تازہ ترین

سڑک حادثے| کنگن میں اسسٹنٹ ایگزیکٹیو انجینئر جاں بحق

اوڑی میں ڈرائیور اور بانڈی پورہ میں بینک ملازم لقمہ ٔ اجل

تاریخ    25 ستمبر 2021 (00 : 01 AM)   


غلام نبی رینہ +ظفر اقبال+عازم جان
 کنگن +اوڑی+بانڈی پورہ//کنگن میں اسسٹنٹ ایگزیکٹیو انجینئر،بانڈی پورہ کا بینک ملازم اور اوڈی میں بیکن ڈرائیور حادثات میں لقمہ اجل بن گئے۔بابا نگری وانگت کنگن سے سرینگر کی طرف جارہی ایک کریٹا کار زیر نمبر JK01AN/ 5394کچھ نمبل کے مقام پر ڈرائیور کے قابو سے باہر ہوکر تین سو فٹ گہری کھائی میں جاگری جس کے نتیجے میں الطاف احمد چکا ولد عبدالسلام چکا ساکن ہزاری بازار رعناواری سرینگر شدید زخمی ہوا، جو بعد میں زخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ بیٹھا۔الطاف احمدPMGSYسب ڈویژن کنگن میں بطور اسسٹنٹ ایگزیکٹیو انجینئر تعینات تھے۔ ایس ایچ او پولیس سٹیشن کنگن ظہور احمد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ مذکورہ آفیسر کو شدید زخمی حالت میں اسپتال لیجانے کی کوشش بھی کی گئی لیکن وہ تب تک دم توڑ چکا تھا۔ انہوں نے کہا کہ پوسٹ مارٹم کرنے کے بعد لاش لواحقین کے حوالے کردی گئی اور کنگن پولیس نے اس سلسلے میں کیس درج کرکے تحقیقات شروع کردی ہے۔ادھراوڑی میں بارڈرروڈس آرگنائزیشن(بیکن) کا ایک ٹرک ڈرائیور جمعہ سہ پہر گہری کھائی میں گرجانے سے لقمہ اجل بن گیا۔ ٹرک کودھونے کے غرض سے کلساں چولان علاقے میں ایک پل پر کھڑا کیا گیا تھا۔ لیکن ڈرائیور ٹرک سمیت پل سے گہری کھائی میں جاگر ا  جس کے نتیجے میں اس کی موقعہ پر ہی موت واقع ہوئی۔مہلوک کی شناخت 32برس کے سید جاوید حسین  ولد سید خادم حسین ، ساکن نورکھا اوڑی کے طور پر ہوئی ہے۔ادھروٹہ پورہ بانڈی پورہ کا جواں سال جموں کشمیر بنک کیشر،جو تین روز قبل سڑک حادثے میں شدیدزخمی ہواتھا، سرینگر کے ہسپتال میں زخموں کی تاب نہ لاکر چل بسا ۔جہانگیر احمد بٹ  ٹی پی برانچ نوپورہ میں تعینات تھا، وہ تین روز قبل وٹہ پورہ میں سڑک حادثے کے دوران شدید زخمی ہوا اور شیرکشمیرمیڈیکل انسٹی چیوٹ صورہ میں زیر علاج تھا۔
 

تازہ ترین