مزید خبرں

تلیل کے سکولوں میںاساتذہ کی کمی

سرحدی علاقوں کے نام پرتعینات افرادکہاں؟ 

عازم جان 
بانڈی پورہ// تلیل گریز کے عوام نے مطالبہ کیا ہے کہ جو اساتذہ ان علاقوں کے نام پر بھرتی ہوئے ہیں ان کو یہاں کے ہی اسکولوں میں بانڈی پورہ سے واپس لاکر تعینات کیا جائے تاکہ ان اسکولوں میں اساتذہ کی کمی کو پورا کیا جاسکے ۔ تلیل کے سرپنچ عبدالرحیم لون نے ڈپٹی کمشنر بانڈی پورہ ڈاکٹر اویس احمد ،ڈائریکٹر ایجوکیشن کشمیر اور چیف ایجوکیشن آفیسر بانڈی پورہ سے اپیل کی ہے کہ ان پسماندہ علاقوں کے نام پرجن افراد کو نوکریا ملی ہیں، انہیں تلیل کے اسکولوں میں ہی تعینات کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ اگر ایسا نہیں کیا گیا تو وہ لیفٹیننٹ گورنر سے مداخلت کی اپیل کریں گے۔
 
 

قاضی گنڈ میں کاریگروں کیلئے جانکاری کیمپ کا انعقاد

عارف بلوچ
اننت ناگ //ہینڈی کرافٹس محکمہ کی جانب سے بنکروں اور گھریلو دستکاروں سے جڑے افراد کیلئے شروع کی گئی اسکیموں کے بارے میں جانکاری دینے کیلئے ٹائون ہال قاضی گنڈ میں جانکاری کیمپ منعقد کیا گیا جس میں محکمہ کے اعلیٰ افسران نے مختلف اسکیموں کے بارے میں جانکاری فراہم کی گئی۔ کیمپ میں محکمہ ہینڈلوم کی ایڈیشنل ڈائریکٹر ابھی نو سنگھ کے علاوہ ہینڈلوم اور کھادی ولیج بورڈ کے افسران موجود رہے۔جانکاری کیمپ سے خطاب کرتے ہوئے ابھی نو سنگھ نے دستکاروں اور بنکروں پر زور دیا کہ وہ ایمانداری سے اپنے ہنر کو جاری رکھیں۔ انہوں نے کہا ’’ہم نے دستکاروں اور بنکروں کیلئے مختلف سماجی بہبود کی اسکیمیں شروع کرنے کا منصوبہ سرکار کو بھیجا ہے اور اْمید ہے کہ ان اسکیموں کو منظوری ملے گی‘‘۔ انہوں نے کہا کہ بنکروں کیلئے انشورنس اسکیموں کے علاوہ قرضہ فراہم کرنا اور دیگر اسکیمیں شروع کرنے کی اشد ضرورت ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ کیمپ منعقد کرنے کا مقصد دستکاروں کو محکمہ کی اسکیموں کے متعلق جانکاری فراہم کرنا ہے۔انہوں نے کہا کہ محکمہ کا یہ تیسرا کیمپ تھا اور جس کے کافی اچھے نتائج برآمد ہوئے ہیں۔
 
 

ڈورو میں مارکٹ چیگنگ

 دکاندروں سے جرمانہ وصول

سرینگر//جنوبی قصبہ ڈورومیں انتظامیہ اور میونسل کمیٹی نے بازاروں کا معائنہ کیا جس دوران قصور وار دکانداروں سے تین ہزار روپے بطور جرمانہ وصول کیا گیا ۔ نائب تحصیلدار غلام حسن گنائی کی قیادت میں فوڈ اینڈ سپلائز اور میونسپل کمیٹی کی ایک ٹیم نے علاقے کے بازاروں میں مختلف اشیاء کی قیمتوں کا جائزہ لیا ۔ ٹیم نے قصور وار دکانداروں سے 3ہزار روپے جرمانہ وصول کیا اور علاقے میں مرغ کی فروخت کرنے پر پابندی عائد کی ۔
 
 

