تازہ ترین

تنخواہوں سے محروم پی ایچ ای ڈیلی ویجروں کا پرتاپ پارک میں احتجاج

۔15اکتوبر کو یوم سیاہ کے طورمنانے اورکام چھوڑ ہڑتال کی دھمکی

تاریخ    12 اکتوبر 2018 (00 : 01 AM)   


بلال فرقانی
 سرینگر//22ماہ سے تنخواہوں سے محروم محکمہ آبپاشی و آب رسانی کے عارضی ملازمین نے جمعرات کو پرتاپ پارک میں احتجاجی مظاہرے کئے اور ایس آر او520کے تحت کیجول ملازمین کی مستقلی میں سرعت لانے کا مطالبہ کیا۔ محکمہ پی ایچ ای کے عارضی ملازمین نے تنخواہوں کی عدم واگزاری کے خلاف راج بھون تک مارچ کرنے کا اعلان کیا تھاتاہم وادی میں پیدا شدہ حالات کی وجہ سے پروگرام موخر کیا گیا۔اس دوران سینکڑوں عارضی ملازمین پرتاپ پارک میں جمع ہوکر گورنر انتظامیہ کے خلاف نعرہ بازی کی۔احتجاجی مظاہرین نے کہا کہ گزشتہ 22ماہ سے انہیںتنخواہوں سے محروم رکھا گیااور امسال یہ پہلی بار ہوا کہ جب عید کے روز بھی انکی تنخواہوں کو واگزار نہیں کیا گیا۔احتجاجیوں نے ایس آر او520کے تحت کیجول ملازمین کی مستقلی میں سرعت لانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ اس میں تاخیری حربے آزمائے جا رہے ہیں۔ایسو سی ایشن کے صدر سجاد پرے نے الزام لگایا کہ موجودہ ریاستی گورنر کے دور میں اس عمل میں سست رفتاری کا مظاہرہ کیا جا رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ سابق مخلوط سرکار نے وعدہ کیا تھا کہ7ویںتنخواہ کمیشن کا نفاذ عمل میں لانے کے بعد ایس آر ائو 520میں ترمیم کی جائے گی تاہم کئی ماہ گزر جانے کے باوجود بھی ابھی تک وہ ترمیم نہیںہوئی۔انہوں نے مختلف اسکیموں کے لئے اراضی عطیہ کرنے والوں کی مستقلی کا بھی مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ جن عارضی ملازمین کی موت دوران ڈیوٹی ہوئی ہے انکے اہل خانہ میں کسی ایک فرد کو نوکری دینے کے عمل کو عملایا جائے۔انہوں نے کہا کہ اگر انکے مطالبات15 اکتوبر تک پورے نہیں ہوئے تو15اکتوبر کو یوم سیاہ کے طور پر منایا جائے گااور متعلقہ ایگزیکٹو انجینئروں کو یاداشت پیش کی جائے گی اور کام چھوڑ ہڑتال کی جائے گی۔

تازہ ترین