تازہ ترین

ملک میں ساڑھے دس لاکھ صحت ورکروں نے ٹیکہ لگایا

  نئی دلی // مرکزی وزارت صحت نے جمعہ کو کہا ہے کہ ملک بھر میں جاری کورونا مخالف ٹیکہ کاری کے دوران ابتک 10لاکھ50ہزار ہیلتھ ورکروں کو ویکسین لگائے گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پورے ملک میں قائم 4ہزار 49مراکز پر 24گھنٹوں کے دوران 2لاکھ37ہزار 50افراد کو  ویکسین لگائے گئے ہیں۔  بیان میں کہا گیا ہے کہ اب تک 18ہزار 167جگہوں پر ٹیکہ کاری مہم کا انعقاد کیا گیا ہے اور بھارت میں ویکسین لینے والوں کی تعداد میں دن بہ دن اضافہ ہوتا جارہا ہے۔  بیان میں کہا گیا ہے کہ بنیادی ڈھانچے میں بہتری سے کورونا وائرس کے خلاف جنگ میں کامیابی ملی ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ اب تک بھارت میں 19کروڑ تشخیصی ٹیسٹ کئے گئے۔ 24گھنٹوں کے دوران 8لاکھ 242تشخیصی ٹیسٹ کئے گئے اور اسطرح مجموعی تعداد 19کروڑ ایک  لاکھ 48ہزار 24ہوگئی ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ ملک میں مثبت کیسوں کی شرح 5.59فیصد ہے۔ پچھلے چند ہ

ہیلتھ ورکر کورونا ویکسین خدشات کو دور کریں

لکھنو// وزیر اعظم نریندر مودی نے وارانسی لوک سبھا حلقہ میں ہیلتھ ورکروں سے اپیل کی ہے کہ وہکورونا وائرس مخالف ویکسین کی اہلیت ، معیار اور حفاظت کے بارے میں پیدا ہونے والے خدشات کو ذہنوں سے دور کریں۔ ویڈوکانفرنسنگ کے ذریعے بات کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا ’’جب ایک ڈاکٹر ویکسین کو استعمال کرنے کی اجازت دیتا ہے تو یہ لوگوں کے ذہنوں میں ویکسین کو لیکر ایک مضبوط پیغام دیتا ہے‘‘۔ویوڈیو کانفرنسگ میں کورونا وائرس ویکسین لینے والے ڈاکٹروں نے دیگر ہیلتھ ورکروں کو اپنے تجربات سے آگاہ کرایا ۔30منٹ تک جاری رہنے والے اپنے خطاب میں مودی نے کہا ’’ بے شک کورونا کے خلاف جنگ لڑنے والوں نے بہترین کام کیا ‘‘۔اس دوران وزیر اعظم نے اسپتال کی میٹرن، نرس، لیب ٹیکیشین اور ڈاکٹرز نے کہا’’ ویکسین کے مضر اثرات سامنے نہیں آئے ہیں‘‘۔  

اترپردیش میں نظربند21قیدیوں کوآگرہ منتقل کیا جائیگا

سرینگر//جموں وکشمیرکے لگ بھگ 21 نظر بندوں ، جو اس وقت اترپردیش کی مختلف جیلوں میں بند ہیں ، کو اعلی سیکورٹی کے حامل آگرہ جیل میں منتقل کیا جا رہا ہے۔یہ عمل وزارت داخلہ کے حکم پر کیا جارہا ہے۔ خیال کیا جاتا ہے کہ یہ قیدی علیحدگی پسند ہے ، جن میں سے 10 کا تعلق حریت(گ) سے ہیں۔ان نظر بندوں پر پبلک سیفٹی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کیا گیا تھا اورانہیں اگست 2019 میں آئین کے دفعہ370 کے تحت سابق ریاست جموں و کشمیر کی خصوصی حیثیت منسوخ کرنے کے تناظر میں گرفتار کیا گیا تھا۔آگرہ سنٹرل جیل کے سینئر سپرنٹنڈنٹ کے مطابق’’ 8 قیدی پہلے ہی آگرہ سنٹرل جیل میں بند تھے ، مزید 17 کونینی ، بریلی اور امبیڈکر نگر جیلوں سے منتقل کیا جائے گا‘‘۔ان کا کہنا تھا کہ مزید چار افراد کو وارانسی سنٹرل جیل سے منتقل کیا جانا ہے،اوران سب کو دوسرے قیدیوں سے دور ایک اعلی سیکورٹی سیل میں رکھا جائے گا۔ان