چائے دوب صفاکدل آتشزدگی

دارالخیر میر واعظ منزل کا متاثرین سے اظہار یکجہتی

سرینگر//دارالخیر میرواعظ منزل نے گزشتہ دنوں شہر سرینگر کے چائے دوب صفاکدل علاقے میں آگ کی ایک واردات میں دو رہائشی مکانات اور املاک کے نقصانات پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے متاثرین کے ساتھ دلی ہمدردی اور یکجہتی کا اظہار کیا ہے اور باز آبادکاری اور امداد کی ضرورت پر زور دیا ہے۔دارالخیر کے سرپرست اعلیٰ میرواعظ محمد عمرفاروق کی ہدایت پر ایک وفدنے مفتی غلام رسول سامون کی قیادت میںچائے دوب پہنچ کر متاثرین میں چاول ، آٹا،کمبل اور کچن کٹ وغیرہ اور بنیادی ضروریات کی چیزیں بطور امداد پیش کیں اور ان کے ساتھ دارالخیر کی جانب سے ہمدردی اور یکجہتی کا اظہار کیا۔اس موقع پر دارالخیر میرواعظ منزل نے یہ بات پھر دہرائی کہ ملت کشمیر اس حقیقت سے باخبر ہے کہ دارالخیر میرواعظ منزل اپنے قیام کی مدت سے لیکر آج تک برابر اپنے مخلصین کی مالی اور جنسی معاونت سے برا بر بلا امتیاز مذہب و ملت متاثرین کی حتی المقدور امداد اور بحالی کیلئے اپنی کوششوں میں مصروف ہے۔ادارے نے اس ضمن میں اہل ثروت حضرات سے ماضی کی طرح اس ادارے کی ہر ممکن مدد اور معاونت کی اپیل دہرائی ہے تاکہ امدادی کام جاری رکھا جاسکے۔
 
 

سونہ مرگ میںکل ونٹر فیسٹول منعقد ہوگا

غلام نبی رینہ
کنگن // ضلع انتظامیہ نے 24فروری کے بجائے اب25فروری کو سونہ مرگ میں این ایچ آئی ڈی سی ایل اور محکمہ سیاحت کے اشتراک سے ونٹر فسٹول منعقد کیا جائے گا جس کے لئے تیاریاں شروع جاری ہیں اور سونہ مرگ کو سجایا جارہا ہے۔ چیف ایگزیکٹیو افسر سونہ مرگ ڈیولپمنٹ اتھارٹی مشتاق احمد راتھر نے منگل کو تیاریوں کا جائزہ لیا ۔ معلوم ہوا ہے کہ اسی روز شاہراہ کو آمدورفت کیلئے کھولا جائے گا۔ گذشتہ ہفتے سونہ مرگ میں ضلع ترقیاتی کمشنر گاندربل اور ناظم سیاحت نے مشترکہ طور پر ایک میٹنگ منعقد کی جس میں فیصلہ لیا گیا تھا کہ سونہ مرگ 24فروری کو سیاحت کے لئے بحال کیا جائے گا۔ اگرچہ گذشتہ برس بھی محکمہ سیاحت نے سونہ مرگ فیسٹول منعقد کرنے کے لئے تیاریاں شروع کی تھیں لیکن کورونا وائرس کی وجہ سے اس کو معطل کیا گیا تھا ۔ 
 

سلطان ڈھکی آتشزدگی

متاثرین کو انتظامیہ کی طرف سے امداد

 بارہمولہ /فیاض بخاری / ڈپٹی کمشنر بارہمولہ محمد اعجاز اسد نے سلطان ڈھکی اوڑی آتشزدگی واقع میں تین مہلوکین کے پسماندگان کیلئے ایک لاکھ روپے کی نقد امداد فراہم کی۔ڈپٹی کمشنر نے مزید چار لاکھ روپے کے معاوضہ کا بھی اعلان کیا ۔ دریں اثنا ء ڈپٹی کمشنر نے محکمہ مال کے عہدیداروں کی ایک ٹیم تشکیل دی جو نقصانات کا مکمل جائزہ لے گی۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ سات فروری کو سلطان ڈھکی میں گھاس کے ایک انبار میں آگ لگی تھی جس دوران چار افراد زخمی ہوگئے تھے جو بعد میں زخموں کی تاب نہ لاکردم توڑ گئے تھے۔جن میں ایک ہی خاندان کے تین افراد شامل تھے۔
 

