تازہ ترین

کورونا وائرس سے مزید 4فوت، 88کا نیا اندراج

 سرینگر // جموں و کشمیر میں پھر کورونا وائرس سے فوت ہونے والے افراد کی تعداد میں اضافہ ہوا اور جمعہ کو مزید 4افراد وائرس سے فوت ہوگئے۔ متوفین کی مجموعی تعداد 1928تک پہنچ گئی۔ مہلوکین میں 719 جموں جبکہ 1209 کشمیر سے تعلق رکھتے ہے ۔  پچھلے 24 گھنٹوں کے دوران کوروناوائرس کی تشخیص کیلئے 22ہزار ایک تشخیصی ٹیسٹ کئے گئے جن میں 88کی رپورٹیں مثبت آئیں اور اسطرح متاثرین کی مجموعی تعداد 1لاکھ 23ہزار852ہوگئی ہے جن میں 72ہزار 491کشمیر جبکہ 51ہزار361ہوگئی ہے۔ نئے 88معاملات سامنے آئے ہیں ، ان  میں 42جموں جبکہ 46کشمیر سے تعلق رکھتے ہیں۔ کشمیر میں متاثر ہونے والے 46افراد میں سے 18ضلع سرینگر، 4بارہمولہ، 5بڈگام، 4پلوامہ، 3کپوارہ، 4اننت ناگ، 2بانڈی پورہ، 4گاندربل، 0شوپیان اور 2کولگام سے تعلق رکھتے ہیں۔ جموں صوبے کے 42افراد میں 32ضلع اننت ناگ، 2ادھمپور، 3راجوری، 1ڈوڈہ اور 4پونچھ سے تعلق رک

جمعہ کو 3003طبی عملے نے ٹیکے لگوائے

 سرینگر // سی ڈی اسپتال ڈلگیٹ میں شعبہ امراض چھاتی کے سربراہ اور سٹیٹ ایمونائزیشن آفیسر جموں و کشمیر سمیت جمعہ کو مزید 3ہزار سے زائد ہیلتھ ورکروں کو کورونا مخالف ٹیکے لگائے گئے اور اسطرح جموں و کشمیر ابتک 10ہزار ہیلتھ ورکروں کو کورونا مخالف ویکسین دیئے گئے ہیں۔جمعہ کو سی ڈی اسپتال میں سب سے پہلے کورونا مخالف ٹیکہ لگوانے والے ڈاکٹر نوید نذیر نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا ’’ ٹیکہ لینے کے بعد مجھ میں کوئی تبدیلی نہیں آئی، بلکہ میں ہلکا بخار اور جسم میں درد کی اُمید کررہا تھا لیکن وہ بھی نہیں ہوا ‘‘۔ انہوں نے کہا کہ ویکسین کرانے کے بعد میں تمام ہیلتھ ورکروں سے کہوں گا کہ وہ اپنے لئے اور اپنے اہلخانہ کے علاوہ دیگر لوگوں کیلئے ویکسین لگوائیں کیونکہ جب وہ محفوظ رہیں گے ، تبھی انکے اہلخانہ اور دیگر لوگ بھی محفوظ رہیں گے‘‘۔ انہوں نے کہا کہ لوگ افواہ پھیلا رہ

۔26جنوری کی آمد آمد

سرینگر//26جنوری کی آمد کے ساتھ ہی شہر میں تلاشیوں کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے۔ لالچوک، شہر کے سیول لائنز  میں کئی مقامات پر ناکوں اور بخشی سٹیڈیم کے ارد گرد بھی گاڑیوں اور راہگیرئوں کی تلاشیاں لی جارہی ہیں۔ رام باغ نٹی پورہ علاقے میں فورسز نے جمعہ کو تلاشیاں لیں۔ پرائیویٹ گاڑیوں کو روک کر انکی تلاشی لی گئی اور مسافروں کی چیکنگ کی گئی۔ فورسز نے جمعہ کو سیول لائنز علاقوں اور لالچوک کے گردونواح میں گاڑیوں کی باریک بینی سے تلاشیاں لیں،اور گاڑیوں کے کاغذات کی جانچ کی۔بڈشاہ چوک،ٹی آر سی کراسنگ اور پولو ویو کے نزدیک اضافے ناکے لگائے گئے تھے اور راہگیروں،موٹر سائیکل سواروں اور گاڑیوں کی تلاشیاں لی گئیں۔26جنوری کی آمد ہو یا 15اگست کا دن ہو،  شہر میں پچھلے 30برسوں سے یہی صورتحال دیکھنے کو ملتی ہے۔جگہ جگہ ناکے لگانا، جامہ تلاشیاں لینا، گاڑیوں کی چیکنگ کرنا وغیر کوئی نئی بات نہیں ہے۔ بائی

