کورونا معاملوں میں کمی، ملک میں 281386 نئے کیس،4106ہلاکتیں

نئی دہلی// ملک میں کورونا انفیکشن کے شدید بحران کے درمیان گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 281386 نئے کیس سامنے آئے ہیں جبکہ 378741 افراد اس وبا کو شکست دے چکے ہیں۔ اس دوران چھ لاکھ 91 ہزار 211 افراد کو ٹیکے لگائے گئے۔ ملک میں اب تک 18 کروڑ 29 لاکھ 26 ہزار 460 افراد کو ویکسین دی جا چکی ہے۔ مرکزی وزارت صحت کی جانب سے پیر کی صبح جاری اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران تین لاکھ 78 ہزار 741 مریض بازیاب ہوئے ہیں ، جس سے بحالی کی شرح 84.25 فیصد ہوگئی ہے۔ اب تک دو کروڑ 11 لاکھ 74 ہزار 076 افراد نے کورونا کو شکست دی ہے۔ اس دوران 281386 نئے معاملات سامنے آنے سے متاثرین کی تعداد دو کروڑ 49 لاکھ 65 ہزار 463 ہوگئی۔ فعال معاملات 101461 سے گھٹ کر 35 لاکھ 16 ہزار 997 ہوگئے ہیں۔اس دوران 4106 مریض اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے جس سے مرنے والوں کی تعداد 274390 ہوگئی ہے۔ ملک میں فعال کیسز کی شرح

ملک میں 3لاکھ 11ہزار سے زائد کیس

نئی دہلی//ملک میں کورونا انفیکشن کے معاملات میں مسلسل کمی کے درمیان ، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 3 لاکھ 11 ہزار 170نئے معاملے سامنے آئے ہیں اور اس وباء کی وجہ سے 4077 افراد کی موت ہوئی ہے۔ اس دوران ملک میں 362437 افراد نے وبا کو شکست دی  ، جس سے شفایابی کی شرح بڑھ کر 83.83 فیصد ہوگئی ہے۔ دریں اثناء 17 لاکھ 33 ہزار 232 افراد کو کورونا سے بچاؤ کے قطرے پلائے گئے۔ ملک میں اب تک 18 کروڑ 22 لاکھ 20 ہزار 164 افراد کو پولیو کے قطرے پلائے جاچکے ہیں۔اتوار کی صبح مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق ، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران تین لاکھ 62 ہزار 437 مریض صحت مند ہوچکے ہیں ، جنہیں ملاکر اب تک دو کروڑ 7 لاکھ 95 ہزار 335 افراد نے کورونا کو شکست دے چکے ہیں۔ فعال معاملوں کی تعداد 31091 سے کم ہوکر 36 لاکھ 73 ہزار 802 ہوگئی ہے۔اس دوران 4077 مریض اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے اور اس بیم

دہی اور شہری علاقوں کیلئے نئی گائیڈ لائنز

نئی دہلی//چونکہ دیہی علاقوں میں کوویڈ۔19 کے معاملات میں اضافہ دیکھنے کو مل رہا ہے ، مرکز نے اتوار کو کورونا وائرس کی روک تھام کیلئے نئے رہنما خطوط جاری کئے ، جس میں یہ مشورہ دیا گیا ہے کہ گھر کی تنہائی ممکن نہیں ہے، اس لئے شہری اور دیہی علاقوں میں کم سے کم 30 بستروں پر مشتمل کوویڈ کیئر سنٹر یا ہلکے معاملات کے ساتھ مریضوں کے لئے منصوبہ بنایا جائے۔ مرکزی وزارت صحت نے بتایا کہ صحت عامہ کی تمام سہولیات بشمول سب مراکز یا صحت اور تندرستی کے مراکز اور پرائمری ہیلتھ سینٹرز میں ریپڈ اینٹیجن ٹیسٹ (آر اے ٹی) کٹس کی فراہمی کی جانی چاہئے۔ شہری علاقوں میں بڑی تعداد میں معاملات کی اطلاع دینے کے علاوہ ، اب شہری ، دیہی اور قبائلی علاقوں میں بھی آہستہ آہستہ دخل اندازی ہورہی ہے ، وزارت نے شہری ، دیہی علاقوں میں 'کوڈ 19 پر مشتمل کنٹینمنٹ اینڈ مینجمنٹ پر ایس او پی جاری کیا۔ قبائلی علاقوں 'کوویڈ

ملک میں کورونا انفیکشن کی رفتار میں کمی، ریکوری کی شرح میں اضافہ جاری

نئی دہلی// (یو این آئی) ملک میں کورونا انفیکشن کے معاملات میں مسلسل کمی کے درمیان ، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 311170 نئے معاملے سامنے آئے ہیں اور اس وبا کی وجہ سے 4077 افراد کی موت ہوئی ہے۔اس ددران 17 لاکھ 33 ہزار 232 لوگوں کو کورونا کے ٹیکے لگائے گئے۔ ملک میں اب تک 18 کروڑ 22 لاکھ 20 ہزار 164 لوگوں کو ٹیکے لگائے جاچکے ہیں۔اتوار کی صبح مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق ، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران تین لاکھ 62 ہزار 437 مریض صحت مند ہوچکے ہیں ، جس سے ری کوری کی شرح 85.25 فیصڈ ہوگئی ہے۔ اب تک دو کروڑ 7 لاکھ 95 ہزار 335 افراد نے کورونا کو شکست دے چکے ہیں۔ اس عرصے میں 311170نئے معاملوں کی آمد کے ساتھ ، متاثرہ افراد کی تعداد دو کروڑ 46لاکھ 84ہزار 67ہوگئی ہے۔ فعال معاملوں کی تعداد 55344 کم ہوکر 36 لاکھ 18ہزار 458ہوگئی ہے۔اس دوران 4077 مریض اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے اور

دہلی میں ایک ہفتے کے لئے لاک ڈاؤن میں مزید توسیع

نئی دہلی // (یواین آئی) دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے کہا کہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے دہلی میں کورونا انفیکشن تیزی سے کم ہورہا ہے ، لہذا مزید لاک ڈاؤن ایک ہفتہ کے لئے بڑھایا جارہا ہے جو 24 مئی کی صبح پانچ بجے تک موثر رہے گا اور گزشتہ ہفتہ کی طرح سخت ہوگا مسٹر کیجریوال نے آج جی ٹی بی اسپتال کا دورہ کیا تاکہ کووڈ مریضوں کے لواحقین سے بات کرانے کے لئے شروع کی گئی ویڈیو کالنگ کی سہولت کا جائزہ لیا اور کہا کہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے دہلی میں کورونا انفیکشن تیزی سے کم ہورہا ہے۔ اس لئے دہلی میں مزید ایک ہفتہ کے لئے لاک ڈاؤن میں توسیع کی جارہی ہے۔ 17 مئی کے بجائے اب لاک ڈاؤن 24 مئی کی صبح پانچ بجے تک لاگو رہے گا اور گزشتہ ہفتہ کی طرح سخت ہوگا۔ انہوں نے بتایاکہ "ہم نہیں چاہتے کہ جو کچھ ہم نے گذشتہ دنوں میں حاصل کیا ہے وہ ایک دم ختم ہوجائے۔" دہلی میں انفیکشن کی شرح 11 سے کم ہو کر 10

تازہ ترین