حضرت بل سے سیاسی ورکروں کی اپنی پارٹی میں شمولیت 

سرینگر//حضرت بل حلقہ سے منگل کو سرکردہ سیاسی ورکروں کے ایک وفد نے اپنی پارٹی میں شمولیت اختیار کر لی۔ اِن ورکروں میں ڈاکٹر عبدالمجید صوفی اور تنویر احمد لنکر شامل ہیں۔ یہ تقریب پارٹی صوبائی صدر محمد اشرف میر، میڈیا ایڈوائزر فاروق اندرابی، ضلع صدر سرینگر نور محمد شیخ، ضلع صدر کپواڑہ راجہ منظور، ڈی ڈی سی چیئرپرسن سرینگر ملک آفتاب، انچارج گاندربل جاوید میر، انچارج خانیار حلقہ محمد یٰسین ،صوبائی صدر یوتھ ونگ کشمیر خالد راٹھور، پارٹی لیڈر جاوید جنید اور مومین بیگ کی موجودگی میں منعقد ہوئی ۔نئے ساتھیوں کا جماعت میں خیر مقدم کرتے ہوئے پارٹی صوبائی صدر کشمیر محمد اشرف میر نے اُن سے تاکید کہ وہ حضرت بل حلقہ کے لوگوں کو درپیش مشکلات ومسائل کے حل کے لئے کام کریں۔ انہوں نے کہاکہ اپنی پارٹی نے ہمیشہ عام آدمی کے مسائل کو اُجاگر کرنے کی ترجیحی دی ہے، ہماری سیاست صداقت اور اخلاص کے اصولوں پر مبنی ہے۔ اس موقع پر نئے ساتھیوں نے پارٹی لیڈر شپ کا شکریہ ادا کیا کہ انہیں یہ بہتر سیاسی پلیٹ فارم فراہم کیاگیا۔ 
 
 
 

ماہِ رجب کی فضیلت

زیارت غوثیہ میں آج مولانا قانونگو کاخطاب

سرینگر// زیارت غوثیہ خانیار میں آج بعد معمولات تا نماز ظہر مجلس وعظ منعقدہوگا جس میں انجمن حمایت الاسلام کے صدر مولانا خورشید احمد قانونگو ماہِ رجب کی فضیلت کے تناظر میں حضورؐ کے معرکتہ الآرا معجزہ پر خصوصی وضاحت کے علاوہ وارد کشمیرہوئے اولیائے کرام کی خدمات پرروشنی ڈالیں گے۔ بعد نماز ظہرزیارت حضرت سید تاج ہمدانیؒ (سفیر حضرت شاہ ہمدانؒ) کے آستان عالیہ واقع شہام پورہ نوہٹہ میں دوران مجلس خصوصی انؒ کی گراں قدر خدمات پر خطاب کریںگے۔اس مجلس کی پیشوائی مولانا شوکت حسین کینگ زیر قیادت سجادہ نشین میر سید مسعود شاہ ہمدانی کریں گے۔ 
 
 
 

نورباغ میں ہینڈی کرافٹس اور ہینڈلوم کا ورکشاپ

سرینگر //ڈائریکٹر ہینڈی کرافٹس اینڈ ہینڈلوم کشمیر محمود احمد شاہ نے منگل کو نورباغ میں کیرول چین سٹچ کلسٹر کا دورہ کیا ۔ دورے کے دوران انہوں نے بلاک ہینڈی کرافٹ آفس صفا کدل میں کوالٹی اور پروڈیکشن ورکشاپ کا جائزہ لیا ۔ دس دنوں کا یہ ورکشاپ ڈومین ایکسپرٹس کی جانب سے عالمی بینک کے جہلم توی فلڈ ریکوری پروجیکٹ کے تحت منعقدکیا گیا ۔ دورے کے دوران ڈائریکٹر کو جانکاری دی گئی کہ کلسٹرکو پروڈوسر کمپنی کے طور پر وزارت کواوپریٹ افیرز کی جانب سے چند دستکاروں کو مالکانہ حقوق دئے گئے ہیں۔ ڈائریکٹر کو بتایا گیا کہ ورکشاپ کا مقصد دستکاروں کے ہنر میں اضافہ کرنے کے علاوہ اپنے مصنوعات کو صارفین کے خواہش کے مطابق تیار کرنا اور آمدنی بڑھانے کیلئے اقدامات کریں۔ اس موقع پر بات کرتے ہوئے ڈائریکٹر موصوف نے کہا کہ حکومت نے یہ عہد کیا ہے کہ دستکاروں اور قومی اور بین الاقوامی بازاروں میں موجود دستکاروں کے درمیان مضبوط تعلق پیدا کریں گے۔انہوں نے کہا کہ اس منصوبہ میں شامل ہونے سے کلسٹر میں صلاحیت بڑھانے میں اضافہ ہوگا ۔ انہوں نے محکمہ پر زور دیا کہ وہ تمام دستکاروں کو جوڑے تاکہ انہیں روزگار پیدا کرنے میں مدد مل سکے۔ڈائریکٹر محمود احمد شاہ نے ماہرین اور دستکاروں کے ساتھ ملاقات کی۔ انہوں نے کلسٹر میں مزید خواتین کو بھی شامل کرنے پر زور دیا ۔