تازہ ترین

آؤ کہ بھول جاتے ہیں

آؤ کہ بھول جاتے ہیں  چْبھ گئے ہیں جو  باتوں کے نشتر  دل پر لگے ہیں جو  زہر میں ڈوبے خنجر    آؤ کہ بھول جاتے ہیں  رنجشیں  نفرتیں  عداوتیں   آؤ کہ کِھلاتے ہیں  چاہتوں کے گلاب  پڑھتے ہیں مل کر  محبتوں کا نصاب    آؤ کہ مل کر  تفسیرِ وفا  آیاتِ محبت پڑھتے ہیں  آؤ کہ پڑھ کر تسبیح پیار کی  ہم دم کرتے ہیں    شمیمہ صدیق شمی  شوپیان کشمیر  

قطعات

کرن اُمید کی فکر و نظر میں اسی کی روشنی قلب و بصر میں نظامِ زندگی قائم ہے اس سے اسی کا حوصلہ دل میں جگر میں   شفق روتی ہے خُوں تو شامِ غم ہے شبِ تاریک رُخصت صُبحدم ہے سحر ہی جب ہے انجامِ شبستاں تو پھر مایوس کیوںیہ چشمِ نم ہے   اسی عُقدہ میں ہے عقدہ کُشائی کلی کِھل کر یہی پیغام لائی نہ گھبرانا تو اے دل مشکلوں سے صبح ہو ہی گئی جب رات آئی   دلِ غم ہے اور جشمِ پُرنم پریشاں حالیوں کا دَور ہردم خدا جانے کہ اب کیا حالِ دل ہو نہاں جس میں ہیں لاکھوں درد اور غم    موبائل نمبر؛7006606571

کووِڈ

آبھی جا! اب ضبط میرا آزمانےکے لئے ایک میٹر دور سے دل کو لگانے کے لئے کوئی بھی موقع عمل کا پیش تو ہوگا نہیں پھر بھی آ، ناکام عاشق کو ستانے کے لئے  دہنِ غنچہ، بینیٔ شمشیر ماسک میں سہی مُجھ کو کافی ہیں مرے مِژگاں لُبھانے کے لئے  مرمریں ہاتھوں پہ دستانے چڑھے تو غم نہیں ساعدِ سیمیں تو ہیں باقی دِکھانے کے لئے  چشمِ نرگس ہاتھ سے چُھونا ہدایت میں نہیں یہ بھی کیا کم ہے ملیں، نظریں ملانے کے لئے  گرکیا کووڈ نے اپنے بس میں اب بوس وکنار تُو اجازت لے کے آجا مُسکرانے کے لئے  بُھول جاعیش و طرب اور وصل کے شام و سحر  آئو وائرس کے دِنوں، آنسو بہانے کے لئے    یوسف نیرنگؔ توی وہار، جموں موبائل نمبر؛9419105051

تازہ ترین