تازہ ترین

مزید خبرں

تاریخ    4 اگست 2020 (00 : 03 AM)   


نیوز ڈیسک

چدمبرم کا مرکز پر وار | ’’کشمیر کی صورتحال نہ ختم ہونے والی داستان الم‘‘ 

سرینگر// کانگریس کے سینئر لیڈر اور سابق وزیر خزانہ پی چدمبرم نے جموںوکشمیر کو لیکر ایک مرتبہ پھر مرکزی سرکار کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کشمیر کی موجودہ صورتحال کو نہ ختم ہونے والی داستان الم قرار دیا ۔ انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کے آزادی اظہار رائے پر قدغن لگائی گئی ہے اور پوری وادی کو قید خانے میں تبدیل کردیا  گیاہے۔ سی این آئی کے مطابق سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنی ٹویٹ میں سابق وزیر خزانہ پی چدم برم نے انڈین ایکسپریس میں شائع ہونے والے اپنے کالم کا لنک شیئر کیا ہے۔انہوں نے اپنے کالم کا عنوان ’’ نہ ختم ہونے والی داستان الم‘‘ رکھا ۔اپنے کالم میں سابق وزیر خزانہ نے لکھا کہ تاریخ میں کبھی بھی بھارت کو کشمیر جیسے لاک ڈاون کا سامنا نہیں کرنا پڑا، جہاں عوام کو حق آزادی اظہار رائے سے محروم کردیا گیا ہے اور عوام کو بھی اخبارات، ٹیلی ویڑن، موبائل، ٹیلیفون، انٹرنیٹ، اسپتالوں، تھانوں، عدالتوں اور منتخب نمائندوں تک رسائی نہیں دی جا رہی ہے۔ 
 
 
 
 

میراگھر اب اندر سے بھی مقفل کیا گیا:سوز

سرینگر//کانگریس کے سینئررہنمااور سابق مرکزی وزیر پروفیسرسیف الدین سوزنے کہا ہے کہ عدالت عظمیٰ میں اگر چہ حکومت نے یہ کہا کہ میں یعنی پروفیسر سیف الدین سوز آزادشہری ہوں اور مجھ پر کوئی پابندی نہیں ہے لیکن اب حکومت نے میرے گھر کواندسے بھی مقفل کیا ہے ۔ایک بیان میں سوزنے کہا ،’’ مجھے لگتا ہے کہ اب حکومت اپنانکما پن دکھا رہی ہے ،ورنہ میں باہر جاکرکیا بدامنی پھیلا سکتا ہوں اور پھر کووِڈ- 19کے دنوں میں کس سیاسی سرگرمی کیلئے مناسب ماحول موجود ہے؟‘‘ 
 
 
 

میڈیکل طالب علموں کامطالبہ منظور |  ایم بی بی ایس امتحانات تاحکم ثانی ملتوی 

سرینگر//میڈیکل طالب علموں کی پُرزورمانگ کے بعدکشمیر یونیورسٹی نے ایم بی بی ایس امتحانات تاحکم ثانی ملتوی کردئیے۔ سوموار کے روز کشمیر یونیورسٹی کے حکام نے کہا کہ ایم بی بی ایس امتحانات ملتوی کئے جانے کے حوالے سے ایک نوٹیفکیشن جاری کی گئی ہے جس میں مطلع کیا گیا ہے کہ ایم بی بی ایس امتحانات جن کیلئے پہلے ہی ڈیٹ شیٹ جاری کیا گیا تھا، کو اگلے احکامات تک ملتوی کیا جاتا ہے۔کشمیر یونیورسٹی میں شعبہ امتحانات کے کنٹرولر پروفیسر فاروق اے میر کے مطابق ایم بی بی ایس امتحانات کیلئے نئی تاریخوں کا اعلان علیحدہ سے کیا جائے گا۔
 