سیاسی مخالفین کی تنگ طلبی جمہوری نظام کا حصہ نہیں؛نیشنل کانفرنس

سرینگر// نیشنل کانفرنس کے اراکین پارلیمان محمد اکبر لون اور جسٹس (ر) حسنین مسعودی نے قیدیوں خصوصاً سیاسی لیڈران کی رہائی کا مطالبہ کیاہے۔ دونوں لیڈران نے کہا کہ کشمیر کے سیاسی لیڈران کو نشانہ بنانا ،تنگ طلب کرنا اور بلاجواز طریقے پر نظربند رکھنا معمول بن کر رہ گیا ہے۔ ایک بیان میںانہوں نے کہا کہ سیاسی لیڈران کیساتھ اس طرح کا نارواسلوک روا رکھنا ایک انتہائی تشویشناک صورتحال کی عکاسی کرتا ہے۔ اُن کا کہنا تھاکہ سیاسی لیڈران کی نظربندی اور تنگ طلبی سے اس بات کا اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ عام لوگوں کو کس صورتحال کا سامنا کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ سیاسی مخالفین کی بلاوجہ تنگ طلبی اور بلاجواز نظربند ی کسی بھی جمہوری نظام کا حصہ نہیں ہوسکتی۔ انہوں نے کہاکہ سیاسی انتقام گیری کی بنا پر کسی بھی فرد کی انفرادی آزادی پر قدغن نہیں لگائی جاسکتی ہے، یہ آئین اور قانون کی صریحاً خلاف ورزی ہے۔ پارٹی لی

حیدرپورہ، بڈشاہ نگر نٹی پورہ ماگام اور لارکی پورہ میں آگ کی وارداتیں

سرینگر+اننت ناگ// حید پورہ،بڈشاہ نگر نٹی پورہ ، ماگام اور لارکی پورہ اننت ناگ میں آتشزدگیوں کے الگ الگ واقعات میں2رہائشی مکان خاکستر ہوگئے جبکہ دارالعلوم اور دکان کو نقصان پہنچا۔ گلوان پورہ حیدر پورہ میں قائم دارالعلوم سیدہ حفصہؓ اسلامیہ میں جمعرات کورات دیر گئے آگ نمودار ہوئی ۔آگ لگنے کی اطلاع ملتے ہی فائر سروس عملہ جائے واقعہ پر پہنچ گیا اور آگ پر قابو پالیاگیا۔ آگ لگنے سے دارالعلوم میں موجود سامانا، دینی کتب خاکستر ہوگئیں۔ مقامی لوگوںکاکہنا ہے کہ آگ کا یہ واقعہ رونماہوتے وقت عمارت میں قریب 12 طالب علم اورمعلم موجودتھے اور انہیں بحفاظت وہاں سے نکالاگیا۔اس دوران بڈشاہ نگرنٹی پورہ سرینگر میں جمعرات کوبجلی شارٹ سرکٹ کی وجہ سے ایک دکان میں آگ نمودار ہوگئی ۔آگ کو دیگر دکانوں تک پھیلنے سے پہلے ہی قابو پالیاگیا۔دریں اثناء ماگام بڈگام میں بھی جمعرات کی شب ایک رہائشی مکان میں آگ نمود

