لیتہ پورہ دھماکہ کیس میں ساتویں گرفتاری: این آئی اے

سرینگر//قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) نے لیتہ پورہ پلوامہ دھماکہ کیس میں ساتویں گرفتاری عمل میں لائی ہے۔2019میں ہوئے اس دھماکے میں40سی آر پی ایف اہلکار ہلاک ہوگئے تھے۔ این آئی اے کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ایجنسی نے 5جولائی کے روزبلال احمد کوچھے ولد غلام نبی کوچھے ساکن حاجی بل ،کاکا پورہ کو گرفتار کرلیا ہے۔  بینڈ سا مشین چلانے والا کوچھے این آئی اے کے مطابق جیش سے وابستہ جنگجوﺅں کو ہر قسم کی مدد فراہم کرنے میں ملوث رہا ہے اور اُس نے لیتہ پورہ دھماکہ کرنے والے جنگجوﺅں کو بھی ہر ممکن امداد فراہم کی۔انہوں نے مذکورہ جنگجوﺅں کو موبائیل فون بھی فراہم کئے تھے۔ کوچھے کو آج این آئی اے نے خصوصی عدالت کے سامنے پیش کرکے اُس کی پوچھ تاچھ کی ریمانڈ حاصل کی۔ این آئی اے کے مطابق یہ لیتہ پورہ پلوامہ دھماکہ کیس میں ساتویں گرفتاری ہے۔  

جموں کشمیر میں پارکیں اور باغ کل سے کھلیں گے:بصیر خان

جموں کشمیر انتظامیہ نے منگل کو اعلان کیا کہ مرکز کے زیر انتظام علاقے میں کل سے پارکیں اور باغ کھلیں گے۔ خبر رساں ایجنسی جی این ایس کے مطابق لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر بصیر احمد خان نے کہا”جموں کشمیر میں سبھی پارکیں اور باغ کل سے سر نو کھلیں گے“۔ انہوں نے کہا کہ ان باغوں اور پارکوں کی سیر کیلئے جانے والے ہر شخص کیلئے ماسک پہننا اور سماجی دوری اختیار کرنا لازم ہوگا ۔ انہوں نے مزید کہا کہ داخلوں پر تھرمل سکینر لگے ہونگے اور سینی ٹائزرکا استعمال بھی لازم ہوگا۔ یاد رہے کہ جموں کشمیر کے سبھی باغ اور پارکیں کورونا وائرس کی وجہ سے اس سال مارچ میں بند ہوئی تھیں۔  

راجوری میں بیلوں کی دوڑ کا مقابلہ کرانے والوں کے خلاف کیس درج

جموں// جموں و کشمیر کے ضلع راجوری کے ڈیرین نامی گاو¿ں میں بیلوں کی دوڑ کا مقابلہ کرنے کا اہتمام کرنے والوں کے خلاف پولیس نے کیس درج کر لیا ہے۔ یاد رہے کہ جموں وکشمیر میں کورونا کے متاثرین و متوفین کی تعداد میں تیزی سے ہو رہے اضافے کے بیچ بیلوں کی دوڑ کے اس مقابلے سے لطف انوز ہونے کے لئے لوگوں کا جم غفیر جمع ہوا تھا۔ ایس ایس پی راجوری چندن کوہلی نے بتایا ” ہمیں اطلاع موصول ہوئی کہ راجوری کے ڈیرین گاو¿ں میں کچھ مقامی لوگوں نے بیلوں کی دوڑ کے مقابلے کا اہتمام کیا ہے جس کا تماشہ دیکھنے کے لئے لوگ بڑی تعداد میں جمع ہوئے ہیں اور انہوں سماجی فاصلے رکھنے کے احکامات کی خلاف ورزی کی ہے“۔ کورونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کیلئے نافذقواعد و ضوابط کی خلاف ورزی کی پاداش میں مذکورہ دوڑ کا اہتمام کرنے والوں کیخلاف کیس درج کرلیا گیا ہے۔   

پلوامہ کے لاپتہ ڈرائیور کی لاش پانپور میں دریائے جہلم سے بر آمد

سرینگر//جنوبی ضلع پلوامہ کے ایک لاپتہ ڈرائیور کی لاش منگل کو پانپور میں دریائے جہلم سے بر آمد کی گئی۔ خبر رساں ایجنسی کے این او کے مطابق دریائے جہلم سے ریت نکالنے کے دوران پتل باغ پانپور میں کچھ لوگوں کی نظروں میں ایک لاش آگئی اور انہوں نے اس سلسلے میں پولیس کو مطلع کیا۔ بعد میں لاش کی شناخت 37سالہ مظفر احمد راتھر ولد غلام نبی ساکن مونگہ ہامہ پلوامہ کے طور کی گئی۔ مقامی ذرائع کے مطابق پیشے کے لحاظ سے ڈرائیور راتھر گذشتہ تین روز سے لاپتہ تھا۔ اس سلسلے میں پولیس نے کیس درج کرلیا ہے۔  