 درجہ چہارم کی اَسامیاں | 2,08,510درخواستیں موصول

 جموں//سوموار صبح تک 4,08,520اُمید واروں نے بھرتی بورڈ کے آن لائن پورٹل پر رجسٹریشن کی جبکہ2,08,510 اُمید واروں نے درجہ چہارم اَسامیوں کے آن لائن درخواست پیش کرنے کا عمل مکمل کیا۔بورڈ نے جے کے ایس ایس بی کے آن لائن ایپلی کیشن پورٹل پر آن لائن درخواستیں جمع کروانے کے لئے 10 جولائی 2020 ء کو شروع ہونے کی تاریخ مقرر کی تھی ۔نیز اکاؤنٹس اسسٹنٹ کی اَسامیوں کے لئے 46,970درخواستیں آن لائن جمع کروائی گئیںجبکہ یہ بات نوٹ کی گئی کہ کل 79,000منفرد اَفرادنے بورڈ کے آن لائن ایپلی کیشن پورٹل پررسائی حاصل کی۔جموںوکشمیر سروس سلیکشن بورڈ نے درجہ چہارم اَسامیوںکے لئے جموںوکشمیر بھرتی ( خصوصی بھرتی) قواعد 2020 کے تحت مختلف محکموںمیں ضلع صوبائی یونین ٹریٹری کیڈر کے لئے 8575 درجہ چہارم اَسامیوں کو اِشتہاری نوٹیفکیشن نمبر 1آف 2020 ،بتاریخ26.06.2020مشتہر کیا ہے۔بورڈ نے سری نگر اور جموں میں دو ہیلپ لائن اُمید واروں کی سہولیت کے لئے شروع کی ہے اور اگر کسی فرد کو درخواست پیش کرنے میں تکنیکی یاکسی وجہ سے مشکل پیش آرہی ہو توو ہ اِس ضمن میں مزید معلومات اور رہنمائی کے لئے ssbjkgrievance@gmail.comپرمیل بھیج سکتا ہے۔
 
 

 2,81,351درماندہ شہری واپس جموں کشمیرلائے گئے

 جموں//حکومت جموں وکشمیر نے کووِڈلاک ڈاون کے سبب ملک کے مختلف حصوں میں درماندہ جموںوکشمیر کے     2,81,351شہریوں کو براستہ لکھن پور اور کووِڈخصوصی ریل گاڑیوں اور بسوں کے ذریعے تمام رہنما خطوط اور ایس او پیز پر عمل پیرا رہ کر یوٹی واپس لایا۔حکومت نے لکھن پور کے ذریعے اَب تک بیرون ملک سے 904مسافرو ں کویوٹی واپس لایا ہے ۔ اِس طرح جموںوکشمیر حکومت نے اب تک 103کووِڈ خصوصی ریل گاڑیوں اور براستہ لکھن پور بسو ںکے کاروان میں اَب تک بیرون یوٹی درماندہ 2,81,351شہریو ں کو کووڈِ۔19 وَبا سے متعلق تمام احتیاطی تدابیر پر عمل کرکے  واپس لایا۔ تفصیلات کے مطابق 02اگست سے 03 اگست 2020ء کی صبح تک لکھن پور کے راستے سے1403  درماندہ مسافریوٹی میں داخل ہوئے جبکہ 745مسافر آج 82ویں دلّی کووِڈ خصوصی ریل گاڑی سے جموں پہنچے ۔اَب تک 82ریل گاڑیوں میں یوٹی کے مختلف اضلاع سے تعلق رکھنے والے70,347 درماندہ مسافر جموں پہنچے جبکہ 21 خصوصی ریل گاڑیوں سے 15,696 مسافر اودھمپور ریلوے سٹیشن پر اُترے۔
 
 

کولگام کی 11ویں جماعت کی طالبہ کا کارنامہ | کیمسٹری کے’ پیریاڈک ٹیبل ‘کو انگریزی شعروں میں قلمبند کیا 

