اوم پورہ بڈگام میں کشمیری پنڈت فوت | آخری رسومات اکثریتی فرقے نے انجام دیں

سرینگر //اوم پورہ بڈگام میں مقامی مسلمانوں نے فرقہ وارانہ بھائی چارے کی مثال قائم کرتے ہوئے 85سالہ کشمیر پنڈت کے آخری رسومات کی انجام دہی میں شمولیت کی۔ جگر ناتھ کول اوم پورہ بڈگام کے رہنے والے تھے اور وہ این سی سی میں ملازم تھے۔وہ علاقے کی ایک جانی مانی ہستی تھی۔ جگرناتھ کول کی  فوتیدگی کے وقت صرف چند اہلخانہ ہی موجود تھے تاہم مسلمانوں اور انکے کشمیری دوستوں کی ایک بڑی تعداد موجود رہی۔ جگرناتھ کے آخری رسومات کی ادائیگی کی ذمہ داری علاقے کے مسلمانوں نے خود اٹھائی اور لوازمات پورے کئے۔ مسلمانوں نے ہی مذکورہ پنڈت کی میت کو کندھا دیا اور اسکے آخری رسومات کیلئے لکڑی کا انتظام بھی کیا ۔ جگر ناتھ کول اپنے پیچھے اہلیہ اور دو بچوں کو چھوڑ گئے ہیں۔ جگر ناتھ کول کے اہلخانہ نے مقامی لوگوں کا شکریہ ادا کیا ہے۔