تازہ ترین

کووِڈ ۔19: مشیربصیر احمد خان نے صورتحال کا جائزہ لیا

 جموں//لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر بصیر احمد خان نے یہاں ایک میٹنگ طلب کر کے کووِڈ ۔19 کی صورتحال اور ضروری اشیاء کی دستیابی کا جائزہ لیا۔میٹنگ میں صوبائی کمشنر کشمیر ، آئی جی کشمیر اور صوبے کے تمام اضلاع کے ڈپٹی کمشنروں نے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے شرکت کی۔آئی جی ٹریفک اور ایس ایس پی قومی شاہراہ بھی میٹنگ میں موجود تھے۔میٹنگ کے دوران افسروں نے کشمیر صوبے کے مختلف مقامات پر قائم کئے گئے لنگروں اور شلٹروں کی تفصیلات دیں۔اس موقعہ پر وادی کے مختلف علاقوں خصوصاً ریڈ زونز میں ضروری اشیاء کی تقسیم کاری اور فراہمی کے بارے میں تفصیلات دی گئیں۔ڈپٹی کمشنروں نے مشیر موصوف کو جانکاری دی کہ کسی بھی ضلع میں ضروری اشیاء کی کوئی کمی نہیں ہے اور لاک ڈاون کو مؤثر طور عملایا جارہا ہے ۔ اس کے علاوہ کورونا وائرس کے مشتبہ مریضوں کا رہنما خطوط کے تحت ٹیسٹ کیا جارہا ہے۔میٹنگ میں جانکاری دی گئی کہ وادی میں ا

’سفری تاریخ چھپانا بڑا گناہ ، رضاکارانہ طور تفصیلات ظاہرکرنا نیک کام ‘

جموں// جموں وکشمیر کے پولیس سربراہ دلباغ سنگھ نے کہا کہ کورونا وائرس کے خطرے کے چلتے سفری تاریخ چھپانا ایک بہت بڑا گناہ ہے اور اس کو ظاہر کرنا ایک نیک کام ہے۔ انہوں نے کہا کہ رضاکارانہ طور پر اپنی سفری تاریخ ظاہر کرنے والوں کے خلاف کوئی مقدمے درج نہیں ہوں گے۔ دلباغ سنگھ نے ملکی یا غیر ملکی سفر سے واپس لوٹنے والوں سے ایک بار پھر اپنی سفری تاریخ ظاہر کرنے کی اپیل کرتے ہوئے کہا،’’سفری تاریخ ظاہر نہ کرنا بہت بڑا گناہ ہے اور اس کو ظاہر کرنا ایک نیک کام ہے۔ کنٹیکٹ ٹریسنگ کے ذریعے ہم نے سفری تاریخ چھپانے والے کئی افراد کا پتہ لگایا اور انہیں قرنطینہ مراکز منتقل کیا۔ ابھی بھی ممکن ہے کہ کسی نے سفری تاریخ ظاہر نہ کی ہو۔ میرا ماننا ہے کہ سفری تاریخ ظاہر کرنے سے سماج کا بہت بڑا فائدہ ہوگا‘‘۔ ان کا مزید کہنا تھا،’’اب بھی اگر کوئی رضاکارانہ طور پر سامنا آتا

