وزیراعظم جیل ۔جیل کاکھیل کھیل رہے ہیں:کیجریوال عآپ آج بھاجپاہیڈکوارٹر جاکراحتجاج کرے گی

یواین آئی

نئی دہلی// عام آدمی پارٹی (عآپ ) کے قومی کنوینر اور دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے ہفتہ کو بھارتیہ جنتا پارٹی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ان کے لیڈروں کو ایک ایک کرکے جیل میں ڈالا جا رہا ہے، اس لئے وہ اتوار کو پارٹی کے تمام بڑے لیڈروں کے ساتھ بی جے پی کے ہیڈکوارٹر جائیں گے تاکہ وہ جنہیں چاہیں انہیں جیل میں ڈال دیں۔ کیجریوال نے یہاں ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی جیل-جیل کا کھیل کھیل رہے ہیں۔ کبھی ایک کو جیل میں ڈال دیتے ہیں اور کبھی دوسرے کو جیل میں ڈال دیتے ہیں۔ انہوں نے کہا “میں کل 12 بجے اپنی پارٹی کے تمام بڑے لیڈروں کے ساتھ بی جے پی ہیڈ کوارٹر جاؤں گا، آپ جسے چاہیں گرفتار کر سکتے ہیں۔”انہوں نے کہا کہ ’’آپ کو لگتا ہے کہ اپنے لیڈروں کو جیلوں میں ڈالے جانے سے عام آدمی پارٹی تباہ ہو جائے گی، لیکن عام آدمی پارٹی صرف ایک پارٹی نہیں بلکہ ایک نظریہ ہے، اسے تباہ نہیں کیا جاسکتا‘‘۔وزیراعلیٰ نے کہا کہ ان کا قصور صرف یہ ہے کہ انہوں نے غریب بچوں کی اچھی تعلیم کا انتظام کیا، سرکاری اسکولوں کو بہترین بنایا۔ انہوں نے کہا “وہ اسے نہیں بنا سکتے، اسی لیے وہ دہلی کے سرکاری اسکولوں کو بند کرنا چاہتے ہیں۔ ہمارا قصور یہ ہے کہ ہم نے دہلی کے اندر محلہ کلینک اوراسپتال بنائے۔ لوگوں کے علاج معالجے اور مفت ادویات کا انتظام کیا۔ بی جے پی دہلی کے کاموں کو روکنا چاہتی ہے۔

عآپ ’خواتین مخالف پارٹی‘بن چکی ہے: بھاجپا
یواین آئی
نئی دہلی// بھاجپا نے ہفتہ کو عام آدمی پارٹی (آپ ) کے ذریعہ اپنی ہی پارٹی کی رکن پارلیمنٹ سواتی مالیوال کی کردار کشی پر سخت حملہ کرتے ہوئے کہا کہ اس پارٹی کے لیڈروں کی خواتین کے ساتھ بدسلوکی کرنے کی ایک طویل تاریخ ہے اور عام آدمی پارٹی اب ‘ خواتین مخالف پارٹی’ بن چکی ہے۔بی جے پی کے ترجمان شہزاد پونا والا نے یہاں پارٹی کے مرکزی دفتر میں منعقدہ ایک پریس کانفرنس میں آپ کی لیڈر آتشی مرلینا کے ذریعہ متاثرہ محترمہ مالیوال کے کردار کشی کی تنقید کی اور اس معاملے میں آپ کے کنوینر اور دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال پر حملہ کیا اور انڈیا اتحاد کے لیڈروں کی خاموشی پر بھی شدید تنقید کی۔ پونا والا نے کہا “اس طرح کا شرمناک واقعہ دہلی کے وزیر اعلی کی رہائش گاہ پر ایک خاتون رکن پارلیمنٹ کے ساتھ پیش آیا اور دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال ابھی تک کچھ نہیں کہہ رہے ہیں۔ وہیں اس معاملے کے ملزم بیبھو کمار کو لکھنؤ ہوائی اڈے پر ان کے ساتھ سفر کرتے ہوئے دیکھا گیا۔ دہلی پولیس نے وزیر اعلیٰ کی رہائش گاہ سے آج ملزم کو گرفتار کیا، سوال یہ اٹھتا ہے کہ خاتون رکن ساتھ کے ساتھ بدسلوکی کرنے والا ملزم کیجریوال کی رہائش گاہ پر کیوں تھا؟ پونا والا نے کہا کہ راجیہ سبھا کے رکن سنجے سنگھ نے 14 مئی کو ایک بیان دیا تھا کہ ‘‘کل ایک انتہائی افسوسناک واقعہ پیش آیا۔ سواتی مالیوال کیجریوال جی کے گھر گئی تھیں اور ان کے ڈرائنگ روم میں انتظار کر رہی تھیں لیکن ان کے ساتھ بدسلوکی کی گئی ، وزیر اعلیٰ کیجریوال نے اس معاملے کا نوٹس لیا ہے اور اس پر کارروائی کریں گے۔ یہ انتہائی شرمناک واقعہ ہے۔‘‘بی جے پی کے ترجمان نے کہا کہ سنگھ کے واقعہ کو قبول کرنے کے باوجود، اگلے دن ایک شرمناک تصویر سامنے آئی۔