ریزوپتی گڈربال گنہ ون میں زمین کھسکنے سے خوف و ہراس

کنگن// ریزو پتی گڈر بال گنہ ون گنڈ میں زمین کھسکنے سے رہائش پذیر آبادی میں خوف ہراس کی لہر دوڑ گئی ہے۔ ریزو پتی گڈری بال گنہ ون کے لوگوں نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ ان کی بستی 6 گھرانوں پر مشتمل ہے اور ان کے رہائشی بستی سے جو حیدر کنال گزر رہی ہے ، اس کی وجہ سے زمین کھسکتی ہے ۔مقامی بستی کے باشندے غلام بنی کاکہنا ہے کہ 16جنوری کی رات ساڑھے دس بجے ایک زور دار دھماکہ ہوا جس کے بعد مقامی بستی کے لوگ گھروں کے اندر سہم گئے اور صبح کوجب لوگ گھروں سے باہر آئے تو انہوں نے دیکھا کہ زمین کھسک گئی ہے اور وہاں پر ایک بھاری مٹی کا تودہ گر آیاتھا۔ مذکورہ شہری نے کہاکہ اس بارے میں سب ڈویژنل مجسٹریٹ کنگن کو بھی آگاہ کیا گیا ہے۔ لوگوں کاکہنا ہے کہ اگر اراضی پرپشتہ جلد نہیں تعمیر کیاگیا تو یہاں پر کھبی بھی بڑا حادثہ رونما ہوسکتا ہے۔ لوگوں کاکہنا ہے کہ موسم سرما کے دوران درجہ حرارت میں کمی ہونے سے اگر

نوگام میں چوری کے 2معاملات حل

 سرینگر // سرینگر میں پولیس نے چوری کے دو معاملات کو حل کرتے ہوئے 7افراد کو گرفتار کرکے لاکھوں روپے کا مال مسروقہ برآمد کرلیا۔ پولیس نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ 14جنوری 2021کو پولیس تھانہ نوگام کو محمد شفیع ساکن چکپورہ نوگوام کی طرف سے ایک تحریری شکایت موصول ہوئی جس میں بتایا گیا تھا کہ چیک پورہ نوگام سے کچھ نامعلوم چوروں نے اس کی 35 بھیڑیں چرا لیں ۔تحریری شکایت پر پولیس نے ایک کیس زیر نمبر 3/2021درج کر کے تحقیقات شروع کی ۔تفتیش کے دوران ، تفتیشی افسران کو چار افراد کی شمولیت کے بارے میں معلوم ہوا جنہیں گرفتار کر کے ان کے قبضے سے 10 بھیڑیں برآمد ہوئی ہیں۔پولیس نے کہا کہ نوگام تھانہ کو 16جنوری کے 2021کو بھی عبدالحمید بٹ ساکن نوگام سے ایک تحریری شکایت موصولہ ہوئی جس میں بتایا گیا کہ کچھ نامعلوم چوروں نے نوگام بائی پاس پر واقع ایم / ایس کشمیر ویلی ٹریڈنگ کمپنی یعنی اس اسٹور سے سینی

مشیر بصیر خان سے متعدد وفود اور اَفراد ملے

سری نگر//متعدد وفود اور افراد نے سول سیکرٹریٹ میں لیفٹیننٹ گورنرکے مشیر بصیراحمد خان کو اپنی شکایات اور مانگوں سے آگاہ کیا۔ صدر کے ایم ٹی ایف محمد یاسین خان نے مشیر کو ترال بس سٹینڈ میں دکانوں کی تعمیر کے بارے میں تفصیل دی ۔ اِس موقعہ پراے ڈی سی پلوامہ موجود تھے ،نے مشیر کو بتایا کہ مذکورہ کام کا مفصل پروجیکٹ رپورٹ تیار کرکے منظوری کے لئے پیش کیا گیا ہے۔سرینگر میونسپل کارپوریشن کے کارپوریٹروں کے ایک وفد نے مشیر بصیر احمد خان سے ملااور انہیں اپنے متعلقہ وارڈوں میں مختلف تعمیراتی کاموںکے بارے میں جانکاری دی اور رہائشی سہولیات سے متعلق مسائل سے بھی انہیں آگاہ کیا۔زکورہ حضرت بل سے آئے ایک وفد نے مشیر سے درخواست کی ان کی بستی میں ایک اضافی بجلی ٹرانسفارمر نصب کیا جائے کیوں کہ موجودہ ٹرانسفارمر میں پوری بستی کو بجلی سپلائی کرنے کی صلاحیت موجود نہیں ہے جس کے سبب بجلی کی سپلائی متاثر رہتی ہ

