طوفانی ہواؤں کے بعد کشمیر میں موسمی صورتحال بہتر

نیوز ڈیسک
سری نگر//گذشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران طوفانی ہواؤں، بارشوں اور ژالہ باری کے بعد وادی کشمیر میں موسمی صورتحال میں بہتری واقع ہو رہی ہے۔

 

محکمہ موسمیات کے مطابق جموں وکشمیر اگلے چوبیس گھنٹوں کے دوران مجموعی طور پر موسم خشک رہنے کا امکان ہے تاہم اس دوران کہیں کہیں ہلکی بارشیں متوقع ہیں۔
 

انہوں نے کہا کہ وادی میں 16 مئی تک موسم خشک رہنے کا امکان ہے۔

 

ادھر وادی میں سیاحتی مقام پہلگام کے بغیر شبانہ درجہ حرارت میں ایک بار پھر قدرے گراوٹ درج کی گئی ہے۔

 

گرمائی دارلحکومت سری نگر میں کم سے کم درجہ حرارت12.8 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جو گذشتہ شب 13.7 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا تھا۔

 

وادی کے شہرہ آفاق سیاحتی مقام گلمرگ میں کم سے کم درجہ حرارت6.4 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جو گذشتہ شب 9.0 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا تھا۔

 

وادی کے دوسرے مشہور سیاحتی مقام پہلگام میں کم سے کم درجہ حرارت 6.0 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جو گذشتہ شب 5.7 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا تھا۔

 

سرحدی ضلع کپوارہ میں کم سے کم درجہ حرارت 11.0 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جو گذشتہ شب 12.3 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا تھا۔

 

گیٹ وے آف کشمیر کے نام سے مشہور قصبہ قاضی گنڈ میں کم سے کم درجہ حرارت 10.3 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جو گذشتہ شب 12.3 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا تھا۔

 

دریں اثنا وادی میں منگل کی صبح سے ہی موسم خشک رہا بلکہ دھوپ بھی چھائی رہی۔

 

قابل ذکر ہے کہ محکمہ موسمیات کے ایک ترجمان کی پیش گوئی کے مطابق وادی کشمیر میں آنے والے دنوں میں سخت گرمی پڑنے کا امکان ہے۔

 

ان کا کہنا ہے کہ وادی میں درجہ حرارت 30 ڈگری سینٹی گریڈ سے زیادہ درج ہو سکتا ہے کہ جبکہ صوبہ جموں میں درجہ حرارت 40 ڈگری سینٹی گریڈ سے تجاوز کرنے کا احتمال ہے۔