کسانوں اورحکومت کے مابین 11ویں دور کی بات چیت بے نتیجہ

 نئی دہلی// کسان تنظیموں اور حکومت کے مابین جمعہ کے روز 11 ویں دور کی میٹنگ فریقین کے اپنے اپنے موقف پر قائم رہنے کے سبب بے نتیجہ رہی۔ حکومت نے اگلی میٹنگ کی کوئی تاریخ متعین نہیں کی ہے۔ نئے زرعی قوانین سے متعلق کسان لیڈروں سے بات چیت میں اب حکومت سخت ہوتی ہوئی نظر آرہی ہے۔ جمعہ کی میٹنگ میں حکومت کی طرف سے واضح پیغام دیا گیا کہ جب تک ڈیڑھ سال والے پرپوزل پر کسان غور نہیں کریں گے تب تک بات چیت ممکن نہیں ہے۔ میٹنگ کے دوران مرکزی وزیر زراعت نریندر سنگھ تومر نے کسان لیڈروں سے کہاکہ ’حکومت آپ کے تعاون کے لئے شکر گزار ہے۔ قانون میں کوئی کمی نہیں ہے، ہم نے آپ کے احترام میں تجویز پیش کی تھی، آپ فیصلہ نہیں کرسکے۔ آپ اگر کسی فیصلے پر پہنچتے ہیں تو مطلع کریں، اس پر پھر ہم بات چیت کریں گے۔ آگے کی کوئی تاریخ طے نہیں ہے’۔دراصل 10 ویں راونڈ کی میٹنگ میں حکومت کی طرف سے کسان لی

حکومت کی خاموشی خطرناک:سونیا

 نئی دہلی// کانگریس کی صدر سونیا گاندھی نے کسانوں کا مسئلہ نہ سلجھانے اور قومی سلامتی کے حوالے سے خاموشی اختیار کرنے پر ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے جمعہ کے روز کہا کہ اسے کسانوں کے مطالبات مان لینے چاہیئیں اور قومی سلامتی سے سمجھوتہ نہیں کرنا چاہیے ۔محترمہ گاندھی نے کل یہاں پارٹی کی اعلیٰ پالیسی ساز ادارہ کانگریس ورکنگ کمیٹی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کسانوں کو ورغلایا نہیں جانا چاہیے اور ان کے مطالبات پر غور و خوض ہونا چاہیے ۔ انہوں نے قومی سلامتی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا ۔  

ملک میں 14545 نئے کورونا کیس، سرگرم معاملات 1.90 لاکھ سے کم

نئی دہلی// ملک میں کورونا انفیکشن کے نئے معاملوں کے مقابلے میں اس وبا کو شکست دینے والے افراد کی تعداد مسلسل بڑھتی جارہی ہے جس کی وجہ سے فعال کیسوں کی تعداد میں مسلسل کمی واقع ہورہی ہے اور ان کی تعداد کم ہوکر 188688 رہ گئی ہے۔ مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جمعہ کو جاری اعداد و شمار کے مطابق، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران انفیکشن کے 14545 نئے کیس رپورٹ ہوئے، جس سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک کروڑ چھ لاکھ 25 ہزار ہوگئی ہے۔ یومیہ معاملوں کی تعداد گذشتہ 11 دن سے 15-16 ہزار کے قریب ہے۔ گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 18002 مریض صحت مند ہوئے جس سے شفایاب ہونے والوں کی تعداد ایک کروڑ دو لاکھ 83 ہزار 708 اور فعال معاملات 3620 کم ہوکر 188688 رہ گئے ہیں۔ اسی دوران 163 مریضوں کے فوت ہونے کے باعث مرنے والوں کی تعداد ایک لاکھ 53 ہزار 32 ہوگئی۔ ملک میں ری کوری کی شرح بڑھ کر 96.78 فیصد ہوگئی ہے اور فعال م