اونتی پورہ ، کولگام اور رعناواری میں منشیات ضبط

ترال//اونتی پورہ ، کولگام اور سرینگر میں پولیس نے الگ الگ کارروائیوںکے دوران منشیات ضبط کرکے 5سمگلرو ں کو گرفتار کرلیا۔ اونتی پورہ میں پولیس نے 16کلوگرام چرس برآمد کرکے 2 منشیات فروشوں کو گرفتار کرلیا۔ ٹول پلازہ اونتی پورہ کے نزدیک پولیس نے ناکہ بٹھایا تھا جس کے دوران ایک بی ایم ڈبلیو گاڑی زیر نمبر HR10R-0010  کو روک کر تلاشی لی گئی جس کے دوران 16.250 کلوگرام چرس برآمد کیاگیا۔ اس موقعہ پر پولیس نے محمد امین وانی ساکنہ پانتہ چھوک اور آصف احمد ریشی ساکنہ ترال کو گرفتار کرلیا۔ پولیس نے ایف آئی آر زیر نمبر17/2021 متعلقہ دفعات کے تحت درج کرکے تحقیقات شروع کی۔ ادھر میربازار چوک کولگام میں پولیس نے ایک سوفٹ ڈیزائر زیر نمبرPB10FS/6402کو رکنے کا اشارہ کیا تاہم ڈرائیور نے گاڑی کو تیزی سے آگے لے لیا۔پولیس نے گاڑی کا تعاقب کیا اور نیپورہ کراسنگ پر روک لیا اور جانباز احمد داس اور عمر امی

ایس ایس پی آفس اونتی پورہ میں تقریب منعقد

ترال //ڈسٹرکٹ پولیس ہیڈ کوارٹر اونتی پورہ میں ایک تقریب منعقد ہوئی ہے جس میں ترقی پانے والے انسپکٹروں کی وردی پر ستارے سجائے گئے ہیں ۔جمعہ کوایک تقریب منعقد ہوئی ہے جس کے دوران حال ہی میں ترقی پانے والے سب انسپکٹروں کو ایس ایس پی اونتی پورہ طاہر سلیم خان نے یونس خان اور عادل اشرف بٹ کی وردی پر ستارے سجائے گئے۔اس موقعہ پر ایس ایس پی اونتی پورہ نے افسران کے ساتھ چند پیشہ ورانہ تجربے بیان کئے اور یہ واضح کیا کہ ہر بلندی کے ساتھ زیادہ سے زیادہ ذمہ داری آتی ہے اور معاشرے اور قوم میں امن و ہم آہنگی کی بحالی میں اپنا کردار ادا کرنے کے لئے کسی کو اپنا وقت اور طاقت پیش کرنا ہوتا ہے ۔ اس دوران ترقی پانے والی افسران کو ایس ایس پی،ایس ڈی پی اواور ڈی ایس اس پی اونتی پورہ نے انہیں اور ان کے کنبوں کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے امید کی کہ یہ افسران مستقبل میں جوش اور جزبے کے ساتھ کام کریں گے ۔  

نجی اسکولوں کی انجمن کا عدالت عظمیٰ سے رجوع

سرینگر// نجی اسکولوں کی انجمن نے تیز رفتار4جی انٹرنیٹ کی بحالی کیلئے سپریم کورٹ میں عرضی پیش کرتے ہوئے کہا کہ اس سے طلاب کی تعلیم متاثر ہونے کے علاوہ ان کے ذہنی نشو نما پر بھی منفی اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔ نجی اسکولوں کی انجمن نے کہا کہ تیز رفتار انٹرنیٹ پر پابندی نے پورے جموں و کشمیر کے لاکھوں طلبا کے تعلیم کے معیار کو بری طرح متاثر کیا ہے۔ انجمن نے کہا’’ہمارے طلباء کو  5 اگست 2019 سے ا سکولوںکی طویل  وقت تک بندش کی وجہ سے تکلیف کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے جو  دفعہ370 کو منسوخ کرنے کے بعد بند ہوئے اور پھر کووِڈ - 19 وبائی مرض کی وجہ سے اس میں مزید توسیع ہوئی۔ ایسوسی ایشن نے درخواست میں استدعا کی کہ جموں وکشمیر کے بچوں نے پہلے ہی2 تعلیمی سال ضائع کردئیے ہیں کیونکہ 2 جی موبائل انٹرنیٹ کی رفتار سے ویڈیو کانفرنس کرنے والی اپلی کیشنزجیسے زوم یا ویب ایکس کا استعمال کرتے

