تازہ ترین

وہ آئے گا

تاریخ    26 اپریل 2020 (00 : 01 AM)   


دْلہن بنی بیٹھی ہوں، نہ جانے بارات کب لائے گا
دلہن بنی بیٹھی ہوں ناجانے بارات کب لائے گا
اس نے کہا تھا وہ آئے گا
سَکھیو! جاو دیکھو کہیں دروازہ نہ کھٹکھٹا رہا ہو
ورنہ کہے گا،وہ پھر نا آئے گا۔
اس نے کہا تھا وہ آئے گا
سنو یوں کھڑے کھڑے مذاق نہ اْڑاو
 وہ میرا دل کبھی نہیں دُکھائے گا
اس نے کہا تھا وہ آئے گا
جاو آج سب راستے پھولوں سے سجا دو
کانٹوں سے کہنا ذرا سنبھل کر رہنا
وہ مجھے لینے ضرور آئے گا
اس نے کہا تھا وہ آئے گا
آج دیپ جلائو ،جگنو کوبلائو،اندھیروں سے ڈرتا ہے نا
 وہ کیسے آئے گا 
 اس نے کہا تھا وہ آئے گا 
تم دیکھنا،تم دیکھنا مجھے لے جائے گا ،سینے سے لگائے گا
اور تم سب کو جلائے گا 
اس نے کہا تھا وہ آئے گا 
                           
مہیوش شبیر
ای میل ؛shokat2466@gmail.com
 
 

تازہ ترین