صدر و نائب صدر کی ویڈیو کانفرنس

جموں//لیفٹیننٹ گورنر گریش چندر مرمو نے صدر جمہوریہ رام ناتھ کووند کو ویڈیوکانفرنسنگ کے ذریعے جے اینڈ کے یوٹی میں کووڈ۔19کے پھیلائو کو روکنے کے سلسلے میں اُٹھائے جارہے اقدامات کے بارے میں جانکاری دی ۔ یہ ویڈیو کانفرنس صدر جمہوریہ اور نائب صدرجمہوریہ ایم وینکیا نائیڈو نے ملک کے تمام گورنر وں ، لیفٹیننٹ گورنر اور ایڈمنسٹریٹروں کے ساتھ منعقد کی تاکہ اس وَبا کے پھیلائو کو روکنے کے لئے کی جارہی تیاریوں اور اُٹھائے جارہے اقدامات پر غور کیا جاسکے۔میٹنگ کے آغاز میں صدر جمہوریہ ، نائب صدر جمہوریہ اور لیفٹیننٹ گورنر نے کووَڈ ۔19کے خلاف کام کرنے والے عملے کی کاوشوںک سراہنا کی ۔ اُن میں ڈاکٹر ، نرسیں ، پولیس عمل و دیگر بہادر افراد شامل ہیں۔انہوں نے اس بات کا اعادہ کیا ان بہادر لوگوں کو حکومت کی طرف سے تمام ضروری طبی و دیگر تعاون فراہم کیا جائے گا۔ بات چیت کے دوران کئی اہم معاملات پر سیر حاصل بحث ہ

جنگجومخالف آپریشن

کپوارہ //جنگجوئو ں مخالف کاروائی کے دوران ہندوارہ پولیس نے علاقہ میں 4جنگجو ئوںاور3بالاے زمین ورکروں کو گرفتارکرکے اُن کی تحویل سے بھاری مقدار میں اسلحہ و گولہ بارود ضبط کرنے کادعویٰ کیا ہے ۔ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ جمعرات کو دوران شب ہندوارہ پولیس اور فوج نے ایک مصدقہ اطلاع ملنے پر شالہ پورہ لنگیٹ میں آزاد احمد بٹ کے گھر پر چھاپہ مار اور اُسے گرفتار کیا ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ پولیس اور فوج نے بابا گنڈ لنگیٹ علاقہ میں بھی ایک چھاپہ کے دوران الطاف احمد بابا اور اوڑی کے ارشاد احمد کو حراست میں لیکر اُن سے پوچھ تاچھ کی ۔گرفتار کئے گئے تینو ں نوجوانو ں کے بارے میں کہا جارہا ہے کہ یہ بالائے زمین ور کر ہیں ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ دوران تفتیش تینو ں بالائے زمین وکرورں کی نشاندہی پر ہندوارہ پولیس کی ایک خصوصی ٹیم نے فورسز کے ساتھ ایک مشترکہ کاروائی کے دوران جمعہ کے روز چوگل علاقہ کو محاصرہ میں لیا

سرحدی علاقوں کے سڑک رابطے بحال کئے جائیں: ڈاکٹر فاروق

سرینگر// نیشنل کانفرنس صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے سرحدی علاقہ گریز،کرناہ اور دیگر سرحدی علاقوں کی رابطہ سڑکیں کی بحالی پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ان علاقوںکا رابطہ مسلسل منقطع رہنے سے لوگوں کو سخت مشکلات درپیش ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایک طرف غذائی اجناس اور ضروریاتِ زندگی کی کمی ہے اور دوسری جانب ادویات کی قلت بھی ہونے لگی ہے۔ انہوں نے مزیدکہا کہ ان علاقوں کے مریض علاج و معالجہ کیلئے بھی کسی دوسرے علاقے میں جانے سے بھی قاصر ہیں۔ ڈاکٹر عبداللہ نے بیکن اور متعلقہ حکام کو ہدایت دی کہ ان علاقوں کا سڑک رابطہ جنگی بنیادوں پر بحال کرکے وہاں ضروریاتِ زندگی کا وافر سٹاک پہنچایا جائے۔   