شر ہامہ ماور میں بجلی سپلائی کے نا قص نظام پر عوام نالاں

کپوارہ//شر ہامہ ماور میں بجلی کے نا قص نظام پر لوگو ں میں محکمہ بجلی کے تئیں سخت ناراضگی پائی جارہی ہے ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ علاقہ میں بوسیدہ بجلی کے کھمبے اور ٹوٹی پھوٹیں تر سیلی تاریں لوگو ں کیلئے وبال جا ں بن چکی ہے اور اکثر اوقات عوام کے سر وں پر خطرات کے بادل منڈلا رہے ہیں ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ علاقہ میں بجلی کے نا قص نظام سے صارفین تنگ آچکے ہیں اور اکثر و بیشتر اوقات یہ علاقہ گھپ اندھیرے میں ڈوب جاتا ہے ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ بجلی کی عدم دستیابی کی وجہ سے جہا ں عام لوگ پریشان ہیں وہیں پر سکولو ں میں زیر تعلیم بچو ں کی تعلیم پر بھی منفی اثرات مرتب ہوجاتے ہیں ۔لوگو ں کا کہنا ہے کہ صورتحال حال کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ معمولی برف باری اور بارشو ں کی وجہ سے بوسیدہ بجلی کے کھمبوں کو نقصان پہنچ جاتا ہے جس کی وجہ سے یہ علاقہ کئی روز تک بجلی سپلائی سے محروم

اننت ناگ میں مسافروں سے اضافی کرایہ وصول

اننت ناگ //اننت ناگ کے مختلف علاقوں میں ٹرانسپورٹروں کی طرف سے مسافروں سے اضافی کرایہ وصول کرنے پرغم وغصہ پایاجارہاہے۔ ضلع کے مختلف روٹوں پر چلنے والے سومو اور وین ڈرائیور مسافروں سے اضافی کرایہ وصول کر رہے ہیں۔مسافروں کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کے پیش نظر 30فیصد مسافر کرایہ میں اضافہ کا حکم نامہ واپس لینے کے بعد بھی ڈرائیور اضافی کرایہ وصول کررہے ہیں اور ریٹ لسٹ دکھا کر مسافروں کو اضافی کرایہ دینے پر مجبور کرتے ہیں۔مسافروں کاکہنا ہے کہ ڈرائیوروں نے گاڑیوں میں روٹ کے مطابق ریٹ لسٹ کی کاپیاں رکھی ہیں اور من مرضی کرایہ وصول کررہے ہیں۔ اے آر ٹی او اننت ناگ پیر زادہ شبیر احمد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ کرایہ میں کوئی بھی اضافہ نہیں ہوا ہے اور جو ریٹ کوروناوائرس سے پہلے تھی ،وہی آج بھی ہے ۔انہوں نے کہا کہ ڈرائیوروں نے جو ریٹ لسٹ گاڑیوں میں رکھے ہیں وہ جعلی ہے اور عنقریب ایسے ڈرائیوروں کے

مزید خبرں

کولگام سڑک حادثے میں شہری ہلاک کولگام//کولگام میں سڑک کے ایک حادثے میں ایک شخص ہلاک ہوگیا۔اطلاعات کے مطابق یاری پورہ کولگام میں ایک45برس کا شہری اُس وقت جاں بحق ہوا جب اُسے ایک تیز رفتار تھری ویلر نے بدروگائوں کے قریب کچلا۔اُسے فوری طور یاری پورہ اسپتال پہنچایا گیا جہاں ڈاکٹروں نے اُسے مردہ قراردیا۔متوفی کی شناخت عبدالرحمن بٹ ولدمحمد لسی بٹ ساکن بدرو کے طور ہوئی ہے ۔پولیس نے اس سلسلے میں کیس درج کرکے تحقیقات شروع کی ہے۔        راشن کی کٹوتی پرعوامی نیشنل کانفرنس کو تشویش  سرینگر//عوامی نیشنل کانفرنس نے سرینگرمیں راشن کی کٹوتی پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے محکمہ خوراک ورسدات، امورصارفین وتقسیم کاری سے اس بارے میں وضاحت طلب کی ہے اور مرکزی زیرانتظام علاقہ جموں کشمیر کے لیفٹینٹ گورنر سے راشن کی کٹوتی کوختم کرنے میں اپنا رول اداکرنے کی اپیل کی ہے۔