پلوامہ تصادم میں کوئی فوجی ہلاک نہیں ہوا:آئی جی پی کی وضاحت

سرینگر//انسپکٹر جنرل آف پولیس ،کشمیر (آئی جی پی ) وجے کمار نے منگل کے روزوضاحت کی کہ گوسو پلوامہ میں جنگجوﺅں کے ساتھ معرکہ آرائی کے دوران کوئی فوجی اہلکار ہلاک نہیں ہواہے ۔انہوں نے تاہم بتایا کہ جنگجوﺅں کیخلاف مذکورہ آپریشن کے دوران دو فوجی اہلکاروں اور ایک پولیس اہلکار کو چوٹیں آئیں۔ انہوں نے کہا کہ اس معرکہ آرائی کے دوران ایک جنگجو جاں بحق ہوگیا۔ خبر رساں ایجنسی جی این ایس کے مطابق آئی جی نے کہا”کوئی فوجی مرا نہیں البتہ دو فوجی اور ایک پولیس اہلکار زخمی ہوئے ہیں“۔ اس سے قبل اطلاعات میں بتایا گیا تھا کہ گوسو معرکہ آرائی میں ایک فوجی اہلکار اور ایک جنگجو ہلاک جبکہ ایک پولیس اہلکار زخمی ہوئے ہیں۔ یہ معرکہ گوسو نامی گاﺅں میں اُس وقت شروع ہوا جب فورسز نے وہاں جنگجوﺅں کی موجودگی کی اطلاع کے بعد تلاشی آپریشن شروع کیا ۔ اس آپریشن میں پولیس، فوج اور سی آر پی ایف کے

ملک میں کورونا کیسوں میں22252کا اضافہ،، اموات کی تعداد 20 ہزارسے متجاوز

نئی دہلی//ملک میں کورونا وائرس کے یومیہ کیسز دودن تک 24 ہزار سے زیادہ رہنے کے بعد گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران اس میں کسی حد تک کمی واقع ہوئی ہے ، لیکن اس عرصہ میں 467 افراد کی ہلاکت سے اموات کی مجموعی تعداد 20 ہزار سے متجاوز کر گئی ہے۔ منگل کو مرکزی وزارت صحت و خاندانی بہبود کی طرف سے جاری تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق ، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں کورونا وائرس کے22252 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں ، جو گذشتہ ہفتے کے بعد سے سب سے کم ہیں۔ آج ملنے والے کیسز سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد719665 ہوگئی ہے۔ ہفتہ کے روز 22771نئے کیسز درج ہوئے۔ اتوار کو 24850اور پیر کو24248 کیسز تھے۔ گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کی زد میں آنے سے 467 افراد کی موت کے ساتھ ہی ہلاک شدگان کی تعداد بڑھ کر20160 ہوگئی ہے ۔  

بانڈی پورہ میں لاپتہ بچے کی لاش نالے سے بر آمد

سرینگر//لاپتہ ہونے کے دوسرے روز بانڈی پورہ کے مسلم آباد کے چھ سالہ بچے کی لاش منگل کے روز نالہ مدو متی سے بر آمد ہوئی۔ خبر رساں ایجنسی کے این او نے حکام کا حوالہ دیتے ہوئے لکھا کہ مذکورہ معصوم بچے کی لاش کو نالہ مدو متی سے آج صبح 5بجے ضلع پولیس لائینز کے نزدیک بر آمد کیا گیا۔ اس سے قبل بچے کے رشتہ داروں نے اُس کی تلاش ہر جگہ کی تھی۔ جاں بحق بچے کی شناخت انیس رفیق ولد محمد رفیق لون ساکن سملر، بانڈی پورہ کے طور کی گئی ہے۔ حکام کے مطابق بچے کی موت بظاہرپانی میں ڈوب جانے کی وجہ سے ہوئی ہے مگر مزید تحقیقات کیلئے کیس درج کرلیا گیا ہے۔  

بارہمولہ کی خاتون کورونا سے جاں بحق، اموات کی تعداد141

سرینگر//شمالی کشمیر کے بارہمولہ کی ایک60سالہ خاتون، جو کورونا میں مبتلاءتھی، سی ڈی اسپتال سرینگر میں چل بسی۔اس طرح جموں کشمیر میں مہلک وائرس سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر141ہوگئی ہے۔ سی ڈی اسپتال کے میڈیکل سپر انٹنڈنٹ ڈاکٹر سلیم ٹاک نے خبر رساں ایجنسی جی این ایس کو بتایا کہ کنزر کی مذکورہ خاتون ہائی بلڈ پریشر اور ذیابطیس جیسے امراض میں مبتلاءتھی جس کے دوران اس کا کورونا ٹیسٹ بھی مثبت آیا ۔وہ3جولائی سے زیر علاج تھی اور منگل کی صبح انتقال کرگئی۔ مذکورہ خاتون کی موت گذشتہ24گھنٹوں کے دوران کورونا سے ہونے والی آٹھویں موت تھی۔  ابھی تک جموں کشمیر میں جو141افراد کورونا کی وجہ سے جاں بحق ہوئے ہیں اُن میں127اموات وادی کشمیر جبکہ14اموات صوبہ جموں میں ہوئی ہیں۔  

پلوامہ میں مسلح تصادم، فوجی اہلکار اور جنگجو جاں بحق

سرینگر//جنوبی ضلع پلوامہ میں منگل کی صبح سیکورٹی فورسز اور جنگجوﺅں کے مابین شروع ایک مسلح تصادم میں ایک فوجی اہلکار اور جنگجو ہلاک ہوگئے۔اس معرکہ میں ایک پولیس کے زخمی ہونے کی بھی اطلاعات ملی ہیں۔ یہ معرکہ گوسو نامی گاﺅں میں اُس وقت شروع ہوا جب فورسز نے وہاں جنگجوﺅں کی موجودگی کی اطلاع کے بعد تلاشی آپریشن شروع کیا ۔ خبر رساں ایجنسی جی این ایس کے مطابق مارے گئے جنگجو کی شناخت ہونا ابھی باقی ہے۔  اس جھڑپ میں ایک پولیس اہلکار اور فوجی کو گولیاں لگنے سے چوٹیں آئیں جنہیں علاج کیلئے اسپتال منتقل کیا گیا ہے تاہم فوجی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ بیٹھا۔ اس آپریشن میں پولیس، فوج اور سی آر پی ایف کے اہلکار حصہ لے رہے ہیں۔  

تازہ ترین