تازہ ترین

زچہ بچہ اسپتال میں بنیادی سہولیات کافقدان

سوپور میں جنرل نرسنگ اور مڈ وائفری طلاب کا احتجاج

تاریخ    2 مارچ 2021 (00 : 01 AM)   


غلام محمد
سوپور//سوپور میں سوموار کو جنرل نرسنگ ومڈوائفری کورس کے متعدد طلاب نے زچہ بچہ اسپتال سوپور میں نامناسب سہولیات کے خلاف احتجاج کیا۔حکام کے خلاف نعرے بازی کرتے ہوئے ان طلبہ نے کہا کہ حال ہی میں محکمہ صحت وطبی تعلیم کے حکام نے انہیں نرسنگ کالج بارہ مولہ سے سوپور منتقل کیا جہاں ان کے ٹھہرنے کابندوبست زچہ بچہ اسپتال کی ایک پرانی عمارت میں کیاگیاجوناگفتہ بہہ حالت میں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس عمارت میں بنیادی سہولیات جیسے پینے کا پانی، بجلی، لیبارٹری ،لائبریری اور غسل خانوں کی سہولیت ہی نہیں ہے حتی کہ کلاسوں میں بلیک بورڈ بھی نہیں ہیں ،جس کی وجہ سے ان کی معمول کی کلاس ورک متاثرہورہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ وادی کے دوردرازعلاقوں جیسے اوڑی، ٹنگمرگ، پٹن اور رفیع آباد سے آتے ہیں اورانہیں سوپور پہنچنے میں زیادہ وقت لگتا ہے ۔انہوں نے مزیدکہا کہ انہوں نے کورس کیلئے حکومت کو بھاری رقم بطور فیس اداکی ہے اورہمیں بنیادی سہولیات ہی مہیا نہیں ہیں اور حکام نے ہمیں مشکلات میں چھوڑاہے ۔بی ایس سی نرسنگ کے تیسرے سال میں زیرتعلیم ائمن نامی ایک طالبہ نے کہا کہ جنرل نرسنگ اورمڈ وائفری کا کورس تین سالہ ہے اور ہمیں پانچ سال میں بھی یہ کورس مکمل نہیں ہورہا ہے کیوں کہ حکام ہمار اامتحان منعقد کرانے میں ناکام ہوئے ہیں ۔ایک اور طالبہ نے کہا کہ گزشتہ دوروزسے ہماری معمول کی کلاس ورک بند ہے کیوں کہ زچہ بچہ اسپتال سوپور کے لان اورعمارت میں مسلسل بارش سے پانی بھرآیا ہے اور متعلقہ حکام اس کی طرف کوئی توجہ نہیں دے رہے ہیں۔انہوں نے لیفٹینٹ گورنر سے اپیل کی کہ وہ اس معاملے میں ذاتی مداخلت کرکے طلاب کی مشکلات کودور کریں۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ یوٹی انتظامیہ نے  دوبرس قبل زچہ بچہ اسپتال سوپور میں نرسنگ کالج قائم کرنے کافیصلہ کیااورکالج کیلئے وہاں نئی عمارت کی تعمیرکا کام بھی شروع کیاگیاجوابھی مکمل نہیں ہوئی لیکن حال ہی میں انہوں نے طلبہ کے گروپ اورکچھ ملازمین کو بارہ مولہ سے سوپور منتقل کیاتاکہ زچہ بچہ اسپتال سوپور میں نرسنگ کالج کا کام کاج شروع کیا جائے۔ 
 

تازہ ترین