کورونا وائرس:55سالہ خاتون فوت،117کے ٹیسٹ مثبت

 سرینگر //جمعرات کو جموں صوبے میں 55سالہ خاتون کورونا وائرس سے پیدا ہونے والے نمونیا سے فوت ہوگئی جبکہ کشمیر میں کوئی فوت نہیں ہوا۔ متوفین کی مجموعی تعداد 1924ہوگئی ہے ، ان میں 717جموں جبکہ 1207کشمیر سے تعلق رکھتے ہیں۔ پچھلے 24گھنٹوں کے جموں و کشمیر میں کورونا کی تشخیص کیلئے 20ہزار377ٹیسٹ کئے گئے جن میں117افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں اور اسطرح متاثر ین کی مجموعی تعداد 1لاکھ 23ہزار 764ہوگئی۔ ان میں 51ہزار 319جموں صوبے جبکہ 72ہزار 445کشمیر سے تعلق رکھتے ہیں۔ نئے 117 معاملات میں 42جموں جبکہ 75کشمیر صوبے میں سامنے آئے ہیں۔ کشمیر کے 75معاملات میں 46ضلع سرینگر، 2بارہمولہ، 4بڈگام، 8پلوامہ، 3اننت ناگ، 1بانڈی پورہ، 3گاندربل، 1کولگام، 4کپوارہ اور 3شوپیان سے تعلق رکھتے ہیں۔ جموں صوبے  کے 4اضلاع میں 42افراد وائرس سے متاثر ہوئے ہیں، ان میں 33ضلع جموں، 5ادھمپور، 3کٹھوعہ اور ایک کشتواڑ سے ت

قیدیوں سے ملاقات بحال

سرینگر //محکمہ جیل خانہ جات نے جیلوں میں نظربند قیدیوں سے ملاقات پر پابندی ہٹادی۔ محکمہ نے جمعرات کو ایک حکمنامہ جاری کیا جس میں کہا گیا کہ کورونا کے پیش نظر قیدیوں سے ملاقات پر جو پابندی عائد کی گئی تھی، اسے ہٹایاگیا ہے۔ بیان میں کہاگیا ہے کہ قیدیوںسے افراد خانہ کو مہینے میں ایک مرتبہ ملنے کی اجازت ہوگی ۔ حکمنامہ میںجیل سپرا نڈٹینڈنٹ کو ہدایت دی گئی وہ کورونا سے متعلق معیاری عملیاتی طریقہ کار (ایس او پی) پر مکمل عملدرآمد کو یقینی بنائیں۔حکمنامہ کے مطابق افرادخانہ کومنفی کووڈ ٹیسٹ کی رپورٹ، جو48گھنٹوں سے زیادہ پرانی نہ ہو، ساتھ رکھنی ہوگی۔  

۔26جنوری کی آمد پر سیکورٹی سخت

 سرینگر//26جنوری کی آمد سے قبل ہی تلاشیوں کا سلسلہ دراز ہوگیا ہے جبکہ حساس مقامات اور شاہرائوں پر سیکورٹی کو مزیدمتحرک کیا گیا ہے۔ 26 جنوری قریب آتے وادی میں فورسز کے ساتھ ساتھ فوج کو بھی متحرک کردیا گیا ہے جس دوران نہ صرف سرینگر جموں شاہراہ پر دن رات فوج کی گشت بڑھادی گئی بلکہ اہم شاہراہ پر فورسز نے عارضی چوکیاں قائم کرکے سرینگر کی طرف آنے والی مسافر گاڑیوں کی باریک بینی سے تلاشی لی جارہی ہے۔ 26جنوری کی تقریبات قریب آنے کے ساتھ ہی پورے شہر سرینگر سمیت وادی کے دیگر ضلع صدر مقامات پر سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ہیں۔ جنوبی اضلاع کولگام،پلوامہ اور شوپیاں میں فوج اور فورسز کو دن رات متحرک رہنے کی ہدایات جاری کردی گئی ہے۔عسکریت پسندی کے لحاظ سے انتہائی حساس قرار علاقوں میں شبانہ ناکوں کے ساتھ ساتھ مشکوک افراد کی حرکات کو سکنات پر بھی کڑی نگاہ رکھی جارہی ہیں۔پلوامہ کے حساس علاقو

