دنیا کی سب سے بڑی کورونا ٹیکہ کاری مہم کا آغاز

وزیر اعظم نریندر مودی کا نئی دہلی میں افتتاح

تاریخ    17 جنوری 2021 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک

  لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے جموں کشمیرمیں شروعات کی،کہا اہم سنگ میل اور تاریخی موقعہ

 
نئی دہلی +جموں//وزیر اعظم نریندر مودی نے بھارت میں عالمگیر وباء کیخلاف دُنیا کی سب سے بڑی ٹیکہ کاری مہم کا آغاز کیا ۔ جموں کشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا، جنہوں نے وزیر اعظم مودی کے ورچول پروگرام میں جی ایم سی جموں میں شرکت کی ،کو اس موقعہ پر ایک تاریخی موقعہ قرار دیتے ہوئے اسے کورونا وائیررس اور فرنٹ لائین ورکروں کے نام منسوب کیا ۔ اس موقعہ پر لیفٹیننٹ گورنر نے جی ایم سی جموں کے سینی ٹیشن انچارج کو پہلا ٹیکہ لگوا کر مہم کا آغاز کیا ۔ کووڈ 19 وباء کے خلاف مہم کیلئے اس موقعہ کو ایک تاریخی موقعہ قرار دیتے ہوئے لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ انہیں خوشی ہے کہ ٹیکے کیلئے انتظار آخر کار ختم ہوا ۔انہوںنے کہا کہ کووڈ 19 وباء انسانیت اور حکومتوں کیلئے ایک بہت بڑا چیلنج تھا اور اس چیلنج سے نمٹنا ایک کارِ عظیم تھا ۔ انہوں نے کہا کہ کورونا وائیرس ٹیکہ ڈاکٹروں ، طبی ماہرین ، سائینسدانوں اور محققوں کی انتھک کوششوں کا نتیجہ ہے ۔ لیفٹیننٹ گورنر کو اس موقعہ پر بتایا گیا کہ ٹیکے تین مرحلوں میں لگائے جائیں گے اور پہلے مرحلے میں صحت عملے دوسرے مرحلے میں فرنٹ لائین ورکروں بشمول حفاظتی دستوں ، پولیس اور دیگر دفاعی عملے کو  لگائے جائیں گے اور اس کے بعد بزرگوں کی ٹیکہ کاری شروع کی جائے گی ۔ لیفٹیننٹ گورنر نے لوگوں کو کووڈ 19 ٹیکے لگوانے کے بعد بھی کووڈ 19 ایس او پیز پر عمل پیرا رہنے کی ہدایت دی اور 14 دن بعد دوسرا ٹیکہ لگانے تک کسی بھی قسم کی کوتاہی برتنے سے گریز کریں ۔ لیفٹیننٹ گورنر نے کورونا وائیرس کو ختم کرنے کیلئے ٹیکہ کاری شروع کرنے کو بھارت کی تاریخ کا ایک سنہرا باب قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ موقعہ آنے والی نسلوں تک یاد رہے گا ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے 1294 نجی اور 1177سرکاری سہولیات کی نشاندہی کی ہے اور ساتھ ہی 5400ٹیکے لگانے والوں اور 14481 ممکنہ ٹیکے لگانے والوں کی نشاندہی کی ہے اس کے ساتھ ہی صوبائی اور ضلع سطح پر کنٹرول روم ، کال سنٹر قائم کئے گئے ہیں جبکہ انتظامیہ نے کووڈ ٹیکہ کاری کا ڈرائی رن کا بھی انعقاد کیا اور 1053 مقامات کی ٹیکہ کاری عمل کیلئے نشاندہی کی گئی ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ جموں کشمیر میں 28  لاکھ لوگوں کی نشاندہی کی گئی ہے جنہیں پہلے اور دوسرے مرحلے میں ترجیحی بنیاد پر ٹیکے لگائے جائیں گے ۔ 
 

تازہ ترین