تازہ ترین

غزلیات

تاریخ    11 اکتوبر 2020 (00 : 02 AM)   


میرے خوابوں میں آنے سے کیا فائدہ
نیند میری اُڑانے سے کیا فائدہ
 
جبکہ تُجھ سے کوئی واسطہ ہی نہیں
پھر یہاں آنے جانے سے کیا فائدہ
 
تیری خوشبو ہے بکھری ہوئی چار سُو
میرے گھر کو جلانے سے کیا فائدہ
 
یہ ہوا بھی مخالف ہے کُچھ اِن دنوں
خاک میری اُڑانے سے کیا فائدہ
 
اے چراغِ سحر آخری وقت ہے
اس طرح پھڑ پھڑانے سے کیا فائدہ
 
ساز چھیڑو نہ پھر دِل مچل جائے گا
شدّتِ غم بڑھانے سے کیا فائدہ
 
باندھ لو اب تو جاویدؔ رختِ سفر
اب یہاں دل لگانے سے کیا فائدہ
 
سردارجاویدخان
مینڈھر پونچھ
موبائل نمبر؛ 9419175198
 
 
لگتا ہے ماتھا اس کا سجانا ہی پڑے گا
اب توڑ کے تارے مجھے لانا ہی پڑے گا
اب آپسی ان بن کو بھلانا ہی پڑے گا
ہم ایک ہیں دنیا کو جتانا ہی پڑے گا
بے چارا یہ پامال کیا جاتا ہے کب سے
اب ذرے کو خورشید بنانا ہی پڑے گا
یہ وقت ہمیں چھوڑ کے بڑھ پائے نہ آگے
آنکھوں کو اب آنکھوں سے ملانا ہی پڑے گا
یہ ضبطِ الم تجھ کو بنا ڈالے نہ بے حس
حرکت کے لئے آنسو بہانا ہی پڑے گا
اب فتحِ مسلسل سے غرور آنے لگا ہے
اب مات کو تقدیر بنانا ہی پڑے گا
تو موت سے کیوں بھاگا پھرے ہے مرے بھائی
اک دن تو گلے اس کو لگانا ہی پڑے گا
ہےدل  میں اگر تیرے مسرت کی تمنا
تو بار الم تجھ کو اٹھانا ہی پڑے گا
تو لاکھ کر انکار مگر دل کی بدولت
تجھ کو مرے پاس ایک دن آنا ہی پڑے گا
مانا کہ ہے پتھریلی بہت ارضِ زمانہ
پھول اس میں محبت کا کھلانا ہی پڑے گا
 
ذکی طارق بارہ بنکوی
سعادتگنج۔بارہ بنکی،یوپی،7007368108 
 

تازہ ترین