نئے اقامتی ضابطوں سے لوگ افسر دہ :مظفر بیگ

 سرینگر//سابق نائب وزیر اعلیٰ مظفر حسین بیگ نے اقامتی قانون سے متعلق حکومت ہند کے فیصلے کو مایوس کن قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس فیصلے سے جموں وکشمیر کے عوام افسر دگی سے دوچار ہوئے ، جو پہلے ہی عالمی وبا کووڈ ۔19کے خطرے سے لڑ رہے ہیں ۔کے این ایس کے مطابق مظفر حسین بیگ نے کہا،’’مجھے امید ہے کہ حکومت ہند اس مسئلے پر دوبارہ غور کرے گی‘‘۔ان کا کہناتھا ،’’پہلے ہی دن سے جب میں گھر میں نظر بند تھا ،میرا اس معاملے پر موقف واضح تھااور ہے ‘‘۔ان کا کہناتھا،’ ’میرا یہ موقف اور یقین ہے کہ اگر سپریم کورٹ آف انڈیا نے دفعہ370اوردفعہ35A کی منسوخی سے متعلق پارلیمانی فیصلے کو برقرار رکھا ،تو جموں وکشمیر کے عوام کواقامتی حقوق دیئے جانے چاہئے ،جسکی ضمانت 1927میں مہاراجہ ہری سنگھ نے دی تھی اور یہ حقوق دفعہ 371سے محفوظ کئے جانے چاہئے ۔ ان کا کہنات

نقص امن کے الزام میں گرفتار سابق ڈپٹی میئرشیخ عمران

 سرینگر// سرینگر میونسپل کارپوریشن کے سابق ڈپٹی میئر شیخ عمران جنہیں5اگست کو گرفتار کیا گیاتھا،جس کے بعد تاہنوز وہ نظر بند ہیں،جبکہ والدین  نے اُنہیں انسانی بنیادوں پر رہا کرنے کی اپیل کی ہے۔مرکز کی طرف سے5اگست کو جموں کشمیر کے آئین کی تنسیخ اور تقسیم کے ساتھ ہی دیگر مین اسٹریم سیاست دانوں کے ہمراہ  ایس ایم سی کے ڈپٹی میئر شیخ عمران کو نقص امن کی پاداش میں گرفتار کیا گیا،جو ہنوز نظر بند ہیں۔ اس دوران وادی میں کرئونا وائرس کے پھیلائو کے پیش نظر شیخ عمران کے اہل خانہ بشمول عمر رسیدہ والدین نے انکی رہائی کا مطالبہ کیا۔ معلوم رہے کہ شیخ عمران کو دفعہ107کے تحت گرفتار کیا گیااوراُن پر5اگست کوجموں کشمیرکا خصوصی  درجہ کے خاتمے پر نقص امن کاالزام عائد کرکے گرفتار کیا گیا اوروہ تاہنوز نظر بند ہیں۔ شیخ عمران کے والد شیخ مشتاق کا کہنا تھا کہ وہ گزشتہ7ماہ سے  ایام اسیری کا

باغات کنی پورہ ،کاو ہار ،فتح گڈھ اورگنڈ چوگل میں ناقص برقی سپلائی

سرینگر+ بارہمولہ +کپوارہ// باغات کنی پورہ اور اسکے مضافاتی علاقوں میں بجلی کی ابتر صورتحال پر صارفین نے شدید غم و غصہ کا اظہار کرتے ہوئے انتظامیہ سے مطالبہ کیا ہے کہ ان علاقوں میں بجلی سپلائی میں معقولیت لائی جائے ۔مقامی آبادی نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ باغات کنی پورہ ،آری باغ ،حمزہ کالونی ،وانہ بل ،ڈانگر پورہ اور ملحقہ علاقوں کو پانپور سے بجلی فراہم ہوتی ہے اور 2ماہ قبل اس میں فالٹ آنے کے بعد ان علاقوں میں بجلی سپلائی حد درجہ متاثر ہے ۔انہوں نے کہا کہ ان علاقوں میں مرحلہ وار طریقے سے صرف 8گھنٹے بجلی فراہم ہوتی ہے ۔مختیار احمد نامی ایک شہری نے بتایا کہ ایک گھنٹے بجلی آنے کے بعد 3گھٹنے بند رکھی جاتی ہے اور اس طرح بجلی کی آنکھ مچولی نے صارفین کی ناکھ میں دم کر رکھا ہے ۔لوگوں نے بتایا کہ اگر چہ ان علاقوں میں بجلی کی ابتر صورتحال کے بارے میں کئی بار متعلقہ محکمہ کے اہلکاروں کی نوٹس می