کولگام//خالد جاوید//کولگام کی گیارہ ویں جماعت کی ایک طالبہ نے اپنی ذہانت اورقابلیت کا لوہا منواتے ہوئے انگریزی زبان میں تین شعری مجموعے لکھ ڈالے اور یہ تینوں شعری مجموعے کتابی صورت میں اس وقت بازار اور آن لائن دستیاب ہیں ۔ کنی پورہ کولگام کی بشریٰ ندا کی عمرمحض 17سال ہے اور وہ گیارہ ویں جماعت میں زیرتعلیم ہے ۔بشریٰ میڈیکل کی طالبہ ہے اور اُسے پڑھنے لکھنے کا کافی شوق ہے ۔جہاں بچے اس عمر میں کھیل کوداور دیگرسرگرمیوں میں مصروف ہوتے ہیں ،وہیں بشریٰ نے تاریخ رقم کرڈالی ۔بشریٰ کا پہلا شعری مجموعہ ’’فیلنگ آف ٹیولپس ‘‘نہایت ہی کم عمری میں منظر عام پرآیااوراب ادب کی دنیا میں اس کی تصنیف کی کافی ستائش کی گئی اور اُسے ایوارڈ سے نوازاگیا۔اسی طرح کیمسٹری کے پیریاڈک ٹیبل کونہایت ہی آسان بنانے کیلئے بشریٰ نے ایک اور شعریٰ مجموعہ لکھ ڈالااوراس بار کیمسٹری کو شاعری کی شکل دی۔بشریٰ کی ان کاوشوں میں اس کی والدہ کااہم کردار ہے ۔اُس کے سر سے اگرچہ اُس کے باپ کا سایہ پہلے ہی اُٹھ چکا ہے تاہم  بشریٰ کی والدہ اوربڑی بہن نے اس کے ادبی ذوق میں اس کی کافی حوصلہ افزائی کی ۔بشریٰ کو صحافی بننے اورسماجی کاموں میں کافی دلچسپی ہے اوراس کی والدہ اس کے ہر کام میں اس کاحوصلہ بڑھاتی ہے ۔  تاہم بشریٰ کی والدہ کا کہنا ہے کہ ایسے ہنر مند طلبا کو موزون پلیٹ فارم اور مالی معاونت کی ضرورت ہے جبکہ انہیں یقین ہے کہ سرکار اور متعلقہ محکمہ ان کی مدد کرے گا۔ بشریٰ اور ایسی کئی طالبات اور طلبا میں ہنر کی کمی نہیں۔ تاہم بس ضرورت اس بات کی ہے کہ ایسے نوجوان لڑکوں اور لڑکیوں کو ایک موقع کی تلاش ہوتی ہے اور یہ موقع انہیں فراہم کیا جانا چاہیے۔
 
 

ڈپٹی کمشنربارہمولہ بنام سرکاری افسران | لاک ڈاون کے ویڈیوز مخصوص فون نمبر پرروانہ کریں