جموں و کشمیر میں بین الاقوامی معیار کی یونیورسٹی کا قیام

سرینگر//ایک اہم پیشرفت میں حکومت جموں وکشمیر نے جموں و کشمیر میں بین الاقوامی معیار کی یونیورسٹی کے قیام کے لئے وائی ایس ایم ای ٹی ٹرسٹ کے ساتھ ایک مفاہمت نامے پر دستخط کیے ہیں۔ وائی ایس ایم ای ای ٹی کی مارچ2018 میں رجسٹریشن ہوئی ہے  اور  اس اقدام کی بنیاد ڈاکٹر محبوب مخدومی نے رکھی تھی اور اس کی سربراہی پروفیسر معراج  الدین میر پر مشتمل ایک بورڈ کے زیرانتظام ہے ۔بورڈ میںوائس چانسلرسنٹرل یونیورسٹی آف کشمیر ، پروفیسر اے ایس چاولہ وائس چانسلر RIMTیونیورسٹی پنجاب پروفیسر سنجیو کمار، پروفیسر انسٹی ٹیوٹ آف اپلائیڈ مینجمنٹ سائنسز پنجاب یونیورسٹی ، پروفیسر (ڈاکٹر) انیل مہتا، پروفیسر اسکول آف لیگل اسٹڈیز ، بنستھالی یونیورسٹی راجستھان ، پروفیسر (ڈاکٹر) الوک کمار چکروال،پروفیسر کامرس اینڈ بزنس ایڈمنسٹریشن سوراشٹرا یونیورسٹی گجرات ، ڈاکٹر انوپما سنگھ  پروفیسر اور نیشنل انسٹ

سرینگراورجموں میں انجمن اردوصحافت کے تعزیتی اجلاس

سرینگر//جموں کشمیر کے معروف صحافی غلام نبی شیداء کوخراج عقیدت پیش کرنے اورآئندہ لائحہ عمل کاجائزہ لینے کیلئے انجمن اْردوصحافت جموں وکشمیر کے ذمہ داروں اور سینئراراکین کے دواہم اجلاس سرینگراورجموں میں منعقد ہوئے ۔موصولہ بیان کے مطابق ایوان صحافت کشمیر میں بدھ کوبعددوپہر انجمن اْردوصحافت جموں وکشمیر کے زیراہتمام ایک تعزیتی مجلس منعقد ہوئی ،جس میں چیف آرگنائزر فردوس رحمان ،ترجمان زاہد مشتاق ،صوبائی صدربلال فرقانی ،خزانچی اظہررفیقی اورصدرکے مشیر ناظم نذیر نے شرکت کی جبکہ اس تعزیتی میٹنگ میں مرحوم غلام نبی شیداء کے ایک قریبی ساتھی اور اردودزبان کے محب شیخ غلام قادرمدنی ساکن پٹن نے بھی شرکت کی۔اس تعزیتی میٹنگ میں مرحوم غلام نبی شیداء کی صحافتی اورسماجی خدمات پرروشنی ڈالتے ہوئے شیخ غلام قادرمدنی اوربلال فرقانی نے کہاکہ موصوف ایک نڈراوربے باک صحافی تھے ،جنہوں نے کبھی اپنے مفادات کیلئے صحافتی

حکومت کی میڈیا پالیسی غیر جمہوری

 سرینگر//جموں وکشمیرنیوز پیپرس کارڈی نیشن کمیٹی  نے انتظا میہ کے اس تازہ ترین حکمنامے جس میں محکمہ اطلاعات و تعلقات عامہ نے کئی اخبارات کو سرکاری اشتہارات روکنے پر زبردست برہمی کا اظہار کیا ۔ اجلاس میں شامل شر کاء نے کہا کہ حکومت کی میڈیا مخالف پا لیسی  غیرجمہوری اور آزادی اظہار رائے پر براہ راست حملہ ہے جو کسی بھی صورت میں قابل قبول نہیں ہے۔ اجلاس میں پریس کی آزادی کے خلاف حکومتی اقدامات کو ڈٹ کر مقابلہ کرنے کے لئے متفقہ طور پر فیصلہ لیاگیا۔ اجلاس میں شامل تمام انجمنوں کے نمائندوں نے زور دیا کہ ان تمام غیر جمہور ی فیصلوں کو واپس لیا جائے۔ اجلاس میں کہا گیا کہ گزشتہ کئی دہائیوں سے نامساعد حالات کے باوجود یہاں کے صحافیوں نے کٹھن حالات میں بھی اپنی صحافتی ذمہ داریاں انجام دیںبلکہ کئی صحافیوں کو حالات و واقعات کی ترجمانی کی پاداش میں زندگیوں سے ہاتھ دھونا پڑا۔ اجلاس میں ا