لاک ڈائون کا دوسرا مرحلہ

جموں کشمیر کے10اضلاع میں مکمل بندشیں جاری

تاریخ    4 مئی 2021 (00 : 01 AM)   


بلال فرقانی
سرینگر// جموں کشمیر میں کورونا لاک ڈائون کے دوسرے مرحلے کا پیر کی صبح سے آغاز ہوگیا ہے جو 10اضلاع میں نافذالعمل ہے۔ پچھلی جمعرات شام 7بجے سے پیر کی صبح 7بجے تک 84گھنٹے کیلئے کورونا لاک ڈائون نافذ کیا گیا تھا اور پہلے مرحلے کے اختتام سے قبل ہی اتوار کی شام  وادی میں شوپیان اور بانڈی پورہ اضلاع کو چھوڑ کر دیگر 8اضلاع میں لاک ڈائون کی دوسرے مرحلے میں 6مئی تک توسیع کی گئی۔جبکہ جموں اور راجوری اضلاع میں بھی لاک ڈائون نافذ کیا گیا۔پیر کو 6مئی تک لاک ڈائون جاری رکھنے کے دوسرے مرحلے کے دوران جموں کشمیر کے 10اضلاع میں ہو کا عالم رہا۔ان اضلاع میںپچھلے 4روز سے عام زندگی کا پہیہ جام ہوا ہے۔انتظامیہ نے کوویڈ رہنما اصولوں کی خلاف ورزی کی پاداش میں ایک ورکشاپ سمیت کئی دکانوں کو بھی سربمہر کیا۔کورونا لاک ڈائون کی وجہ سیجموں کشمیر کے بندش والے علاقوں میں کاروباری و تجارتی مراکز بند رہے اور ہر طرح کی آمد ورفت معطل رہی۔جگہ جگہ پولیس عملیاتی طریقہ کار کو لاگو کرنے پر مامور تھی۔ سڑکوں پر مسافر بردار ٹرانسپورٹ کی آوجاہی جہاں بالکل مسدود نظر آئی،وہی نجی ٹرانسپورٹ سڑکوں پر تھورا تھوڑا نظر آیا۔ انتظامیہ نے کرونا کرفیو کا نفاذ ومل میں لانے کیلئے پہلے ہی حساس علاقوں میں اضافی فورسز اور پولیس اہلکاروں کو تعینات کیا تھا،جنہوںنے سخت پوچھ تاچھ اور شناختی کارڈوں کی جانچ کے بعد لوگوں کو آگے جانے کی اجازت دی۔ دیگر اضلاع کے میونسپل حدود میں بھی اسی طرح کی صورتحال دیکھنے کو ملی،جہاں انتظامیہ نے سخت بندشوں کا نفاذ عمل میں لایا ۔اس دوران پولیس نے کورونا وائرس کی روک تھام کیلئے جاری معیاری عملیاتی طریقہ کار اور رہنما اصولوں کی پاسداری نہ کرنے والوں کے خلاف پیر کو بھی کاروائی جاری رکھی،جس کے دوران جرمانہ وصول کرنے کے علاوہ گاڑیوں بھی ضبط کیا گیا اور کئی ایک کیسوں کا اندراج بھی عمل میں لایا گیا۔پولیس نے بارہمولہ میں ایک نجی ورکشاپ کے علاوہ4 دکانات کو بھی کرونا سے متعلق رہنما اصولوں کی خلاف ورزی کرنے پر سربمہر کیا۔ ٹنگمرگ کے کنزر علاقے میں ایک ورکشاپ کو سیل کیا،جہاں40لوگ کام کر رہے تھے،جبکہ مزید4دکانات کو بھی سیل کیا گیا۔
 

تازہ ترین