ویکسین بنانے ولے سیرم انسٹی ٹیوٹ میں بھیانک آگ

  پونے//عالمی وبا کورونا وائرس (کووڈ19)  کی ویکسین’ کوویشیلڈ‘ بنانے والی سیرم اسٹی ٹیوٹ آف انڈیا کی عمارت کی دوسری منزل پر شدید آگ لگی ہے لیکن جس یونٹ میں کوویشیلڈ بن رہی ہے وہ پوری طرح محفوظ ہے ذرائع کے مطابق وزیراعلیٰ ادھوٹھاکرے نے اس تعلق سے انسٹی ٹیوٹ کے افسران سے بات کی ہے۔ یہ عمارت پونے کے منجری علاقے میں ہے۔سیرم انسٹی ٹویٹ کے منجری پلانٹ میں لگی آگ پر تقریبا دو گھنٹے کی مشقت کے بعد قابو پالیا گیا ہے۔ اس حادثہ میں اب تک پانچ لوگوں کی موت کی خبر ہے۔ جانکاری کے مطابق آگ سیرم انسٹی ٹویٹ کے ٹرمنل گیٹ ایک بلڈ میں چوتھے اور پانچویں فلور تک پھیل گئی تھی۔ پولیس اور مقامی انتظامیہ کے افسران بھی جائے واقعہ پر پہنچے اور راحت و بچاو کام شروع کیا۔ پونے کے میئر مرلی دھر موہول نے کہا کہ چار لوگوں کو عمارت سے محفوظ نکال لیا گیا تھا ، لیکن جب آگ پر قابو پایا گیا تب ہمار

پردھان منتری آواس یوجنا کے تحت 1.1کروڑ مکانات کی تعمیر کو منظوری

نئی دہلی // مرکزی حکومت کے اہم پردھان منتری آواس یوجنا (شہری) کے تحت اب تک 1.1 کروڑ مکانات کی تعمیر کو منظوری دی جاچکی ہے جس میں سے 70 لاکھ سے زیادہ مکانات مختلف مراحل میں ہیں اور 41 لاکھ سے زیادہ مکانات تعمیر ہوچکے ہیں۔پردھان منتری آواس یوجنا۔ شہری ٹیکس سنٹرل کلیئرنس اینڈ مانیٹرنگ کمیٹی کے 52 ویں اجلاس میں 168،606 مکانوں کی تعمیر کی منظوری دی گئی۔ اس میٹنگ میں 14 ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام ریاستوں نے حصہ لیا۔ اجلاس کی صدارت یونین ہاؤسنگ اور شہری امور کے سکریٹری درگا شنکر مشرا نے کی۔میٹنگ میں مسٹر مشرا نے بتایا کہ متعدد ریاستوں نے ماحولیاتی وجوہات ، بین شہری نقل مکانی اور مختلف قسم کے مستفید افراد کے لئے طے شدہ ترجیحات میں تبدیلیوں کی وجہ سے زمین کے سائز میں بدلاؤ کی وجہ سے مجوزہ منصوبے کا جائزہ لینے کی تجویزپیش کی ہے ۔ اس اسکیم کے تحت 70 لاکھ سے زائد مکانات تعمیر کے مختلف مراحل می

تمل ناڈو میں اسمبلی انتخابات

چنئی//کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی تمل ناڈو میں اسمبلی انتخابات کیلئے 23 جنوری سے پارٹی کی انتخابی تشہیر کا آغاز کریں گے تمل ناڈو ریاستی کانگریس صدر کے ایس الاگری نے بتایا کہ مسٹر گاندھی کویمبٹور،تروپور،ایروڈ ،کرور اور ڈنڈیگل ضلعوں میں سلسلے وار میٹنگوں سے خطاب کریں گے مسٹر گاندھی کے ریاستی دورے کی اطلاع دیتے ہوئے مسٹر الاگری نے بتایا کہ کانگریس کے سابق صدر 23 جنوری کو صبح گیارہ بجے کویمبٹور پہنچیں گے۔ چترا- کلاپٹی ہوائی اڈے پر استقبال کے بعد وہ چھوٹے اور بہت چھوٹی صنعتوں کے نمائندوں کے ساتھ بات چیت کریں گے۔تروپرکمارن میموریل پلر میں پھولوں کے ہار چڑھانے کے بعد وہ صنعتی مزدوروں سے خطاب کریں گے۔کانگریس رہنما 24 جنوری کو ایروڈ میں تین مقامات پر منعقد پروگراموں میں شامل ہوں گے اور مقامی بنکروں سے بات چیت کریں گے۔کانگیئم میں ایک دیگر پروگرام میں شامل ہونے کے بعد وہ دھاراپورم میں ریلی س

