زندگی جیت گئی سلکیارا سرنگ میں پھنسے سبھی مزدور باہر نکالے گئے

عظمیٰ نیوز سروس

اترکاشی// اتراکھنڈ کے سلکیارا سرنگ میں گزشتہ 17 دنوں سے پھنسے 41 مزدوروں کو بحفاظت باہر نکال لیا گیا ہے۔ این ڈی آر ایف اور ایس ڈی آر ایف کی ٹیمیں دوپہر کو سرنگ کے اندر پہنچی تھیں اور کارکنوں کو باہر لے کر آئیں۔ جیسے ہی وہ سرنگ سے باہر آئے، سبھی کارکنوں کو ایمبولینس کے ذریعے قریبی اسپتال لے جایا گیا۔اس سے پہلے منگل کو اتراکھنڈ کے سلکیارا سرنگ میں بچاؤ کارکنوں نے ملبے کے اندر 60 میٹر تک سوراخ کرنے کا کام مکمل کیا اور پھر ڈرل شدہ راستے سے بچاؤ پائپ کا آخری حصہ ڈالا گیا۔ اس پائپ کے ذریعے ہی 17 دنوں سے سرنگ میں پھنسے مزدور باہر نکل سکے ہیں۔ بتادیں سرنگ کا ایک حصہ 12 نومبر کو منہدم ہوگیا تھا، جس کے اندر 41 مزدور پھنس گئے تھے۔سلکیارا میں ریسکیو ٹیم نے مزدوروں کو بچانے کے لئے ریٹ ہول کان کنی کی تکنیک کا استعمال کیا اور وہ کام کر دکھایا، جو بڑی بڑی جدید مشینیں نہیں کر سکتی تھیں۔ اس سے پہلے ملبے میں پھنسے مزدوروں کو نکالنے کے لئے آگر مشین سے ڈریلنگ کی جا رہی تھی۔ اس کے بعد پیر کے روز ’ریٹ ہول‘ کان کنی کی تکنیک کا استعمال کرتے ہوئے ملبے کو ہاتھ سے ہٹانا شروع کیا گیا تھا۔ مزدوروں کو بچانے کے بعد اب ان کی دیکھ بھال بھی اتنی ہی ضروری ہے۔ کارکنوں کو جلد از جلد اسپتال لے جایا جا رہا ہے۔ اس کے لیے ان کی صحت اور حالت کے لحاظ سے فضائی اور سڑک ٹرانسپورٹ کے انتظامات کیے گئے ہیں۔ انہیں طبی سہولیات فراہم کرنے کے لیے، جائے وقوعہ سے 30 کلومیٹر دور چنیالیسور کمیونٹی ہیلتھ سنٹر میں 41 بستروں کا اسپتال تیار کیا گیا ہے۔