستر ہو گئے۔اس موقع پر ریڈ کراس کی جانب سے 185کمبل، 111 گدے، 111بیڈ شیٹ اور 37کچن سیٹ کی صورت میں ضروری امداد کے علاوہ ریڈ کراس کی جانب سے 37 خاندانوں کو آگ متاثرین کو عبوری ریلیف کے طور پر 185000روپے فراہم کیے گئے۔اسی طرح ضلع انتظامیہ سرینگر نے بھی ضلع کے شہر خاص میں راجوری کدل علاقے کے آتشزدگی متاثرین کو 15 کمبل، 9 گدے، 9 بیڈ شیٹ اور 3کچن سیٹ کے علاوہ 15000 روپے کی فوری امداد فراہم کی جس میں ایک گھر جل گیا۔ بدھ کو آگ لگنے کے واقعے میں 3 خاندان بے گھر ہوگئے۔دریں اثنا، ڈی سی نے ڈھانچے کے لحاظ سے مالی امداد کی منظوری دے دی ہے۔نورباغ کے 25 مکان مالکان کے حق میں 25,47,500 روپے اور ایس ڈی آر ایف کے تحت راجوری کدل مکان مالکان کے حق میں 1,01,900 روپے۔مزید برآں، ضلعی انتظامیہ نے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ آگ کے واقعات سے بچنے کے لیے بجلی/الیکٹرانک آلات، ایل پی جی سلنڈر اور گرم اور کھانا پکانے کے لیے استعمال ہونے والے دیگر آلات کو سنبھالتے وقت تمام احتیاطی تدابیر پر عمل کریں۔