تازہ ترین

مینڈھر میں غیر قانونی قبضہ کیخلاف مہم برائے نام

لوگوں سے رشوت لے کر کھلی چھوٹ دینے کا الزام

تاریخ    15 ستمبر 2021 (00 : 01 AM)   


جاوید اقبال
 مینڈھر //مینڈھر سب ڈویژن کے مقامی لوگوں نے محکمہ مال پر الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ متعدد علاقوں میں سرکاری اراضی سے غیر قانونی قبضہ ہٹانے کے نام پربڑے پیمانے پر رشوت لی جارہی ہے جبکہ محکمہ کے کچھ ملازمین کی ملی بھگت سے سب ڈویژن میں غیر قانونی قبضے کا عمل مسلسل جاری ہے ۔انہوں نے بتایا کہ تحصیل مینڈھر میں حالیہ دنوں کے دوران کئی جگہوں پر سرکاری اراضی کو خالی کروانے کے نام پر مہم چلائی گئی تاہم فوٹو گرافی اور فرضی کارروائی کرنے کے بعد قبضہ مافیا کو کھلی چھوٹ دے دی جاتی ہے جس کی وجہ سے وہ دوبارہ سے مذکورہ اراضی پر قبضہ کرلیتے ہیں ۔مینڈھر تحصیل کے رہائشی محمد جمید اور سجاد احمد نامی مکینوں نے بتایا کہ حالیہ دنوں میں محکمہ کی جانب سے کئی جگہوں پر غیر قانونی قبضہ ہٹانے کیلئے مہم شروع کی گئی تھی تاہم اخبارات ودیگر میڈیا میں خبریں شائع کروانے کے بعد محکمہ کی جانب سے مذکورہ جگہوں پر کوئی دھیان ہی نہیں دیا گیا جس کی وجہ سے قبضہ مافیا دوبارہ سے فرضی طریقہ سے خالی کروائی گئی زمینوں پر قابض ہو گئے ہیں ۔انہوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ محکمہ کے کچھ ملازمین قبضہ مافیا کے ساتھ مل کر بھاری رشوت طلب کرتے ہیں جس کے بعد ان کو قبضہ کرنے کیلئے راحت دے دی جاتی ہے ۔مقامی لوگوں نے ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ حالیہ دنوں میں محکمہ کی جانب سے غیر قانونی قبضہ کیخلاف چلائی گئی مہم کا زمینی سطح پر جائزہ لے کر غیر قانونی عمل میں ملوث ملازمین کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے ۔