تازہ ترین

وائرس کا پیغام

10 مئی 2020 (30 : 03 AM)   
(      )

ایک پیغام انسان کے نام
 وائرس نے کہا یہ انسان سے 
 تم مجھ سے واقف ہو ہی نہیں
 میں چھوٹی سی اک ادنیٰ سی
 مخلوق ِ خدا ہوں نازک سی
 ہے حکم خدا کی پابندی
 لازم مجھ پر ارزاں سے ہی
 اور حکم خدا سے  ہی اٹلی
 میرے قہر سے زیر ہوئی اتنی
 میں چین سے لے کر ایران کی
 یورپ کی بھی میں نے سیرکری 
  امیریکا ا ور اسپین پہ بھی
 میں نے دہشت ایسی طاری کی
 محصور ہوے سب گھر میں ہی
سب طفل و جواں اور بوڑھے بھی
 کیوں مجھ پر اے انسان پڑی
 ساری دنیا کو اک مار پڑی
ہے اس کے پیچھے اتنی سی
 اک بات چھپی بڑی پیاری سی
 دنیا میں تجھے بڑی فکر رہی
 بس شان سے زندہ رہنے کی
 اور کمزوروں کی آپ بیتی
 تیرے دھیان سے ہٹتی ہی رہی
 تیرے پاس میں ہی گر مائیگی
 جب ظلم و جبر کی اک بھٹی
 چن چن کے جب تڑپائے گی
 اس بھٹی میں کمزور سبھی
 تیرا دھیان مگر پھر بھی
 مرکوز رہا مستی پر ہی
 یوں کمزوروں کی آہ و بکا
 تیرے کانوں سے او جھل ھی رہی
 اور اللہ نے آخر سن ہی لی
 ان کمزوروں کی آپ بیتی
 پھٹکار پڑی تم پہ ایسی
 اور ظالم کارندوں پر بھی
 اپنے ہی تم سے دور ہوے 
 نازک سی ایسی گھڑی میں بھی
 تم مجھ سے واقف ہو ہی نہیں
 تم مجھ سے واقف ہو ہی نہیں
 
 شہزادہ اشرف 
سرندو کولگام