ضلع میںتاحکم ثانی کاروباری سرگرمیاں اورٹرانسپورٹ سروس پرپابندی عائد

بارہمولہ//ضلع بارہمولہ میں عید کے تناظر میں لاک ڈاون میں نرمی کے بعد پھر سے اگلے احکامات تک مکمل لاک ڈاون لاگو کیا گیا ہے۔ ضلع میں کورونا وائرس کے بڑھتے معاملات کے پیش نظر انتظامیہ نے دوبارہ حکم نامہ صادر کیا۔جے کے این ایس کے مطابق حکم نامہ میں کہا گیا کہ تمام ضلع میں لاک ڈاون سختی سے نافذ رہے گا اور دکانیں اور تجارتی ادارے بند رہیں گے۔ضلع میں کسی بھی گاڑی کو چلنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ڈی سی بارہمولہ ڈاکٹر جی این ایتو نے ضلع کے تمام ایس ڈی ایم،تحصیلداروں، سی ای او، میونسپل کمیٹیوں کے ایگزیکٹو آفیسروں کو ہدایت دی کہ وہ 3 اگست سے گاؤں اور میونسپل حدود کے علاوہ دیگر اپنے اپنے حدود میں سختی سے لاک ڈاون نافذ کریں۔ ساتھ ہی تمام تحصیلداروں، ایس ایچ اوز، سی ای او اور ایگزیکٹیو افسروں کو ہدایت دی گئی کہ وہ اپنے اپنے علاقوں میں لاوڈ اسپیکرکے ذریعے سے لاک ڈاون کے نفاذ کی اطلاع دیں۔ ساتھ ہی یہ بھی کہا گیا کہ اپنے اپنے علاقوں کے نافذکردہ لاک ڈاون کے ویڈیوز فراہم کردہ فون نمبر پر ڈی سی کو  روانہ کریں۔ ضلع میں سیکشن 34 ڈیزاسٹر منیجمنٹ ایکٹ 2005 کے تحت دفعہ 144 بھی نافذ ہوگا۔ تاہم حکم نامے میں یہ کہا گیا ہے کہ بنک کھلے رہیں گے، لیکن پبلک ڈیلنگ نہیں ہوگی۔ملازمین کو شناختی کارڈ چیک کرکے ہی ڈیوٹی پرجانے کی اجازت ہوگی۔ان گاڑیوں کو بھی چلنے کی اجازت دی جائے گی، جو تعمیراتی کاموں خاص کر سڑکوں پر پچھائے جا رہے میکڈم کے لئے مواد لے جارہے ہوں گی۔ ڈپٹی کمشنر بارہمولہ نے لوگوں سے اپیل کی کہ وہ حکم نامے پر عمل کریں اور انتظامیہ کو تعاون دیں۔ ساتھ ہی گائیڈ لائن اور ایس او پی پر عمل کریں۔ ڈپٹی کمشنر بارہمولہ نے اپنے فیس بک اکاونٹ پر بھی لاک ڈاون کی جانکاری دی ۔
 
 

کپوارہ میں پانی تنازع | 11 سالہ لڑکے کی موت کا باعث بن گیا

سری نگر//یو این آئی// شمالی کشمیر کے ضلع کپوارہ میں گذشتہ روز دو گھروں کے درمیان پانی تنازع ایک 11 سالہ لڑکے کی موت کا باعث بن گیا۔سرکاری ذرائع نے بتایا کہ کپوارہ کے منز ناڈ کچہامہ میں دو خاندانوں کے درمیان پانی تنازعے پر ہوئی جھڑپ میں ایک گیارہ سالہ لڑکے کی موت واقع ہوئی ہے۔مہلوک لڑکے کی شناخت امتیاز احمد شاہ ولد محمد سعید شاہ ساکن منز ناڈ کچہامہ کے بطور ہوئی ہے۔ایک رپورٹ کے مطابق ایس ایس پی کپوارہ شری رام امبارکر نے واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ اس سلسلے میں ملزم کو گرفتار کیا گیا ہے اور مزید تحقیقات بھی جاری ہیں۔ 
 
 

سرنکوٹ میں کمسن دریا برد | پونچھ میں نامعلوم نعش برآمد 

پونچھ //پونچھ ضلع میں ایک کمسن دریا میں بہہ گیا جبکہ پولیس نے دریا سے ایک نامعلوم لاش بر آمد کی ۔پولیس کے مطابق سرنکوٹ کے سیلان گائوں کا ایک 3سالہ لڑکا دریا میں بہہ گیا ۔لڑکے کی شناخت مرتضیٰ احمد ملک ولد مختیار ملک کے طورپر ہوئی ہے ۔انہوں نے بتایا کہ لڑکا دریا میں نہا رہا تھا کہ اچانک وہ دریا میں بہہ گیا جس کے دوران ملحقہ علا قہ میں موجودلوگوں نے اس کی لاش کو دریا سے باہر نکال دیا ۔پولیس نے اس سلسلہ میں معاملہ درج کر کے مزید تحقیقات شروع کر دی ہیں ۔پیر کے روز پولیس نے ضلع کے گلپور علاقہ سے ایک لاش برآمد کی ۔پولیس نے کہاکہ لوگوں نے گلپور علاقہ میں لاش کو دیکھ کر پولیس کو جانکاری فراہم کی جس کے بعد پولیس سٹیشن پونچھ کی ایک ٹیم نے موقعہ پر جاکر لاش کو قانونی کارروائی کیلئے ضلع ہسپتال پونچھ منتقل کر دیا ۔
 