روہت کنسل کا جعلی ٹویٹر اکونٹ

سرینگر//بلال فرقانی// عوام تک سماجی رابطہ گاہ ٹیوٹر تک کورونا وائرس کی تازہ ترین تفصیلات پہنچانے والے حکومتی ترجمان روہت کنسل کا کہنا ہے کہ ان کے نام پر جعلی ٹیوٹر اکونٹ کھولے گئے ہیں۔ کنسل نے ٹیوٹر پر پیغام تحریر کرتے ہوئے کہا’’مجھے بتایا گیا کہ میرے نام سے کئی جعلی ٹوئٹر اکائونٹ کھولے گئے ہیں، یہ جعلی اکاوئنٹس انتشار پیدا کرنے کا سبب بن سکتے ہیں، برائے مہربانی نوٹ کریں کہ میرا اس کے علاوہ کوئی دوسرا ٹوئٹر اکاونٹ نہیں ہے، ہم مشکل حالات میں ہیں، مہربانی کرکے ایسا کرنے سے اجتناب کریں‘‘۔کورونا وائرس سے متعلق تازہ ترین معلومات پہنچانے کی پاداش میں گزشتہ2ہفتوں کے دوران انہیں سماجی میڈیا پر تعاقب کرنے والوں کی تعداد میں کافی اضافہ ہوگیا ہے۔   

کورونا وائرس اورلاک ڈائون

میونسپل کمیٹی نے مخصوص گاڑی کو ہری جھنڈی دکھائی    گاندربل//میونسپل کمیٹی گاندربل کی جانب سے ایک مختصر تقریب پر گھر گھر جاکر کوڈا کرکٹ جمع کرنے والی گاڑیوں کو ہری جھنڈی دکھاکر روانہ کیا۔کوروناوائرس کے سلسلے میںاحتیاطی تدابیر بروئے کار لاتے ہوئے میونسپل کمیٹی نے گھروں میں جمع ہونے والے کوڈا کرکٹ کو دروازے پر ہی اٹھانے کیلئے اس کوشش کا آغاز کیا۔میونسپل کمیٹی گاندربل کے چیئرمین الطاف احمد لون،ایگزیکٹو افسر غلام محمد لون نے پانچ ہوپر گاڑیوں اور تین ٹپروں کو ہری جھنڈی دکھاکر روانہ کیا۔اس موقع پر میونسپل کمیٹی کے چیئرمین الطاف احمد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا ’’کوروناوائرس کے نتیجے میں اس وقت آبادی کو گھروں میں رہنے کی ہدایت دی جارہی ہے اورایسے میں روزانہ گھروں میں جمع ہونے والے کوڈا کرکٹ کو گھروں سے ہی حاصل کیا جائے گا‘‘۔  

مزید خبرں

پونچھ میں حدم متارکہ پر گولہ باری  ۔6اہلکارزخمی، رہائشی علاقوں میں افراتفری سرینگر// پونچھ سیکٹر میں حد متارکہ پربھارت اور پاکستان کی فوجوں کے درمیان گولہ باری کا سلسلہ جاری ہے ،جس کے نتیجے میں 6اہلکار زخمی ہوگئے ۔تفصیلات کے مطابق جمعہ کوپونچھ کے سندربنی اور بالاکوٹ سیکٹروں میں پاکستانی فوج نے بھارت کی چوکیوں کو نشانہ بنایا۔دفاعی ذرائع کے مطابق بھارتی افواج نے پاکستان کی گولہ باری کا معقول جواب دیا۔معلوم ہوا ہے کہ اس دوران کچھ مارٹر گولے رہائشی علاقوں میں بھی جاگرے جس کی وجہ سے وہاں افراتفری کاماحول پیدا ہوا۔دفاعی ذرائع کے مطابق پاکستان نے بلا کسی اشتعال کے بھارتی چوکیوں کو نشانہ بنایااورجدیدہتھیاروں سے گولہ باری کی۔سی این ایس نے دفاعی ذرائع کے حوالے سے بتایاکہ گولہ باری کے نتیجے میں چھ اہلکارزخمی ہوگئے جنہیں علاج معالجہ کیلئے اسپتال لیجایا گیا۔   پٹن میں مٹی