ایک دن میں 19965 مریض صحتیاب

 نئی دہلی// ملک میں کورونا انفیکشن کے نئے معاملات کے گھٹتے بڑھتے ہوئے تسلسل میں گذشتہ 11 دنوں میں یومیہ معاملات 15 سے 16 ہزارکے قریب آرہے ہیں جبکہ اس وبا کو شکست دینے والوں کی تعداد میں اضافہ اور سرگرم معاملوں میں کمی کا سلسلہ جاری ہے ۔جمعرات کی صبح مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران انفیکشن کے 15223 نئے معاملے سامنے آئے جس سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک کروڑ چھ لاکھ 10 ہزار سے زیادہ ہوگئی ہے ۔ گذشتہ 11 دنوں سے یومیہ معاملے 15-16 ہزار کے قریب برقرار ہیں۔گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 19965 مریض صحتمند ہوئے جس کے ساتھ کورونا سے نجات پانے والوں کی تعداد ایک کروڑ دو لاکھ 65 ہزار 706 اور فعال معاملات میں 4893 کی کمی ہونے سے یہ 192308 رہ گئے ۔ اسی دوران 151 مریض فوت ہوئے اور اموات کی تعداد ایک لاکھ 52 ہزار 869 ہوگئی۔ملک میں ری کوری کی شرح بڑھ کر

مرکز کی علی گڈھ مسلم یونیورسٹی کیلئے مالی پیکیج کو منظوری

  علی گڑھ// مرکزی حکومت نے علی گڈھ مسلم یونیورسٹی کیلئے مالی پیکیج کو منظوری  دی ہے تاہم یونیورسٹی حکام نے مرکز کے ذریعہ اس یونیورسٹی کے منظور شدہ پیکیج کی قطعی مقدار نہیں بتاتے ہوئے کہا کہ اس کا حساب کتاب کیا جارہا ہے۔ رجسٹرار عبد الحمید نے بتایا کہ مرکز نے علی گڑھ میونسپل کارپوریشن کو یونیوسٹی ہاؤس ٹیکس کی 14 کروڑ سے زائد رقم ادا کرنے کا بھی فیصلہ کیا ہے ، جسے ادائیگی میں ڈیفالٹ ہونے کی وجہ سے اے ایم یو کا ایس بی آئی بینک اکاؤنٹ بندہوگیا ہے۔انہوں نے کہا ، "یونیورسٹی کو بدھ کے روز وزارت تعلیم اور یونیورسٹی گرانٹ کمیشن سے باضابطہ مواصلات موصول ہوئے۔ یونیورسٹی رجسٹرار نے بتایا کہ اس یونیورسٹی کے تعلیمی پروگراموں کو مالی کٹوتی کی وجہ سے ایک بڑے خطرہ کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے کیونکہ اس کے اسپتال کے جونیئر اور سینئر رہائشی ڈاکٹروں کی تنخواہوں کے لئے فنڈز بھی کئی مہینوں سے ب

جنرل بپن راوت جنگی جہاز ر’فائل‘ اْڑائیں گے

 نئی دلی// راجستھان کے ضلع جودھپور میں جاری بھارت - فرانس کے مابین جاری جنگی مشق ڈیزرٹ نائٹ21 میں چیف آف ڈیفنس اسٹاف (سی ڈی ایس) جنرل بپن راوت شرکت کریں گے۔اس موقع پر سی ڈی ایس جنرل وپن راوت کو جنگی مشق کی جانکاری دی جائے گی۔ اس کے علاوہ ہند  فرانس فضائیہ کے باہمی تعاون کے تعلق سے بھی بات چیت ہونے کا امکان ہے۔بپن راوت تقریباً ایک گھنٹہ تک فرانسیسی فضائیہ رفائل کو اْڑائیں گے جو کہ گذشتہ برس فرانس سے درآمد کیا گیا تھا۔بھارتیہ فضائیہ نے جنگی طیارہ رفائل کو پہلی مرتبہ بین الاقوامی جنگی مشق میں شامل کیا ہے۔خیال رہے کہ ہند فرانسیسی جنگی مشق ڈیزرٹ نائٹ21 کے پہلے روز جنگی طیارہ ڈیجبوتی ائیر بیس سے تقریباً چار گھنٹے تک براہِ راست اڑان بھرنے کے بعد جودھ پور ایئر بیس پر اتارا گیا۔ہند فرانسیسی جنگی مشق ڈیزرٹ نائٹ 21 ابھی جودھور میں جاری ہے، اور آئندہ 24 جنوری2021 تک جاری رہے۔ &nbs

