جموں کے چھوٹے کاروباری طبقہ کے قرضے معاف کئے جائیں:منجیت سنگھ

تاریخ    22 ستمبر 2020 (00 : 02 AM)   


جموں//اپنی پارٹی نے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا پرزور دیا ہے کہ جموں میں متوسط اور چھوٹے کاروباری طبقہ کے قرضہ جات معاف کئے جائیں۔ ایک بیان کے مطابق گاندھی نگر اپنی پارٹی دفتر میں منعقدہ پروگرام کے دوران صوبائی صدر منجیت سنگھ نے کہاکہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے سبھی لوگ متاثر ہوئے ہیں، حکومت کو چاہئے کہ جموں کے متوسط اور چھوٹے کاروباری افراد کے مطالبات پر غور کیاجائے اور انہیں راحت فراہم کی جائے۔ انہوں نے کہا’’اس مشکل گھڑی میں حکومت کو چاہئے کہ ضرورتمندوں کو دست ِ تعاون پیش کرئے، متوسط، چھوٹے دکاندار کاکافی نقصان ہوا ہے۔ آمدنی کم ہوگئی ہے اور وہ اپنے قرضہ جات حتیٰ کہ بجلی بل تک ادا کرنے کی پوزیشن میں نہیں، لہٰذا حکومت کو چاہئے کہ اِن سے بجلی کرایہ نہ لیاجائے۔ خواتین ونگ صوبائی صدر نمرتہ شرما نے کہاکہ تنخواہ دار طبقہ جات بھی مالی مشکلات کا شکار ہے۔ بہت سارے لوگوں کی مالی حالت خراب ہے اور وہ بجلی بل نہیں دے سکتے، یہ محکمہ کی ناکامی رہی ہے کہ وہ سالوں سے بجلی کرایہ وصول نہ کرسکا اور اب جبکہ ملک مہلک وباء کی صورتحال سے گذر رہا ہے، محکمہ بجلی نے بھاری بجلی کرایہ بل بھیجنا شروع کر دیئے ہیں۔ انہوں نے لیفٹیننٹ گورنر سے درمیانی ، نچلے متوسط طبقہ اور چھوٹے تاجروں کے لئے کچھ امدادی پیکیج کا اعلان کی گذارش کی۔ پارٹی صوبائی صدر منجیت سنگھ کی نگرانی میں منعقدہ اِس پروگرام میں منمیت کور، نیلم، سیما دیوی، سونیا، پریتی چوہدری، سونیتا، ورشا دیوی، سنتوش دیوی، ستیہ دیوی، جیتو دیوی، ببلی دیوی، پونم دیوی، جیوتی دیوی، شیوانی کمار، انجو دیوی، سرجیت کور، راج رانی، بھارتی، ریتہ وغیرہ نے اپنی پارٹی میں شمولیت اختیار کی۔ دوسرے پارٹی لیڈران کے علاوہ اعجاز کاظمی، ابہے بقایہ، رقیق احمد خان، سوہن سنگھ، سردیش رانا، وائی بہو مٹو، جگمیت بالی، شیتل سنگھ وغیرہ بھی موجود تھے۔
 

تازہ ترین