تازہ ترین

’بھارت کی اشتعال انگیزی خطے میں امن کیلئے خطرہ‘

پاکستان نے حدمتارکہ پرگولہ باری کرنے کے الزامات رد کئے

تاریخ    18 اکتوبر 2020 (00 : 01 AM)   


سرینگر/ /پاکستان میں کشمیرمیں دراندازی کے بھارت کے الزمات کو رد کرتے ہوئے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیرکافوری حل خطے میں دیرپاامن کیلئے لازمی ہے۔ سی این آئی کے مطابق پاکستانی دفتر خارجہ کے ترجمان زاہد حافظ چودھری نے اسلام آباد میں ایک تقریب کے حاشیہ پر بولتے ہوئے کہا کہ  بھارت کی اشتعال انگیزی خطے میں امن و سلامتی کیلئے خطرہ ہے اور پاکستان بھارت کی جانب سے کسی بھی جارحیت کا منہ توڑ جوا ب دینے کی صلاحیت رکھتا ہے۔انہوں نے کہا کہ بھارت نے رواں سال کے دوران حدمتارکہ اوربین الاقوامی سرحدپرجنگ بندی معاہدے کی1137 بارخلاف ورزیاں کیں۔ترجمان نے کہا کہ مسئلہ کشمیرکا فوری حل خطے میں دیرپا امن کے لئے ضروری ہے اور اقوام متحدہ دیرینہ مسئلہ کشمیر حل کرائے۔ان کا کہنا تھا کہ بھارت ،پاکستان پرکشمیر میں دراندازی کے جھوٹے اور گمراہ کن الزامات لگاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ بھارت کے منفی پروپیگنڈہ مہم کا تعلق کسی اور ملک سے نہیں ،پاکستان سے ہے۔ترجمان نے بھارتی میڈیا کی جانب سے حدمتارکہ پرپاکستان کی طرف سے  گولہ باری کئے جانے کے الزام کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ یہ بھارت ہی ہے جو ہمیشہ گولہ باری میں پہل کرتا ہے۔  انہوں نے کہا کہ پاکستان نے اقوام متحدہ کے مبصر مشن کو حدمتارکہ کی صورتحال کی نگرانی کرنے کا مینڈیٹ دے رکھا ہے، جب بھی بھارت حدمتارکہ پرجنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی کرتا ہے،ہم مبصر مشن کو آگاہ کرتے ہیں تاہم بھارت مبصر مشن کو تحقیقات کرنے کی بھی اجازت نہیں دیتا۔