اجودھیا میں رام مندر کی بنیاد کی تعمیر کا کام شروع

اجودھیا// اجودھیا کے رام جنم بھومی میں رام للا کے گربھ گرہ کے مقام پر جمعرات سے بنیاد کی تعمیر کا کام شروع کردیا گیا۔ ویدک اچاریہ کے ذریعہ کام شروع کرنے سے قبل پوجا کی گئی۔ ابھی تک رام للا کے گربھ گرہ کے مقام کے چاروں طرف کا ملبہ ہٹایا جارہا تھا اور آج سے گربھ گرہ کے مقام پربنیاد ڈالنے کا کام شروع کردیا گیا ہے۔ رام جنم بھومی کے پجاری اچاریہ ستیندر داس نے بتایاکہ رام للا کے گربھ گرہ کے مقام کے نزدیک بھی کام شروع کردیا گیا ہے۔ اس سے قبل وہاں پوجا کی گئی۔ انہوں نے بتایا کہ گزشتہ پانچ اگست کو وزیراعظم نریندر مودی کے بھومی پوجن کئے جانے کے بعد ہی ہر روزگربھ گرہ کے مقام پر ہون و دیئے جلانے کا سلسلہ جاری ہے۔ مکر سکرانتی کے بعد رام جنم بھومی ٹرسٹ کی ہدایت پر تعمیراتی ادارے لارسن ٹروبو نے آج صبح بنیاد کی کھدائی شروع کرادی۔ کام کو تیز کرنے کے لئے ایک اضافی پوک لینڈ بھی لگایا گیا ہے ت

ملک میں کورونا معاملوں کی گراوٹ کا سلسلہ جاری، 15223نئے کیس ظاہر

نئی دہلی// ملک میں کورونا انفیکشن کے نئے معاملات کے گھٹتے بڑھتے ہوئے تسلسل میں گذشتہ 11 دنوں میں یومیہ معاملات 15 سے 16 ہزارکے قریب آرہے ہیں جبکہ اس وبا کو شکست دینے والوں کی تعداد میں اضافہ اور سرگرم معاملوں میں کمی کا سلسلہ جاری ہے۔ جمعرات کی صبح مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران انفیکشن کے 15223 نئے معاملے سامنے آگئے جس سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک کروڑ چھ لاکھ 10 ہزار سے زیادہ ہوگئی ہے۔ گذشتہ 11 دنوں سے یومیہ معاملے 15-16 ہزار کے قریب برقرار ہیں۔ گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 19965 مریض صحتمند ہوئے جس کے ساتھ کورونا سے نجات پانےوالوں کی تعداد ایک کروڑ دو لاکھ 65 ہزار 706 اور فعال معاملات میں 4893 کی کمی ہونے سے یہ 192308 رہ گئے۔ اسی دوران 151 مریض فوت ہوئے اور اموات کی تعداد ایک لاکھ 52 ہزار 869 ہوگئی۔ ملک میں ری کوری کی شرح

کورونا کے خلاف جنگ میں پڑوسی ملکوں کو مدد | بھوٹان اور مالدیپ کے لئے ڈھائی لاکھ ویکسین بھیجے گئے