 

کولگام میں 16برس کے لڑکے کی خودکشی 

سرینگر//خالدجاوید//چھتر پورہ کولگام میں ایک سولہ برس کے لڑکے نے مبینہ طور اپنے گھر میں کوئی زہریلی شے کھاکر خودکشی کرکرلی۔اطلاعات کے مطابق چھتر پورہ کولگام میں اتوار شب کو کمسن لڑکے(نام مخفی)نے کوئی زہریلی شے کھالی۔اُسے گھروالوں نے فوری طور کولگام اسپتال پہنچایاجہاں ڈاکٹروں نے اُسے سرینگرریفر کیا۔معلوم ہوا ہے کہ صدراسپتال پہنچانے سے قبل ہی اس کی موت واقع ہوئی۔اسپتال ذرائع کے مطابق اسپتال پہنچانے پر لڑکا دم توڑ بیٹھا تھا۔فوی طور معلوم نہیں ہوسکا کہ اس بچے نے یہ انتہائی قدم کیوں اُٹھایا۔پولیس نے کیس درج کرکے تحقیقات شروع کر دی ہے۔
 
 

تفریحی مقامات پر لوگوں کی بھیڑ | اوڑی انتظامیہ کی ڈیوٹی مجسٹریٹس کوکڑی نگرانی کرنے کی ہدایت

اوڑی//ظفر اقبال//تفریحی مقامات پر لوگوں کے آنے پر روک لگانے کیلئے اوڑی انتظامیہ حرکت میںآئی ہے اور سب ڈویژنل مجسٹریٹ اوڑی نے تمام ڈیوٹی مجسٹریٹس کو ہدایت دی ہے کہ وہ تفریحی مقامات کی کڑی نگرانی کریں اور کسی کوبھی ان مقامات پر جانے کی اجازت نہ دیں۔سب ڈویژنل مجسٹریٹ اوڑی نے بتایا کہ ڈپٹی کمشنر بارہ مولہ کو شکایت موصول ہوئی ہے کہ اوڑی اور بونیار کے تفریحی مقامات پر لوگوں کی بھیڑ اُمڈ آتی ہے جس کے بعدہمیں تفریحی مقامات کی کڑی نگرانی کرنے کی ہدایت دی گئی ۔ایس ڈی ایم نے بتایا کہ انہوں نے تمام ڈیوٹی مجسٹریٹوں ،سرپنچوں،پنچوں اور سرکاری اسکولوں کے ہیڈ ماسٹروں کوہدایت دی ہے کہ وہ اپنے علاقوں میں تفریحی مقامات پر نظررکھیں ۔انہوں نے کہا کہ ان تفریحی مقامات میں بابا فرید گھر کوٹ، نامبل چھم، بوسیاں، نورکھا چھم ، ٹی وی ٹاور اوڑی،این ایچ پی سی ڈیم (دوم) سلام آباد اوڑی،ماچھی کرنڈ، سمگلی سلام آباد اور بونیار کے کئی دیگر کچھ علاقے شامل ہیں۔ادھر تحصیلدار بونیار نے لور جہلم پن بجلی پروجیکٹ کے ڈیم پر تین ڈیوٹی میجسٹریٹس کو تعینات کر دیاہے تا کہ کوئی بھی شخص وہاں نہ جا پائے۔
 
