تازہ ترین

نوکریوں میں ریزرویشن اور دیگر مطالبات

برزلہ میں سکھ برادری کا احتجاجی دھرنا

تاریخ    15 اکتوبر 2020 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
 سرینگر// آل سکھ گردوارہ مینجمنٹ کمیٹی کشمیر نے بدھ کو یہاں برزلہ میں اپنے مطالبات خاص کر نوکریوں کے لئے ریزرویشن کے حق میں احتجاجی دھرنا دیا۔احتجاجیوں کا کہنا تھا کہ سکھ کمیونٹی کو ہمیشہ نظر انداز کیا جاتا ہے۔اس موقع پر مینجمنٹ کمیٹی کے ایک عہدیدار نے نامہ نگاروں کو بتایا 'ہمارے ساتھ ہمیشہ زیادتی کی جاتی ہے۔ سکھ کمیونٹی کے لئے اسمبلی کی دو سیٹیں مخصوص ہوتی تھیں پہلے وہ چھینی گئیں اور یونین ٹریٹری سے قبل پبلک سروس کمیشن کا ایک ممبر ہماری کمیونٹی کا ہوتا تھا وہ بھی چھینا گیا اور دو سو سال پرانی پنجابی زبان کو بھی نظر انداز کیا گیا ہے'۔انہوں نے کہا کہ نان مائیگرنٹ پنڈتوں کے لئے پیکیجز کا اعلان کیا جا رہا ہے جو ٹھیک ہے لیکن ہمارے نوجوان بے کار ہیں۔انہوں نے کہا: 'حال ہی میںنان مائیگرنٹ پنڈتوں کے لئے ملک کے تعلیمی اداروں میں ریزرویشن دی گئی، ہم پنڈتوں کے خلاف نہیں ہیں، کشمیری ان کا خیر مقدم کرتے ہیں، لیکن ہمارے نوجوان بے کار ہیں کیونکہ ہمارے لئے کوئی ریزویشن نہیں ہے'۔موصوف نے کہا کہ ہمارے مطالبات کی طرف کوئی توجہ نہیں دی جا رہی ہے۔یو این آئی