نئی دہلی// ملک میں دنیا کی سب سے بڑی ٹیکہ لگانے کی مہم شروع ہونے کے پانچ دنوں بعد ہندوستان نے پڑوسی ملک بھوٹان اور مالدیپ کو کووڈ کے سلسلے میں بالترتیب ڈیڑھ لاکھ اور ایک لاکھ ٹیکے آج بھیجے گئے ۔صبح سویرے ممبئی سے بھوٹان جانے والی اسپائس جیٹ کی پرواز سے ڈیڑھ لاکھ ویکسین اور دوپہر کو ائر انڈیا کی ایک پرواز مالدیپ کے لئے ایک لاکھ ویکسین لے کر روانہ ہوئی۔ کوویشیلڈ کی یہ ویکسین پونے میں واقع ہندوستان کی فیکٹری سیرم انسٹی ٹیوٹ میں بنائی گئے ہیں۔ہندوستان نے شروع سے ہی بھوٹان کو کووڈ ۔19 کی وبا کا مقابلہ کرنے میں مدد فراہم کی ہے ۔ ہندوستان نے تقریبا دو کروڑ 80 لاکھ روپے کے مالیت کے بھوٹان کو پیراسیٹامول ، ہائیڈرو آکسیروکلروکین ، پی پی ای کٹس ، این 95 ماسک ، ایکسرے مشینیں اور ٹیسٹ کٹس مہیا کی ہیں۔ ہندوستان نے وندے بھارت مشن کے تحت مختلف ممالک میں پھنسے ہوئے بھوٹان کے دو لاکھ سے زیادہ شہریوں کو

۔26 جنوری کے موقعہ پر کسانوں کی مجوزہ ٹریکٹر ریلی | مرکز نے حکم امتناعی کی درخواست سپریم کورٹ سے واپس لی

نئی دلی//مرکز نے بدھ کو 26 جنوری کے موقعہ پر زرعی قوانین کے خلاف احتجاج کرنے والے کسانوں کی جانب سے مجوزہ ٹریکٹر ریلی کے خلاف حکم امتناعی کی درخواست واپس لے لی۔یوم جمہوریہ کے موقع پر قومی دارالحکومت دہلی میں کسانوں کی جانب سے ٹریکٹر ریلی کے انعقاد کے خلاف دائر عرضی پر سپریم کورٹ میں سماعت ہوئی جس میں کورٹ نے کسانوں کی ریلی پر کسی بھی طرح کا روک لگانے سے انکار کر دیا۔سپریم کورٹ کی جانب سے کہا گیا تھا کہ "یہ پولیس معاملہ ہے" ۔ مرکز نے پیر کے روز سپریم کورٹ میں کسانوں کے مجوزہ ٹریکٹر یا ٹرالی مارچ یا کسی بھی طرح کے احتجاج کے خلاف حکم امتناع کے درخواست کی۔ حکو مت نے کہا یہ عمل 26 جنوری کے سلسلے میں ہونے والی تقاریب میں خلل ڈالنے کی کوشش ہے۔دہلی پولیس کے ذریعہ دائر درخواست میں ، مرکز نے کہا تھا کہ سیکیورٹی ایجنسیوں کے علم میں یہ بات آئی ہے کہ احتجاج کرنے والے افراد یا تنظیموں کے

اُترپردیش ترقی کی جانب گامزن :مودی | پردھان منتری آواس یوجنا کے تحت 6لاکھ مستحقین کو مالی امداد جاری

نئی دہلی//وزیر اعظم نریندر مودی نے ویڈیو کانفرنس کے ذریعہ پردھان منتری آواس یوجنا گرامین کے تحت اتر پردیش میں چھ لاکھ سے زیادہ مستحقین کے ساتھ مکالمہ کیا اور انھیں مالی امداد جاری کی۔ اس موقع پر دیہی ترقی کے مرکزی وزیر ، اتر پردیش کے گورنر اور وزیر اعلیٰ موجود تھے۔وزیر اعظم نے مستحقین کو نیک تمنا ئیں پیش کیں اور انھیں پرکاش پرب کی مبارک دی۔مسٹر مودی نے پرکاش پرب پر گرو گوبند سنگھ جی کوسلام عقیدت پیش کیا اور قوم کو اس مبارک موقع پر مبارک باد پیش کی۔وزیر اعظم نے کہا کہ غریبوں ، محروموں اور ان لوگوں کی زندگی کو بدلنے کے لیے بے نظیر کام انجام دیا جا رہا ہے جن کا بیجا استحصال کیا گیا۔ انھوں نے یہ بھی ذکر کیا کہ پانچ سال پہلے انھوں نے ا?گرہ سے وزیر اعظم آواس یوجنا شروع کی تھی۔ یہ اسکیم ملک کے لاکھوں لوگوں کی امیدوں سے وابستہ ہے اور جو لوگ غریبوں میں غریب ہیں انھیں اس اسکیم سے یہ اعتماد ملت

