بانہال اور آس پاس پہاڑوں پر ہلکی برفباری | وادی میںمطلع ابر آلود،29-30نومبر موسم غیر موافق رہیگا

عظمیٰ نیوز سروس+محمد تسکین

سرینگر+بانہال// محکمہ موسمیات نے کہا ہے کہ کشمیر میں زیادہ تر مقامات پر کم از کم درجہ حرارت میں نمایاں بہتری آئی ہے، جس سے شہریوں کو شدید سردی سے کچھ راحت ملی، یہاں تک کہ وادی میں دھند کی ایک موٹی تہہ چھائی ہوئی ہے۔ گلمرگ وادی کا واحدمقام تھا جہاں کم از کم درجہ حرارت نقطہ انجماد سے نیچے منفی 1.2 ڈگری سیلسیس رہا۔حکام نے بتایا کہ سرینگر میں کم از کم 3.5 ڈگری سیلسیس ریکارڈ کیا گیا جو کہ گزشتہ رات صفر ڈگری سیلسیس سے زیادہ ہے۔انہوں نے بتایا کہ قاضی گنڈ میں کم سے کم درجہ حرارت 2.6 ڈگری سیلسیس پر طے ہوا، جب کہ کوکرناگ میں 2.8 ، پہلگام میں 1.5 اور کپواڑہ میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 1.8 ڈگری سیلسیس پر رہا۔دھند کی ایک موٹی تہہ نے پیر کی صبح وادی کو اپنی لپیٹ میں لے لیا۔ تاہم دھند کی وجہ سے سری نگر ہوائی اڈے پر فضائی ٹریفک پر زیادہ اثر نہیں ہوا۔محکمہ موسمیات نے کہا ہے کہ کشمیر میں کئی مقامات پر منگل تک ہلکی سے درمیانی دھند جاری رہنے کا امکان ہے۔ پیر کوجموں و کشمیر کے بیشتر مقامات پر موسم عام طور پر ابر آلود رہا اور منگل تک کچھ مقامات پر ہلکی بارش یا برفباری کے ساتھ ایسا ہی رہنے کا امکان ہے۔بدھ سے، کافی وسیع مقامات پر ہلکی سے درمیانی بارش یا برفباری کے امکانات ہیں اور دو دن کے دوران چند مقامات پر گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے۔MeT نے کشمیر میں 29-30 نومبر کو بارش اور برف باری کی پیش گوئی کی ہے۔محکمہ موسمیات نے ماہ کے آخر تک کشمیر میں کافی وسیع مقامات پر ہلکی بارش یا برفباری ہوسکتی ہے تاہم 1 سے 5 دسمبر تک جزوی طور پر ابر آلود موسم رہے گا۔ادھر رام بن اور بانہال کے سیکٹر میں اتوارسہ پہر چار بجے ہلکی بارش ہوئی۔ اس دوران پیر پنچال کے پہاڑی سلسلے پر ایک اور ہلکی برفباری بھی ہوئی ۔ جواہر ٹنل ، چنجلو ٹاپ ، چنگ مال اور مہو منگت کے پہاڑوں پر بھی ہلکی برفباری ہوئی ۔