 
 
 
 
 
 
 
 

ماحولیات کو تحفظ دینے کاعہد |  رکشا بندھن کے موقعہ پر لیگل سروسز اتھارٹی کی انوکھی کوشش

سرینگر//جموںوکشمیر سٹیٹ لیگل سروسز اَتھارٹی کی سرپرست اعلیٰ جسٹس گیتا متل( چیف جسٹس جموں وکشمیر ہائی کورٹ) کی رہنمائی اور ایگزیکٹیو چیئرمین جے کے ایس ایل ایس اے جسٹس راجیش بندل کی ہدایات کے تحت رکشا بندھن رشتوں کو استوار کرنے اورقدرت کے ساتھ جذباتی وابستگی قائم کرنے کے طور پر منایا گیا۔یہ پہل جموںوکشمیر  کے تمام اضلاع اور لداخ میں لوگوں کو ماحولیات کے تحفظ سے متعلق احساس جگانے اور قدرت کے ساتھ جذباتی وابستگی قائم کرنے کی غرض سے شروع کی گئی۔لیگل رضاکاروں ، بچوں اور سماج کے ارکان نے اس موقعہ پر پودے لگائے ۔ درختوں کے گرد دھاگے باندھے اور بہن بھائی کے تحفظ کا عہد لیا۔ادھمپور میں رکشا بندھن درختوں کے ارد گرد راکھیاں باندھ کر منایا گیااور ماحولیات بالخصوص درختوں کو بچانے کا عہد کیاگیا۔رام نگر میں بچوں اور لیگل رضاکاروں نے اسی نوعیت کی سرگرمیوں میں حصہ لیا۔ سانبہ میں ضلع لیگل سروسز اتھارٹی سانبہ نے رکشا بندھن قدرت کے ساتھ رابطے استوار کرنے کے موقعہ کے طور منایا ۔اسی نوعیت کی سرگرمیاں میں ریاسی میں بھی عمل میں لائی گئیں ۔جموںوکشمیر اورلداخ کے تمام اضلا ع  لیگل سروسز اتھارٹیوں نے قدرت کے سات رشتوں کو ایک انوکھے انداز میں استوار کرنے اور لوگوں کو اپنے عزیزوں کی طرح درختوں کا خیال رکھنے کی جانب راغب کرنے کے لئے اسی نوعیت کی سرگرمیوں میں حصہ لیا۔مہم میں تمام طبقوں نے پُر جوش ردعمل کا اظہار کیا۔
 
 
 
 

نورباغ کے ڈیلی ویجر کی ہلاکت، تحقیقات کا مطالبہ

سرینگر//آل جے ا ینڈکے پی ڈی ایل /ٹی ڈی ایل ایمپلایز یونین کے صدر شبیر احمد شاہ نے سرینگر میں ایک ڈیلی ویجر ریاض احمد ساکن نور باغ سرینگر کی دوران ڈیوٹی موت پر گہرے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے سوگوار خاندان کے ساتھ تعزیت کیا۔انہوں نے کہا ’’ ہم اس غم کی گھڑی میں اُن کے ساتھ شریک ہیں‘‘۔ شاہ نے پاور ایڈمنسٹریشن اور ا علیٰ افسروں کواس طبقے کے قتل عام کا ذمہ دارگردانتے ہوئے کہاکہ آج تک ان لوگوں کی وجہ سے ہی غریب اور مظلوم طبقے کا قتل عام جاری ہے ۔انہوں نے اس ہلاکت کیلئے متعلقہ افسروں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ۔
 
 
 
 