بالاکوٹ فضائی حملے کی خفیہ اطلاع کے لیک ہونے پر مودی حکومت وضاحت پیش کرے :کانگریس | پارلیمنٹ کے بجٹ اجلاس کے دوران پورے معاملے کی جانچ طلب کی جائے گی

نئی دہلی// کانگریس نے بالاکوٹ ہوائی حملے کو قومی سلامتی کے لئے سنگین خطرہ قرار دیتے ہوئے اس پورے واقعہ کی تحقیقات کا مطالبہ کیا اور کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی کو ملک کے وقار پر لگے یہ داغ دھونے کے لئے سامنے آنا چاہئے ۔سینئر کانگریس لیڈران اور سابق مرکزی وزراء اے کے انٹونی ، غلام نبی آزاد ، سشیل کمار شنڈے ، سلمان خورشید اور پارٹی کے ترجمان پون کھیڑا نے بدھ کو یہاں کانگریس ہیڈ کوارٹر میں ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ صحافی ارنب گوسوامی اور بی اے آر سی ، نجی نیوز چینلز کی ریگولیٹری اتھارٹی بی اے آرسی کے سابق چیف ایکزی کیٹیو افسر پارتھیو داس گپتا کے درمیان بالاکوٹ ہوائی حملے کے سلسلے میں جو وائٹس ایپ چیٹ سامنے آئے ہیں وہ قومی سلامتی کے لئے سنگین خطرہ ہے اور اس پورے معاملے کی فوری جانچ ہونی چاہئے ۔پارٹی رہنماؤں کا کہنا تھا کہ بالاکوٹ ہوائی حملے کے بارے میں کسی صحافی کو جاننا غیر معمولی ب

کورونا وائرس | فعال کیسز کم ہوکر تقریباً دو لاکھ رہ گئے

نئی دہلی // ملک میں کورونا انفیکشن کے نئے معاملات میں کمی کا سلسلہ جاری ہے اور فعال کیسز کم ہوکر دو لاکھ کے قریب رہ گئے ہیں جبکہ اس کی وجہ سے ہونے والی یومیہ اموات کی تعداد دوسرے دن بھی 150 سے نیچے رہی۔مرکزی وزارت صحت کی جانب سے منگل کی صبح جاری اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران انفیکشن کے 10064 نئے کیسز سامنے آئے ، جس سے متاثرین کی تعداد ایک کروڑ پانچ لاکھ 81 ہزار ہوگئی ہے ۔ اس دوران 17411 مریض بازیاب ہوئے جس سے کورونا سے ٹھیک ہونے والے افراد کی تعداد ایک کروڑ دو لاکھ 28 ہزار 753 ہوگئی اور فعال کیسز کو 7484 کم ہوکر 200528 رہ گئے ہیں۔گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 137 مریض فوت ہوئے جس کے بعد اموات کی تعداد ایک لاکھ 52 ہزار 556 ہوگئی ہے ۔ اس سے قبل پیر کے روز مرنے والوں کی تعداد 145 رہی۔ملک میں بازیابی کی شرح 96.66 فیصد ہوگئی ہے اور فعال کیسوں کی شرح گھٹ کر 1.90 رہ گئی ہے جبکہ ام

حکومت، کسان تنظیموں کے مابین میٹنگ آج

نئی دہلی// زرعی اصلاحاتی قوانین اور فصل کی کم از کم امدادی قیمت کو قانونی درجہ دینے کے مطالبے کے حوالے سے حکومت اور کسان تنظیموں کے مابین  (منگل) کو ہونے والی میٹنگ اب بدھ کو ہوگی۔ پہلے یہ میٹنگ 19 جنوری سے منگل کے روز طے تھی۔ وزیر زراعت نریندر سنگھ تومر کے قریبی ذرائع کے مطابق اب یہ میٹنگ 20 جنوری کو ہوگی۔ کسان تنظیم گذشتہ 55 دنوں سے دہلی کی سرحد پر اپنے مطالبات کے حوالے سے دھرنا مظاہرہ کر رہے ہیں۔ کسان تنظیموں اور حکومت کے مابین نو دور کی بات چیت ہو چکی ہے لیکن کوئی ٹھوس فیصلہ نہیں ہوا ہے ۔ حکومت زرعی اصلاحاتی قوانین میں ترمیم کرنا چاہتی ہے جبکہ کسان تنظیم قانون واپس لینے کے مطالبہ پر اڑے ہوئے ہیں۔