تازہ ترین

ماحولیات کو درپیش خطرات …

 جموں وکشمیر میں فی الوقت آلودگی کے بڑھتے ہوئے گراف کی وجہ سے جو ماحولیاتی خطرات پیدا ہوگئے ہیں وہ نہایت ہی سنگین ہیں۔ حالانکہ ماضی میںریاستی عدالت عالیہ نے حکومت کو ہدایت دی تھی کہ وہ پالی تھین سے پاک جموں وکشمیر کا خواب شرمندہ تعبیر بنانے کیلئے لکھن پور ٹول پلازہ  پر نگرانی نظام مزید سخت کرے تاکہ جموں و کشمیر میں پالی تھین کی برآمد روکی جاسکے ۔ چنانچہ عدلیہ کے دبائو کے نتیجہ میں ہی اُس وقت حکومت کو پالی تھین پر پابندی عائد کرنے کیلئے قانون سازی کرنا پڑی تھی تاہم یہ ایک کھلی حقیقت ہے کہ پابندی کا اطلاق قانون کی کتابوں تک ہی محدود رہا جبکہ عملی طور متعلقہ حکام کی ناک کے نیچے ریاست میں پالی تھین کا استعمال شدومد سے جاری ہے اور کوئی انہیں روکنے والا نہیں ہے۔یہ سال 2009کی بات ہے جب سرکار نے پالی تھین لفافوں کے استعمال پر پابندی کا اعلان کیا تھا۔یہ عجیب بات ہے کہ حکومت کی طرف س