ایچ ڈی ایف سی بینک کی آگاہی ہفتہ کے تحت مہم

جموں و کشمیر پولیس اور ضلعی انتظامیہ کیلئے محفوظ بینکاری ورکشاپ کا انعقاد

تاریخ    22 نومبر 2020 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
سرینگر// معروف مالیاتی ادارے ایچ ڈی ایف سی بینک لمیٹڈ نے سنیچر کو جموں و کشمیر پولیس اور مقامی ضلعی انتظامیہ کیلئے جاری ’’ منہ بند رکھو‘‘ مہم کے تحت ایک محفوظ بینکاری ورکشاپ کا انعقاد کیا۔ ’منہ بند رکھو‘ مہم کا مقصد سائبر فراڈ اور ان سے بچاؤ کے طریقوں سے متعلق آگاہی پیدا کرنا ہے۔ڈیجیٹل ورکشاپ میں جموں وکشمیر پولیس کے ایس ایس پی انچارج ، سائبر کرائم ، طاہر اشرف کے علاوہ جموں وکشمیر پولیس کے دیگر اعلی پولیس عہدیداران نے شرکت کی۔ ضلعی انتظامیہ کے سینئر عہدیدار بھی اس ورکشاپ کا حصہ تھے۔ بینک کے علاقائی سربراہ برائے رسک انٹلیجنس اینڈ کنٹرول توشار دھر بینک کے سرکل ہیڈ افتخار احمد اور بینک کے دیگر عہدیداروں کی موجودگی میں ورکشاپ کا انعقاد کیا گیا۔اس مہم میں کارڈز کی تفصیلات ، سی وی وی ، ایکسپائری ڈیٹ ، او ٹی پی نیٹ بینکنگ ،موبائل بینکنگ لاگ ان آئی ڈی اور پاس ورڈ پر فون ، ایس ایم ایس ، ای میل اور سوشل میڈیا پر تبادلہ خیال جیسے اقدامات پر تبادلہ خیال ہوا۔ مزید یہ کہ اس کا مقصد یہ ہے کہ عام لوگوں کو نامعلوم ذرائع سے آن لائن لنک پر کلک کرکے دھوکہ دہی کا شکار نہ ہونے کے بارے میں ہوش میں آگاہی دی جائے۔قومی سطح پر ، بینک نے 16 نومبر 2020کو ریٹائرڈ لیفٹیننٹ جنرل ڈاکٹر راجیش پنت ، نیشنل سائبر س سیکورٹی کوآرڈینیٹر ، حکومت ہند جمی ٹاٹا ، چیف رسک آفیسر ، ایچ ڈی ایف سی بینک کی موجودگی میں ، ورچوئل پروگرام میں اس مہم کا آغاز کیا۔ جے اینڈ کے پولیس کے ساتھ ورکشاپ اس طرح کے ایک ہزار سے زیادہ ورکشاپس کا حصہ ہے جو اگلے 4 ماہ میں بینک ملک بھر میں منعقد کرے گا۔پولیس اور ضلعی انتظامیہ کے اعلی عہدیداروں کے ساتھ ورکشاپ محفوظ بینکاری سے متعلق شعور اجاگر کرنے کیلئے اہم فریقین کے ساتھ کام کرنے کی ہماری کوششوں کا ایک حصہ ہے۔ یہ مہم لائن ’’ منہ بند رکھو کے تحت،وبائی مرض سے لڑنے کیلئے  چوکس رہنے کی ضرورت پر زور دیتی ہے اور آن لائن دھوکہ دہی کے شکار ہونے سے اپنے آپ کو بھی بچاتا ہے۔ طاہر اشرف نے کہا کہ صارفین اہم فریق ہے اور انہیں اس طرح کے فراڈ سے آگاہی فراہم کرنا ضروری ہے۔انہوں نے کہا کہ پولیس اس طرح کی دھوکہ دہی میں صارفین کی بھر پور مدد کیلئے تیار ہے تاہم انہیں از خود اس میں چوکس رہنے کی بھی ضرورت ہے۔ ایچ ڈی ایف سی بینک کے سرکل ہیڈ افتخار احمد نے کہا ’’ صرف اتنا ہے کہ او ٹی پی ، پن جیسی نجی معلومات کو نہ بانٹیں یا غیر تصدیق شدہ لنکس پر آن لائن کلک کرنا جیسے آسان اقدامات پر عمل کرنا ہے،جس سے تحفظ حاصل کیا جاسکاتا ہے۔
 

تازہ ترین