کولگام پولیس کی جانب سے ماسک تقسیم

کولگام //کولگام پولیس کی جانب سے ضلع میں ماسک تقسیم کرنے اور کورونا سے متعلق جانکاری فراہم کی گئی۔پولیس بیان کے مطابق ضلع کے کئی مقامات پر لوگوں میں ماسک تقسیم کرنے کے علاوہ اس کی اہمیت کو اجاگر کیا گیا۔انہوں نے عوام کو کورونا سے محفوظ رہنے کیلئے سماجی دوری اختیار کرنے اور ماسک پہننے پر زور دیا۔
 
 

الطاف بخاری کااظہارِتعزیت

سرینگر//جموں وکشمیر اپنی پارٹی صدر سید محمد الطاف بخاری نے راولپورہ کے غلام حسن ڈار اور جاوید امین ساکن آبی گذرکے انتقال پر گہرے صدمے کا اظہار کیا ہے۔بخاری نے سوگوار کنبوں کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کرتے ہوئے مرحومین کے لئے مغفرت کی دعا کی ہے۔ انہوں نے جاوید امین کی موت کو ذاتی نقصان قرار دیا۔
 
 

ظفر منہاس کا اظہاررنج

سرینگر//جموں وکشمیر اپنی پارٹی لیڈرظفر اقبال منہاس نے کلچرل اکیڈمی کے سابق ڈپٹی سیکریٹری عبدالمجید عاصمی کے جواں سال فرزند توصیف عاصمی ساکن نٹی پورہ کی وفات پر صدمے کا اظہار کیا ہے۔انہوں نے سوگوار کنبہ کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کیاہے۔
 
 

سکمز ملازمین کاڈاکٹر زبیر اشرف کے ساتھ اظہار یکجہتی

سرینگر//ڈاکٹر زبیر اشرف حکیم کے والد کے انتقال پر جی آر بیگ میموریل ٹرسٹ، سکمز ملازمین انجمن اور نگوا کے ایک وفد نے سوپور آرم گڑھ جاکر مرحوم کو خراج عقیدت پیش کیا اورمغفرت کی دعا کی۔ ڈائریکٹر سکمز اے جی آہنگر اور نگوا صدر اشتیاق بیگ نے اپنے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے مرحوم کے اہل خانہ خاص طور پر ڈاکٹر زبیر کے ساتھ تعزیت اور ہمدردی کا اظہار کیا ہے۔سی این آئی
 
 

نوائے ہمدان کے مدیر اعلیٰ فوت | انجمن حمایت الاسلام کا خراج عقیدت

سرینگر//انجمن حمایت الاسلام کے اہتمام سے شائع ہونے والے رسالہ ’نوائے ہمدان‘ کے مدیر اعلیٰ سید کمال الدین کاملی اتوار کوانتقال کرگئے ۔ انجمن کے صدر مولانا خورشید احمد قانونگو، مولانا عبدالحق اویسی، مولانا شوکت حسین کینگ، شمالی صدر عبدالرشید بدرو اور جنوبی کشمیر کے سیکریٹری ابوطارق غلام نبی میر ڈورو شاہ آباد نے سید کمال الدین کاملی کی وفات پر رنج وغم کااظہارکیا ہے۔
 
 

ایمپلائز جوائنٹ کنسلٹیٹیو کمیٹی کی تعزیت

سرینگر//ایمپلائز جوائنٹ کنسلٹیٹیوکمیٹی کے ایک تعزیتی اجلاس میں سیکریٹری فوڈ سپلائز کے پرائیویٹ سیکریٹری کے والد کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کیا۔ اجلاس میں اعجا ز خان ، شیخ اعجاز ، سجاد اشتیاق بیگ، خالد محمود ملک، حسن ملک، شوکت بٹ، جاوید آخون ، فاروق احمد کاوا، یونس متو، شوکت نوشہری، رحمد اللہ خان ، عنایت نوشہری، محمد اشرف ،ماسٹر امتیاز ، ریاض احمد شیخ ، فاروق احمد میر، حمید اللہ بٹ ، عبدالقیوم بیگ، فروز احمد نجاراور ریاض احمد کار نے شرکت کی ۔
 
 

تازہ ترین